تازہ ترین

Marquee xml rss feed

احسان الل� احسان،معاوی� کاقریبی دوست جبک� رازا�شاں کرنےکی شرط پرواپس آیا احسان الل� احسان نے 6�روری کوچمن کے قریب پاک ا�غان سرحدپراپنی ا�لی� اور بیٹے سمیت خود کوسکیورٹی ... مزید-عالمی ولادت حضرت امام حسین کان�رنس (آج ) راولپنڈی میں �وگی-انٹرنیشنل اچیومنٹ ایوارڈ تقریب 10اگست کو ترکی میں �و گی پاکستانی تجارتی اداروں کو اعلی کارکردگی پر خصوصی ایوارڈ دیئے جائیں گے-راول ایکسپو میڈیا کان�رنس کل �و گی-ضلع راولپنڈی میںگندم کی خریداری کا عمل (آج )سے شروع کیا جائیگا گندم خریداری پالیسی کے تحت ضلع راولپنڈی میں خریداری کا �د� 300ٹن مقرر-گندم کو ذخیر� کرتے وقت احتیاطی تدابیر اختیار کی جائیں ،محکم� زراعت-برصغیر پاک و �ند میں اسلام کی تبلیغ و اشاعت میں بزرگان دین اولیاء کاملین و مشائخ عظام کا کلیدی کردار �ے ،ْچو�دری طارق �اروق رومی کشمیر حضرت میاں محمد بخش ؒ ایک بڑے صو�ی ... مزید-عمران خان سے بیرسٹر سلطان محمود چو�دری کی ملاقات مسئل� کشمیر بین الاقوامی �ورم پر اٹھانے کی �دایت-آزاد کشمیر کے صدر سے کمانڈر نیول سٹرٹیجک �ورس کمانڈ وائس ایڈمرل شا� س�یل مسعود کی ملاقات ،ْ پیش� واران� امور پر تبادل� خیال گوادر سی پورٹ کے آپریشنل �ونے کے بعد سمندری ... مزید-چی� جسٹس بلوچستان �ائیکورٹ محمد نور مسکانزئی کا جسٹس نعیم اختر ا�غان کے �مرا� زیر تعمیر خاران جوڈیشل کمپلیکس کا دور�

GB News

انصاف کی فراہمی کے لئے بنچ اور بار کے درمیان مضبوط تعلق ضروری ہے، جسٹس رانا شمیم

سپریم اپیلٹ کورٹ گلگت بلتستان کے چیف جج جسٹس رانا محمد شمیم خان نے کہا ہے کہ انصاف اور اچھائی کے لئے بنچ اور بار کا مضبوط تعلق ضرورت ہے ۔ ملک کے دوسرے حصوں کی نسبت گلگت بلتستان کے وکلاء محنت اور تیاری کے ساتھ عدالتوں میں پیش ہوتے ہیں جو کہ مثبت رجحان ہے ۔ نئے وکلاء سپریم اپیلٹ کورٹ کے رولز کا مطالعہ کریں ۔ عدالت عظمی میں نئے وکلاء کو لائسنس تقسیم کرنے کی تقریب سے خطاب کرتے ہو ئے معززچیف جج نے کہا کہ گلگت بلتستان کی 15 لاکھ آبادی میں 60 وکلاء کو یہ اعزاز حاصل ہے کہ آپ سپریم اپیلٹ کورٹ کے وکیل ہیں آپ اچھی وکالت کرتے ہوئے اپنی سالمیت اور وقار کو قائم رکھیں تاکہ اچھے وکلاء کے طور پر آپ کا نام لیا جا سکے انہوں نے کہا کہ وکلا ء کا کام فیصلے کرنا نہیں ہے بلکہ انصاف کے لئے ججوں کی مدد کرنا ہے ۔ وکلا صاحبان اپنے سائلوں کو صحیح مشورے دیں غلط مشورہ دے کر کوئی بھی وعدہ نہ کریںتاکہ شرمندگی کا سامنا نہ ہو ۔ انہوں نے کہا کہ گلگت بلتستان کے وکلاء زیادہ محنت اور تیاری کے ساتھ عدالتوں میں پیش ہوتے ہیں جو کہ یہاں کے وکلاء میں مثبت رجحان ہے جسٹس رانامحمد شمیم نے کہا کہ وکلاء کے مسائل سے آگاہ ہیں مختلف عدالتوں میں ایک ساتھ کیسز کی وجہ سے وکلا کو زیادہ بھاگ دوڈ کرنی پڑتی ہے ۔ ایسے میں ہماری کوشش ہے کہ وکلا ء کو ان کے کیسز کے بارے میں ایک ماہ قبل ہی پتہ چلے ایک ہفتہ قبل ان کے دفاتر اور گھروں کے پتہ پر لیٹرز بھجوا دیں اور ایک دن پہلے انہیں موبائل پیغام کے زریعے سے مطلع کیا جائے ۔ انہوں نے کہا کہ سپریم اپیلٹ کورٹ کے وکلاء تنظیموں اور ایڈو کیٹ جنرل کے لئے جگہ فراہم کر دی گئی ہے جبکہ گلگت اور سکردو میں وکلا ء کے لئے پلاٹس کی کوشش کر رہے ہیں ایسی زمینیں وکلاء کو الاٹ کی جائیں جو کہ کہ متنازعہ نہ ہو اس سلسلے میں حکومت نے یقین دہانی بھی کرائی ہے ۔ اس سے قبل سپریم اپیلٹ کورٹ کے جج جسٹس جاوید اقبال اور بار کونسل کے نائب چیئر مین منظور ایڈو کیٹ نے بھی خطاب کرتے ہوئے لائسنس حاصل کرنے والے وکلاء کو مبار کباد دی انہوں نے کہا کہ بار اور بنچ کا چولی دامن کا ساتھ ہے ۔ وکلاء محنت و لگن کے ساتھ کام کریں تقریب کے دوران سپریم اپیلٹ کورٹ کے چیف جج جسٹس رانا محمد شمیم نے 24 وکلاء میں لائسنس تقسیم کئے ۔جس سے سپریم اپیلٹ کورٹ کے لائسنس یافتہ وکلاء کی تعداد 58 ہو گئی ہے تقریب کے دوران سیکریٹری قانون رحیم گل سمیت وکلاء کی کثیر تعداد شریک تھی

Share Button