GB News

جمہوریت فروش سازشی ٹولے کے کہنے پر استعفیٰ نہیں دوں گا، وزیراعظم

وزیراعظم محمد نواز شریف نے کہا ہے کہ جمہوریت فروش سازشی ٹولے کے کہنے پر استعفیٰ دے دوں؟جے آئی ٹی رپورٹ ہمارے ذاتی کاروبار کے بارے میں الزامات اور بہتانوں کا مجموعہ ہے، میرے ضمیر پر کوئی بوجھ نہیں ایک پیسے کی بھی خورد برو کی توبتائو ، وقت آنے پریہ سب راز کھل جائیں گے،تعمیر وترقی کے سفر کو ڈی ریل نہیں ہونے دیں گے۔ جمعرات کو وفاقی کابینہ کے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے وزیر اعظم نے کہا کہ جے آئی ٹی رپورٹ ہمارے ذاتی کاروبار کے بارے میں مفروضوں کا مجموعہ ہے۔ جے آئی ٹی رپورٹ ہمارے ذاتی کاروبار کے بارے میں الزامات اور بہتانوں کا مجموعہ ہے۔ ہمارئے خاندان نے سیاست سے کمایا کچھ نہیں البتہ کھویا بہت کچھ ہے۔ انھوں نے کہا کہ مسلم لیگ ن نے استعفوں کا مطالبہ کرنے والوں کے مجموعی ووٹوں سے زیادہ ووٹ لیے ۔یہاں اربوں کے منصوبے لگ رہے ہیں لیکن بدعنوانی ثابت نہیں ہوئی۔انھوں نے کہا کہ چار سال میںہم نے تعمیر وترقی کااتنا کام کیا۔جتنا دو دہائیوں میں نہیں ہوا۔ پھر سے اندھیروں کو اپنی بستیوں ،اپنے کارخانوں کا رخ نہیں کرنے دیں گے۔ جمہوریت فروش ،سازشی ٹولے کے کہنے پر استعفی دے دوں؟ وزیراعظم نے کہا کہ اللہ کے فضل وکرم سے میرے ضمیر پر کوئی بوجھ نہیں 1985 سے لیکر آج تک 32برسوں میں ایک پیسے کی بھی خورد برو کی توبتائو ۔ تم تو الزام تک بھی نہیں لاسکتے وقت آنے پریہ سب راز کھل جائیں گے۔ وہ وقت زیادہ دور نہیں ،تعمیر وترقی کے سفر کو ڈی ریل نہیں ہونے دیں گے۔ پاکستان ماضی میں ان تماشوں کی بہت بھاری قیمت اداکرچکا ہے۔یہ سلسلہ اب بند ہوجانا چاہئے ،وزیراعظم کے مستعفی نہیں ہوتے دوٹوک اعلان کا زبردست خیر مقدم کیا گیا۔ کابینہ کے ارکان نے ڈیسک بجا کرفیصلے کی توثیق کی۔وفاقی کابینہ نے توانائی کی کابینہ کمیٹی کے 29اور 30مئی کے اجلاسوں کے فیصلوں کی توثیق کر دی،جبکہ سوئی نادرن گیس کے منیجنگ ڈائریکٹر کی تقرری کی منظوری اوراوگرا کے گیس ممبر کی تقررں اور اوگرا کے ممبرآئل کی تقرری کے لیے شرائط وضوابط کی بھی منظوری دے دی گئی اجلاس میںپاکستان اور ترکی کے درمیان فوجی تربیت سائنس وتکینک اور دفاع میں تعاون کے سمجھوتے، پاکستان اور تھائی لینڈ میں دفاعی شعبے میں مفاہمتی یاداشت ،یولینڈاور پاکستان میں دفاعی پیداوار کے شعبے میں سمجھوتے ،روس اور پاکستان کے مرکزی بینکوں کے درمیان دوطرفہ تعاون کے سمجھوتے ،کویت کے ساتھ پاکستان میں تیل کی تلاش کے لیے مفاہمتی یاداشت پر بات چیت شروع کرنیکی بھی منظوری دی گئی جبکہ پاکستان کے آذر بائیجان ،ویت نام ،اور برازیل کے درمیان فضائی سروسز شروع کرنے کے لیے بات چیت شروع کرنیکی بھی منظوری دی گئی ۔تفصیلات کے مطابق جمعرات کو وزیر اعظم نواز شریف کی زیر صدارت وفاقی کابینہ کا اجلاس ہوا جس میں سوئی نادرن گیس کے منیجنگ ڈائریکٹر کی تقرری کی منظوری دی گئی ۔ جبکہ اوگرا کے گیس ممبر کی تقررں اور اوگرا کے ممبرآئل کی تقرری کے لیے شرائط وضوابط کی بھی منظوری دی گئی۔ اجلاس میں توانائی کے کابینہ کمیٹی کے 29اور 30مئی کے اجلاسوں کے فیصلوں کی توثیق کی گئی ۔ جبکہ اسلام آباد ائیرپورٹ کا نام تجویذ کرنے کے لیے کابینہ کی خصوصی کمیٹی قائم کی گئی۔میر حاصل بزنجو،عرفان صدیقی ،مریم اورنگزیب اور بیرسٹر ظفراللہ کمیٹی میں شامل ہیں۔ وفاقی کا بینہ کے اجلاس میں مالدیپ کے ساتھ سیاسی شعبے میں مفاہمتی یاداشت کے لیے بات چیت شروع کرنے کی بھی منظوری دی گئی ۔جبکہ مالدیپکے ساتھ ڈیفنس کریڈٹ لائن کھولنے کے لیے مفاہمتی یاداشت پر بات چیت شروع کرئے اور مالدیپ کے سول سروس کمیشن اور نیشنل سکول آف پبلک پالیسی کے درمیان سمجھوتے کی منظوری بھی دی گئی ۔ مالدیپ کے فارن سروس انسٹیوٹ اور فارن سروسز اکیڈمی میں سمجھوتے کے لیے بات چیت شروع کرنے، پاکستان اور آذر بائیجان کے درمیان فضائی سروسز شروع کرنے کے لیے بات چیت شروع کرنے ،پاکستان اور ویت نام کے درمیان فضائی سروسز شروع کرنے کے لیے بات چیت شروع کرنے، پاکستان اور برازیل کے درمیان فضائی سروسز شروع کرنے کے لیے بات چیت کی بھی منظوری دی گئی ۔

Share Button