تازہ ترین

Marquee xml rss feed

پاک افغان سرحدی علاقے میں ایک اور امریکی ڈرون حملہ، 2 خطرناک دہشت گردوں کو ہلاک کر دیے جانے کی اطلاعات-مستونگ کے مرکزی بازارمیں دھماکے کی اطلاع-آرمی چیف کا آرمی میڈیکل سنٹرایبٹ آباد کا دورہ،ڈاکٹرزاورمیڈیکل سٹاف کی تعریف یاد گارشہداء پرحاضری اور پھول بھی چڑھائے،دہشتگردکی جنگ میں آرمی میڈیکل کورنے قیمتی جانیں ... مزید-طارق فضل چوہدری کی طرف سے وفاقی دارالحکومت میں ایمبیسی روڈ پر درختوں کی کٹائی کا نوٹس لینے پر سی ڈی اے نے رپورٹ پیش کر دی-عمران خان سیاست میں اناڑی ہیں، انہیں آرام کی ضرورت ہے ،ْ دانیال عزیز فرد جرم عائد ہونے کے بعد نیب ٹیم کون سے ثبوت تلاش کرنے کے لئے لندن گئی ہوئی ہے ،ْ میڈیا سے گفتگو ... مزید-وزیر اعظم کی قندھار میں افغان سکیورٹی اہلکاروں پر ہونے والے دہشت گردوں کے حملہ کی سخت مذمت-ایف آئی اے کی جدید بنیادوں پر تنظیم کی جائے،نئی ٹیکنالوجی سے جرائم پر قابو پانے کی صلاحیت حاصل کی جائے، انسانی اسمگلنگ کی روک تھام کیلئے موثر اور عملی اقدامات اٹھائے ... مزید-وزیراعلیٰ پنجاب شہبازشریف نے نیب کو کرپٹ ترین ادارہ قراردے دیا نیب کرپشن ختم کرنے کی بجائے کرپشن کا گڑھ بن چکا،مشرف اور بعد کے ادوارمیں نیب کو سیاسی مقاصدکیلئے استعمال ... مزید-سیکرٹری وزارتِ انسداد منشیات اقبال محمود کا اے این ایف ہیڈکوارٹر راولپنڈی کا دورہ-ن لیگ خیبرپختونخواہ دوست محمد خان نے پیپلزپارٹی میں شمولیت کا اعلان کردیا

GB News

جمہوریت آگے بڑھ رہی ہے اچھی بات ہے،جنرل قمر جاوید باجوہ

Share Button

اسلام آباد (آئی این پی ) چیف آف آرمی سٹاف جنرل قمر جاوید باجوہ نو منتخب وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی کی تقریب حلف برداری میں شرکت کے موقع پر مہمانوں میں گل مل گئے اور خوب حال احوال بانٹے، مولانا فضل الرحمان سے گلے مل لیا ، سینیٹر مشاہد اللہ کے ساتھ بھی زمانہ طالبعلمی کی یادیں تازہ کیں ، ایک صحافی کے سوال پر کہا کہ جمہوریت آگے بڑھ رہی ہے اچھی بات ہے ۔ تفصیلات کے مطابق منگل کو یہاں ایوان صدر میں نو منتخب وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی کی تقریب حلف برداری میں دیگر شخصیات کے علاوہ آرمی چیف جنرل قمر جاوبد باجوہ نے بھی شرکت کی ۔ اس دوران وہ مہمانوں میں گل مل گئے ۔ایک موقع پر ایک صحافی نے آرمی چیف سے سوال کیا کہ آپ جمہوری عمل کو کیسے دیکھتے ہیں ؟ آرمی چیف نے دلچسپ جواب دیا کہ جیسے دوسرے دیکھ رہے ہیں تاہم انہوں نے کہا کہ جمہوریت آگے بڑھ رہی ہے یہ اچھی بات ہے ۔ اس دوران مولانا فضل الرحمن نظر آئے تو آرمی چیف نے برجستہ اور دلچسپ جملوں میں کہا کہ مولانا فضل الرحمان سے ملنے دیں ورنہ فتویٰ جاری ہو جائے گا ۔ تقریب کے بعد چائے کی دعوت کی گئی اس دوران آرمی چیف نے صدر ، وزیر اعظم اور دیگرشرکاء سے مصافحہ بھی کیا جب کہ مولانا فضل الرحمان سے گلے ملے ۔ آرمی چیف کچھ دیر تر مسلم لیگ ( ن) کے رہنما سینیٹر مشاہد اللہ خان کے ساتھ بھی رہے اور راولپنڈی میں اپنے زمانہ طالبعلمی کی یادیں تازہ کیں اور کہا کہ میرے ایک بھائی پی آئی اے میں رہے اور میں آپ کو جانتا ہوں ہمارے گھر میں آپ کا تذکرہ ہوتا رہتا ہے ۔ اس دوران سینیٹر مشاہد اللہ نے کہا کہ مجھے جہاں تک یاد ہے میں شائد سکول میں آپ سے تین چار سال سینئر تھا ، دونوں نے کسی خاص کلاس فیلو کو بھی یاد کیا ۔ اس دوران آرمی چیف سے راولپنڈی کینٹ سے منتخب رکن قومی اسمبلی ملک ابرار بھی ملے اور اپنا تعارف بھی کرایا ۔ وزیر اعظم کی تقریب حلف برداری میں شاہد خاقان عباسی کے قریبی عزیزوں اور اہل علاقہ نے بڑی تعداد میں شرکت کی ۔

 

Facebook Comments
Share Button