تازہ ترین

Marquee xml rss feed

سابق وزیراعظم نوازشریف کل نیب میں تفتیش کے لیے پیش ہونگے، سینئر تجزیہ کار کادعویٰ-حکومت کے گزشتہ چار سال کے دوران موثر اقدامات کے تحت ریلوے کی آمدنی میں نمایاں اضافہ ہوا ہی,ریلوے اراضی کی 95 فیصد ڈیجیٹلائزیشن مکمل کرلی ہے‘ قبضہ مافیا کے خلاف کارروائی ... مزید-ایف آئی اے اور پی ٹی اے نے عائشہ گلالئی کے عمران خان پر الزامات کی فرانزک تحقیقات کو ناممکن قرار دے دیا-بدعنوانی کی روک تھام اور لوٹی گئی رقم کی وصولی نیب کی اولین ترجیح ہے، چیئرمین نیب قمر زمان چوہدری-معیشت مضبوط نہ ہو تو ایٹم بم بھی آزادی کی حفاظت نہیں کر سکتے، سیاسی استحکام معیشت کی مضبوطی کا واحد راستہ ہے دوسروں کی جنگیں لڑتے لڑتے ہم نے اپنے معاشرہ کو کھوکھلا ... مزید-مولانا فضل الرحمان کا آرٹیکل 62,63کو آئین سے نکالنے کی حمایت سے انکار صادق اور امین کی بنیادی شقوں کو نکالنا آئین سے مذاق ہے-احتساب عدالت ، سابق وزیر اعظم راجہ پرویز اشرف کے خلاف رینٹل پاور کرپشن کیس میں دلائل مکمل ، فیصلہ محفوظ-عمران خان کا خیبرپختونخواہ کے خوبصورت علاقے کوہستان کا دورہ تصاویر سوشل میڈیا پر وائرل، تحریک انصاف کے سربراہ نے دنیا بھر کے سیاحوں کو پاکستان آنے کی دعوت دے دی-میاں صاحب اپنی عقلمندی کی وجہ سے آج یہ دن دیکھ رہے ہیں، خورشید شاہ ملک میں کوئی سیاسی بحران نہیں صرف ایک جماعت میں بحران ہے، چیئرمین نیب کی تقرری کیلئے بطور اپوزیشن لیڈر ... مزید-تاثردرست نہیں کہ فوج کے تمام سربراہوں کے ساتھ مخالفت رہی، محمد نوازشریف قانون کی حکمرانی پریقین رکھتاہوں،کبھی بھی اداروں کے ساتھ ٹکراؤ کی پالیسی نہیں اپنائی،سپریم ... مزید

GB News

میزائل پروگرام پر کوئی سمجھوتہ نہیں کریں گے، ایرانی آرمی چیف

Share Button

ایران کے چیف آف آرمی اسٹاف نے کہا ہے کہ ایران کی میزائل توانائی و طاقت دفاعی نوعیت کی ہے جس کے بارے میں ہرگز کسی بھی طرح کے مذاکرات نہیں ہو سکتے۔ایرانی میڈیا کے مطابق ایران کے چیف آف آرمی اسٹاف میجر جنرل محمد باقری نے پیر کے روز ایران کے شمال مشرقی شہر مشہد مقدس میں سپاہ پاسداران انقلاب اسلامی کی بری فوج کے کمانڈروں کے اجلاس سے اپنے خطاب میں تاکید کے ساتھ کہا کہ ایراننے دشمن سے لاحق خطرات کے مقابلے میں اپنی دفاعی توانائی و طاقت اور آمادگی کا نہ صرف تحفظ کیا بلکہ اس میں اضافہ بھی کیا ہے۔انھوں نے کہا کہ ایران نے اپنے بل بوتے پر دفاعی طاقت و توانائی کو فروغ دیتے ہوئے اپنی سرحدوں کے تحفظ اور تکفیری دہشت گردوں کا مقابلہ کرنے میں مزاحمتی ملکوں کی مدد کرنے کے ساتھ ساتھ  ایرانی عوام کو مثالی امن کا تحفہ پیش کیا ہے۔ایران کے چیف آف آرمی اسٹاف نے ایران میں نظام حکومت کی تبدیلی پر مبنی امریکہ کے فوجی حکام کے مداخلت پسندانہ بیانات کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ امریکی حکام کو چاہئے ایک ایسے ملک کے بارے میں کہ جس نے ہر قسم کی سازش پر پانی پھیرتے ہوئے دشمن کو ناکوں چنے چبوائے ہیں، عقل و شعور کی باتیں کریں۔انھوں نے ایران کے خلاف امریکی سینیٹ کی پابندیوں کے بارے میں بھی کہا کہ ایرانی قوم نے عالمی استکبار اور تسلط پسندانہ نظام خاص طور سے امریکہ کے مقابلے میں ہمیشہ استقامت و مزاحمت کا مظاہرہ کیا ہے اور وہ روز بروز مضبوط و مستحکم ہوئی ہے اس لئے آئندہ بھی پابندیوں کا نفاذ ایرانی قوم میں مزید خوداعتمادی اور ترقی و پیشرفت کے مواقع تلاش کئے جانے کا باعث بنے گی۔میجر جنرل محمد باقری نے امریکہ کی جانب سے ایران کی سپاہ پاسداران انقلاب اسلامی کو دہشت گرد گروہوں کی فہرست میں شامل اور دہشت گرد گروہوں کی مانند ہی اس کے خلاف پابندیاں عائد کئے جانے کے اقدام کو علاقے میں واشنگٹن اور اسکے اڈوں نیز امریکی فوجیوں کے لئے بڑے خطرے کے مترادف قرار دیا۔انھوں نے اسی طرح عراقی کردستان میں ریفرنڈم کے انعقاد کا مسئلہ اٹھائے جانے کو علاقے میں نئے مسائل و مشکلات کے آغاز کا آئینہ دار قرار دیا اور تاکید کے ساتھ کہا کہ یہ مسئلہ عراق کے پڑوسی ملکوں کے لئے کبھی قابل قبول نہیں ہو سکتا۔ انھوں نے کہا کہ عراق کی ارضی سالمیت و آزادی اس ملک کی تمام اقوام و مذاہب کے مفاد میں ہے۔

Share Button