GB News

بلتستان کے چاروں اضلاع میں محرم الحرام کاسیکورٹی پلان تیارکرلیا،کمشنر بلتستان ڈویژن عاصم ایوب

Share Button

سکردو(محمداسحاق جلال)کمشنر بلتستان ڈویژن عاصم ایوب نے کہا ہے کہ بلتستان کے چاروں اضلاع میںمحرم الحرام کاسیکورٹی پلان تیارکرلیاگیا ہے اورتمام مقامات پرسیکورٹی ہائی الرٹ کردی گئی ہے۔ کئی مام بارگاہیں اور مساجد حساس ترین قراردیدی گئی ہیں۔اوروہاں سیکورٹی مزیدبڑھائی گئی ہے۔ پولیس کے ہمراہ گلگت بلتستان سکاﺅٹس کے دوپلاٹون کی خدمات بھی حاصل کرلی گئیں ہیں۔ضرورت پڑنے پر فوج کو بھی طلب کرلیاجائے گا۔ فوج کو تیاررہنے کاحکم دیاگیا ہے اپنے دفتر میں میڈیا سے بات کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ تمام داخلی وخارجی راستوں پرچیکنگ انتہائی سخت کی گئی ہے شہر بھر میں پولیس کی چوکیاں قائم کی گئیں ہیں۔ دفعہ144کے نفاذ کے تحت بلاسٹنگ کرنے، فحش فلمیں چلانے،دل آزارلیٹریچرکی تقسیم پرمکمل پابندی عائد کی گئی کسی غیرمقامی عالم دین کو مجلس پڑھنے کے لئے بلتستان میں آنے کی اجازت نہیں دی جائے گی۔ انہوں نے کہا کہ8محرم الحرام کوفلیگ مارچ ہوگا جس میں سیکورٹی اداروں، خفیہ اداروں سمیت تمام اداروں کے نمائندے شریک ہوں گے۔ جلوسوں کی گزرگاہوں پر واقع عمارتوں کی چھتوں پر غیرمتعلقہ افرادکو رہنے کی اجازت نہیں ہوگی۔ چھتوں پرصرف وہی لوگ ہوں گے جن کو سیکورٹی پاسز جاری کئے جائیں۔پہلی مرتبہ جلوسوں کی گزرگاہوں میں واقع تمام رکاوٹوں کو بھی چیک کیاجارہا ہے اور دکانوں کی کلیئرنس حاصل کی جارہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ جلوسوں کی گزرگارہوں پرخفیہ کیمرے نصب کئے گئے ہیں ہم سیکورٹی کے معاملے میں کسی صورت بھی غافل نہیں ہیں۔ ہرصورت میں عزاداروں کو سیکورٹی فراہم کی جائے گی۔ انہوں نے کہا کہ جہاں جہاں مجالس عزاءمنعقدہورہی ہیں وہاں بلاتعطل بجلی فراہم کی جائے گی۔ اس معاملے میں زیروٹارلینس ہوگا کہیں پر بجلی کی کمی کی شکایت نہیں ملنی چاہئے۔تبرکات کے لئے ناقص آٹا فراہم کرنے والی فلور ملزکے خلاف سخت کارروائی ہوگی اور ایسی ملوں کے خلاف مقدمات بھی بنائیں گے ۔انہوں نے کہا کہ حسب سابق امسال بھی سکردوشہر کوعاشورہ سے ایک روز قبل چاروں طرف سے سیل کردیاجائے گا ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ اس بات میں حقےقت ہے کہ ہمارے پاس سیکورٹی کی کمی ہے لیکن رضاکاروں کی مدد سے عزاداوں کوسیکورٹی فراہم کریں گے۔انہوں نے کہا کہ نویں اور دسویں محرم الحرام کوموبائل سروس بندرہے گی۔عزاداروں کی سہولت کے لئے ڈپٹی کمشنر کے دفتر میں کنٹرول روم قائم کیاگیا ہے جہاں سے تمام چیزوں کی مانیٹرنگ کی جائے گی ۔ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ سکردوشہر میں کتے کے گوشت کی فروخت کے معاملے کی تحقےقات شروع کردی گئی ہیں۔ انشاءاللہ جلد ہم کسی نتیجے پرپہنچیں گے۔ ذمہ داروں کو نہیں چھوڑا جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ بلتستان کاامن مثالی ہے تاہم یہاں بیرون عناصرحالات خراب کرسکتے ہیں اس لئے غیرمقامی افراد کے داخلے پر پابندی لگادی گئی ہے۔ ہوٹلوں میں مقیم غیرمقامی افرادکے شناختی کارڈز بھی سختی سے چیک کئے جارہے ہیں۔

Facebook Comments
Share Button