تازہ ترین

Marquee xml rss feed

ایپ اسٹور کی 60 ایپس میں فحش تصاویر دکھانے والے وائرس کا انکشاف سامنے آ گیا-ہسپتالوں میں نرسز کے موبائل فون کے استعمال پر پابندی لگا دی گئی-آصف زرداری نے بہترین سیاسی چال کے ذریعے شریف برادران کو بند گلی میں دھکیل دیا سیاسی مشکلات میں گِھری مسلم لیگ (ن) کی کمزوریوں کا فائدہ اٹھا تے ہوئے سابق صدر نے نہ صرف ... مزید-وزارتوں کی تقسیم، بلوچستان کے نو منتخب وزیراعلیٰ عبدالقدوس بزنجو اور وزیرداخلہ سرفراز بگٹی کے درمیان تنازعہ شدت اختیار کرگیا سرفراز بگٹی سینئر وزیر کا عہدہ اور پروٹوکول ... مزید-انتظار قتل کیس وزیراعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ کا عدالتی تحقیقات کرانے کا اعلان-گور نر بلوچستان کا فائرنگ کے نتیجے میں ٹریفک پولیس اہلکارکی شہادت پر گہرے رنج وغم کا اظہار-وزیر خارجہ نے بھارت اور اسرائیل کے درمیان ہونے والے معاہدوں کو اسلام دشمنی قرار دیدیا بھارت اسرائیل گٹھ جوڑ کے باوجود اپنا دفاع کر سکتے ہیں، خواجہ آصف-وزیر اعلی کی ہدایت پر ڈی ایچ کیو وہاڑی کا میڈیکل وارڈسیکنڈ لیفٹیننٹ عبدالمعید شہید سے منسوب-احتجاج کے دوران دہشت گردی کا خطرہ ہے،منتظمیں کو خبردار کر دیاہے،صوبائی وزیر قانون-طاہرالقادری کے ساتھ ان کا ملنا صرف قاتلوں کیلئے خطرے کی گھنٹی ہے، قمر زمان کائرہ

GB News

شو گر سے بچنا چا ہتے ہیں تو فوراً اپنی یہ ایک عادت تبد یل کر دیں

Share Button

اسلام آباد: ذیابیطس ایک ایسا مرض ہے جو متعدد بیماریوں کی جڑ ثابت ہوتا ہے اور آپ کی ایک عادت اس کا خطرہ 50 فیصد تک کم یا بڑھا سکتی ہے۔یہ بات امریکا میں ہونے والی ایک طبی تحقیق میں سامنے آئی۔اگر تو آپ رات گئے تک جاگنے اور صبح جلد اٹھنے کے عادی ہیں تو اس کو فوری ترک کردیں کیونکہ یہ چیز ذیابیطس ٹائپ ٹو کا خطرہ 45 فیصد تک بڑھا دیتی ہے۔

ویسے تو نیند کی کمی کئی دیگر امراض کا باعث بھی بنتی ہے مگر اس کی وجہ سے ذیابیطس کا خطرہ بہت زیادہ ہوجاتا ہے۔ہاورڈ یونیورسٹی کے ٹی ایچ چن اسکول آف پبلک ہیلتھ کی تحقیق کے دوران ایک لاکھ سے زائد خواتین کی نیند کے اوقات کا جائزہ 2000 سے 2011 تک لیا گیا۔نتائج سے معلوم ہوا کہ سونے میں مشکل یا کم نیند کے جسمانی طور پر اثرات مرتب ہوتے ہیں جیسے تناؤ کا باعث بننے والے ہارمون کی سطح بڑھ جاتی ہے جو کہ انسولین کی حساسیت کا بڑھاتا ہے۔

اسی طرح نیند کی کمی ذہنی تناؤ کا بھی خطرہ بڑھاتی ہے جو کہ بڑھ کر ذیابیطس کی شکل اختیار کرلیتا ہے۔تحقیق میں بتایا گیا کہ چھ گھنٹے یا اس سے کم نیند لینے والے افراد جو خراٹے لینے کے عادی بھی ہو، میں ذیابیطس کا خطرہ 400 فیصد تک بڑھ جاتا ہے یا یوں کہا جائے کہ اس مرض کا شکار ہونا یقینی ہوجاتا ہے۔محققین کا کہنا تھا کہ نیند کا معیار اور وقت ذیابیطس کی روک تھام کے لیے بہت اہمیت رکھتا ہے۔

Facebook Comments
Share Button