تازہ ترین

Marquee xml rss feed

خادم حسین رضوی کا دھرنا ختم نہ کرنے کا اعلان کردیا-پی ٹی ٓئی کی مشکلات میں اضافہ، باغی رہنماوں نے خاموشی سے بڑی چال چل دی-اسحاق ڈار وطن واپس نہیں آرہے ،معاملات جوں کے توں پڑے ہیں اسلئے ملک کو فل ٹائم وزیرخزانہ کی ضرورت ہے، ایم کیوایم پاکستان اور پی ایس پی کا اتحاد ٹوٹتے ہی دونوں جماعتوں ... مزید-شہباز شریف اور چوہدری نثار کی چھٹی جبکہ شاہد خاقان اور نواز شریف میں دوریاں بڑھنے کا وقت قریب آ گیا ہے ختم نبوت کا مسئلہ اٹھا کیوں، حکومت کو راجہ ظفر الحق کی رپورٹ کو فی ... مزید-دنیا کے مشہور ترین یو سی براوزر کی گوگل پلے اسٹور سے چھٹی-سی پیک سے صوبہ بلوچستان کو سب سے زیادہ ترقی اور فائدہ ہو گا، توانائی انفراسٹرکچر کی فراہمی سے بلوچستان میں معاشی اور سماجی انقلاب آئے گا،نوجوانوں کو روزگار کے بھرپورمواقع ... مزید-پاکستان اور بھارت کے ڈی جی ملٹری آپریشنز کے مابین غیر اعلانیہ ہاٹ لائن رابطہ بھارتی فوج کی لائن آف کنٹرول کی مسلسل خلاف ورزیوں ، بے گناہ شہریوں کو نشانہ بنانے کا معاملہ ... مزید-مریم اورنگزیب کی سینئر صحافی مظہر اقبال کی ہمشیرہ اورسینئر صحافی ذوالفقار بیگ کے چچا کے انتقال پر تعزیت-شیخ رشید کی جانب سے عمران خان کو جمائما سے دوبارہ شادی کرنے کا مشورہ-دھرنا قائدین اور حکومت کے درمیان مذاکرات میں پیش رفت ، تحریک لبیک کے رہنمائوں نے شوریٰ سے مشاورت کیلئے حکومت سے وقت مانگ لیا ، حکومت کا دھرنے کے رہنمائوں کے خلاف مقدمات ... مزید

GB News

حلیف ممالک ترکی کے خلاف بیان بازی بند کریں،ترک صدر

Share Button

ترک صدر رجب طیب اردگان نے ایک بار پھر واضح کیا ہے کہ داعش کا اسلام سے کوئی تعلق نہیں ہے بلکہ وہ ہمارے دین کے نام پر ایک دھبہ ہے، حلیف ممالک کو ایک دوسرے کی پالیسیوں کا احترام کرنے کی ضرورت ہے،ترکی ایسا واحد ملک ہے جس نے داعش کیخلاف جنگ میں بھرپور حصہ لیا ۔غیر ملکی میڈیا کے مطابق ترک صدر رجب طیب اردگان نے چین میں اخباری نمائندوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ حلیف ممالک کو ایک دوسرے کی پالیسیوں کا احترام کرنے کی ضرورت ہے لیکن اگر کوئی ملک اتحاد کو ضرر پہنچانے کا قدم اٹھاتا ہے تو ہمیں اس بارے میں سوچنا پڑے گا۔ صدر اردگان نے اس بات کی تردید کی داعش کے خلاف جنگ میںترکی نے سستی کا مظاہرہ کیا ہے ۔انہوں نے کہا کہ اگر ایسا ہوتا تو ہم داعش کے ٹھکانوں پر پے در پے حملے نہ کرکے اسے نقصان نہ پہنچاتے۔ انہوں نے کہا کہ بعض امریکی حلقوں نے اس بات کا چرچا کیا ہے مگر صورت حال اس کے بر عکس ہے اور ترکی ایسا واحد ملک ہے جس نے داعش کیخلاف جنگ میں بھرپور حصہ لیا ہے ۔ صدر نے ایک بار پھر واضح کیا کہ داعش کا اسلام سے کوئی تعلق نہیں ہے بلکہ وہ ہمارے دین کے نام پر ایک دھبہ ہے۔

Facebook Comments
Share Button