تازہ ترین

Marquee xml rss feed

بلاول، بختاور اور آصفہ کی یادگارِ شہدائے کارساز پر حاضری جائے حادثہ پر دن بھر رہنماں اور کارکنوں کی آمد جاری رہی، سکیورٹی کے سخت انتظامات کئے گئے-سپیکر اور ڈپٹی سپیکر قومی اسمبلی کی دیوالی کے تہوار پر ہندو برادری کو مبارک باد-پاکستان میں بلیو وہیل جیسی ایک اور خطرناک گیم تیار کر لی گئی، کئی نوجوانوں کو نشانہ بنا دیے جانے کا انکشاف, امریکی ایجنسی کی اطلاع پر ایف آئی اے نے جوہر ٹاون سے نوجونواں ... مزید-وزیراعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ سے پی سی بی کے چیئرمین نجم سیٹھی کی ملاقات آئندہ فروری میں کراچی میں پی ایس ایل کے 4 میچ کرانے پر اتفاق-ناگہانی صورتحال پر قابو پانے کیلئے بروقت ردعمل فیصلہ کن ہوتا ہے، شیخ انصر عزیز-اسلامی جمعیت طلبہ پاکستان کے تحت آؤبدلیں پاکستان مہم کے دوسرے مرحلے تعلیم سے تعمیر پاکستان کے سلسلے میں (کل) تعلیمی ریفرنڈم ہوگا-امیر جماعت اسلامی پاکستان سراج الحق ہفتہ 26اکتوبر کو صوابی گرائونڈ میں شمولیتی اجتماع سے خطاب کریں-مشال خان قتل کیس کا مرکزی گواہ اپنے بیان سے منحرف ہو گیا اگلی سماعت 25اکتوبر تک ملتوی گواہوں پر دبائو ڈالا جا رہا ہے وکیل کا الزام،معاملہ جلد ہائی کورٹ میں لے کر جائیں ... مزید-محنت کشوں کیلئے پاکستان پیپلز پارٹی کے منشور کے مطابق اقدامات کررہے ہیں، صوبائی وزیر محنت سید ناصر حسین شاہ-پاکستان پیپلز پارٹی نے میڈیا کو ہمیشہ اہمیت دی اور صحافیوں کے مسائل حل کئے ہیں،وزیر اطلاعات سید ناصر حسین شاہ

GB News

پانامہ کیس کا فیصلہ اخلاقی طور پر نواز شریف کے خلاف آیا، خورشید شاہ

Share Button

قومی اسمبلی میں قائد حزب اختلاف سید خورشید احمد شاہ نے کہا ہے کہ پانامہ کیس کا فیصلہ اخلاقی طور پر نواز شریف کے خلاف ہی آیا ہے،تین ججز اپنے دو سینئر ساتھیوں سے سے انکاری نہیں ہوئے بس جے آئی ٹی کا کہا،(آج) جمعہ کو قومی اسمبلی و سینیٹ کی اپوزیشن جماعتوں کا مشترکہ اجلاس بلایا ہے جس میں پانامہ کیس فیصلے کا جائزہ لے کر پارلیمنٹ میں مشترکہ حکمت عملی پر غور کریں گے۔وہ جمعرات کو یہاں میڈیا سے گفتگو کر رہے تھے۔ انہوں نے کہا کہ میری نظر میں فیصلہ بڑا واضح ہے، دو ججز نے واضح کہا کہ نواز شریف کو ڈس کوالیفائی کیا جائے، تین ججز اپنے دو سینئر ساتھیوں سے سے انکاری نہیں ہوئے بس جے آئی ٹی کا کہا۔ خورشید شاہ نے کہا کہ ججز اس جے آئی ٹی کی بات کر رہے جن میں شامل ایف آئی اے نیب کو دوران سماعت خود برا بھلا، نا اہل کہا، جے آئی ٹی کے وزارت داخلہ یا خزانہ کے ماتحت افراد کیا تحقیقات کریں گے،نواز شریف کو اخلاقی طور پر اسٹیپ ڈائون ہو جانا چاہیئے۔تحریک انصاف کے ساتھ ہاتھ ملانے کے سوال پر انہوں نے کہا کہ سیاست میں کوئی آخری دوست یا آخری دشمن نہیں ہوتا،(آج) جمعہ کو قومی اسمبلی و سینیٹ کی اپوزیشن جماعتوں کا مشترکہ اجلاس بلایا ہے، پانامہ کیس فیصلے کا جائزہ لے کر پارلیمنٹ میں مشترکہ حکمت عملی پر غور کریں گے۔

Facebook Comments
Share Button