تازہ ترین

Marquee xml rss feed

عید کے موقع پر پولیس ش�داء کے ا�لخان� کو یاد رکھا جائے، صوبائی وزیر داخل� سندھ-پاکستانی نوجوان با صلاحیت اور اعلیٰ درج� کی ذ�انت کے حامل �یں، گورنر سندھ-پاسبان لیاری زون کے تحت �زاروں مستحق بچوں میں عید کے لباس تقسیم-لا�ور : اے ایس ای� کی کاروائی مسا�ر کے استقبال کے لئے آنے والے ش�ری کے قبضے سے ایک پسٹل، 2 میگزین اور 5 گولیاں برآمد-لا�ور :ایس پی سول لائن علی رضا کی سربرا�ی میں سکیورٹی خدشات کے باعث پی سی �وٹل میں �نگامی مشقیں کی گئی-لا�ور :عید ال�طر کے قریب آتے �ی گوشت، پھلوں اور شبزیوں کی قیمتوں میںاضا�� �و گیا-لا�ور : صوبائی دارلحکومت میں لگائے گئے رمضان بازار ایک روز قبل �ی ختم کر دئیے گئے جس کے باعث ش�ری م�نگے داموں اشیاء ضروریات خریدنے پر مجبور �و گئے �یں، مختل� علاقوں میں ... مزید-لا�ور : تھان� �یکٹری ایریا کی حدود میں موٹر سائیکل سوار شخص کی �ائرنگ 2 لڑکیوں پلوش� اور مشعل کر زخمی کر دیا-لا�ور : پولیس کی کاروائی منشیات �روش گر�تار ، اس کے قبضے سے 200 لٹر شراب برآمد-لا�ور :صوبائی دارلحکومت لا�ور میں علاق� غیر سے آنے والی گاڑی سے بڑی تعداد میں بارودی مواد برآمد کر کے 2 ملزمان کو گر�تار

GB News

پہلی مرتبہ رواں سال پاکستان میں کوئی صحافی قتل نہیں ہوا، سی پی جے

پیرس(آئی این پی) گزشتہ 15 سالوں میں پہلی مرتبہ رواں سال پاکستان میں کسی صحافی کو فرائض کی انجام دہی کی پاداش میں قتل نہیں کیا گیا۔غیر ملکی میڈیاکے مطابق دنیا بھر میں آزادی صحافت کے فروغ کے لیے کام کرنے والی آزاد تنظیم کمیٹی ٹو پروٹیکٹ جرنلسٹس (سی پی جے) نے اپنی خصوصی رپورٹ میں کہا کہ 15 سال میں یہ پہلا موقع ہے جب پاکستان میں کسی صحافی کو فرائض کی انجام دہی کی پاداش میں قتل نہیں کیا گیا۔تنظیم نے کسی صحافی کو اس کے کام سے براہ راست تعلق کے باعث قتل کو صحافی کی ٹارگٹ کلنگ قرار دیا، چاہے وہ سوچے سمجھے منصوبے کے تحت ہو یا بلا ارادہ۔سی پی جے نے اپنی رپورٹ میں مزید کہا کہ 1992 کے بعد سے اب تک 33 صحافیوں کو فرائض کی انجام دہی کی پاداش میں قتل کیا گیا۔تاہم اس صورتحال کے پیش نظر متعدد صحافیوں نے سنگین خطرات سے بچنے کے لیے صحافت کے پیشے سے کنارہ کشی اختیار کرلی۔

Share Button