تازہ ترین

Marquee xml rss feed

اسفند یار ولی نے بھی عمران خان کے اگلے وزیر اعظم ہونے کی پیش گوئی کر دی عمران خان جیتیں گے یا جتوائیں گے لیکن عمران خان اگلا وزیر اعظم ہے،سربراہ اے این پی-آئی جی پنجاب کا نواب سراج رئیسانی ، ہارون بشیر بلور سمیت دیگر افراد کی شہادت پر گہرے رنج و غم کا اظہار-رحیم یار خان پولیس کے سپیشل آپریشن یونٹ کی کچے کے علاقے میں کارروائی، آپریشن میںڈاکو نادر سکھانی مارا گیا ڈاکوئوں کی قید سے گیارہ مغوی بیوپاریوں کو بحفاظت بازیاب ... مزید-شفاف الیکشن کیلئے ضابطہ اخلاق پر عمل کرنا ہر کسی کیلئے یکساں لازم ہے، خلاف ورزی کی صورت میں بلاتفریق کارروائی کی جا رہی ہے ،صوبائی وزیر اطلاعات احمد وقاص ریاض-الیکشن کمیشن تحریک انصاف کے سربراہ عمران خان کی مبینہ نامناسب تقاریر پر پابندی عائد کرے،مریم اورنگزیب-نگران وزیراعلیٰ پنجاب سے نائیجیریا کے 7 رکنی وفدکی ملاقات نائیجیرین وفد کا دورہ باہمی تعلقات کے نئے دور کا نقطہ آغاز ثابت ہوگا، ڈاکٹر حسن عسکری پاکستان بہت شاندار ملک ... مزید-25 جولائی کو شیر پر مہر لگا کر نواز شریف اور مسلم لیگ (ن ) کو کامیاب بنانا ہے ‘شہباز شریف ان اندھیروں میں بھی منزل تک پہنچائیں گے ، اللہ نے موقع دیا تو پانچ سال میں کئی محاذ ... مزید-پیپلز پارٹی کے گڑھ میں میں پاکستان تحریک انصاف کا تاریخی جلسہ ،عوام کے ٹھاٹھیں مارتے سمندر نے عمران کو لبیک کہا جیکب آباد میں ہزاروں کارکنان نے جلسے میں شرکت کر کے تحریک ... مزید-اٹک پولیس کا سرچ آپریشن، ناجائز اسلحہ بر آمد-الیکشن کمیشن نے مرُدوں کو بھی ووٹ ڈا لنے کی اجازت دے دی ووٹر لسٹ میں سینکڑوں مرُدوں کے نام شا مل

GB News

پاکستان پر دبائو ڈالنے سے منفی اثرات مرتب ہوں گے، روس،چین

Share Button

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی دھمکی کے حوالے سے چین کے بعد روس بھی پاکستان کی حمایت میں میدان میں آگیا، روسی صدر کے افغانستان کیلئے خصوصی نمائندے ضمیر کابلوف نے خبردار کیا ہے کہ ٹرمپ کی پاکستان کے حوالے سے حکمت عملی درست نہیں ،پاکستان خطے کا ایک اہم ملک ہے اس پر دبائو بڑھانا خطے کو غیر مستحکم کرسکتا ہے،پاکستان کے تعاون اور مرضی کے بغیر خطے میں استحکام بہت مشکل ہوگا،دوسری جانب روسی وزارت خارجہ کی ترجمان نے بھی نئی افغان پالیسی کو شدید تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا ہے کہ اس کے مقاصد فوجی حل کے ہیں، نئی امریکی حکمت عملی آئی ایس آئی ایل کی افغان شاخ کے خطرے کی مناسب طریقے سے عکاسی نہیں کرتی جو افسوسناک ہے۔غیر ملکی میڈیا کے مطابق امریکی صدر کی الزام تراشیوں کے بعد چین کے بعد روس بھی پاکستان کی حمایت میں بول اٹھا۔روسی صدر کے افغانستان کیلئے خصوصی نمائندے ضمیر کابلوف نے امریکی پالیسی پر بیان جاری کرتے ہوئے کہا ہے کہ ڈونلڈٹرمپ کی پاکستان کے حوالے سے حکمت عملی درست نہیں ،پاکستان خطے کا ایک اہم ملک ہے ،پاکستان پر دبائو بڑھانا خطے کو غیر مستحکم کرسکتا ہے ۔ضمیر کابلوف نے کہاکہ پاکستان کے خلاف اس طرح کے بیان سے افغانستان پر بھی منفی اثرات مرتب ہوسکتے ہیں۔پاکستان کے تعاون اور مرضی کے بغیر خطے میں استحکام بہت مشکل ہوگا۔ افغانستان کے مسئلے کے حل کے لیے پاکستان کا کردار انتہائی اہم ہے۔دوسری جانب روسی وزارت خارجہ کی ترجمان ماریا زخاروفا نے امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی نئی افغان پالیسی کو شدید تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا ہے کہ ہم نے محسوس کیا ہے کہ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی جانب سے 21اگست کو اعلان کردہ نئی افغان پالیسی میں افغان مسئلے کے فوجی حل پر توجہ مرکوز کی گئی ہے خاص طورپر غیر ملکی افواج کی تعداد میں اضافہ کرکے ۔ترجمان کا کہنا تھاکہ نئی امریکی حکمت عملی آئی ایس آئی ایل کی افغان شاخ کے خطرے کی مناسب طریقے سے عکاسی نہیں کرتی جو افسوسناک ہے ۔ واضح رہے کہ اس سے قبل امریکی صدر کے بیان پر چینی وزارت خارجہ نے کہا تھا کہ چین اور پاکستان ایک دوسرے کو بہترین دوست سمجھتے ہیں اور دونوں ممالک کے ایک دوسرے کے ساتھ سفارتی، معاشی اور سکیورٹی کے حوالے سے گہرے روابط ہیں۔ پاکستان دہشت گردی کے خلاف جنگ میں ہراول محاذ پر ڈٹا ہوا ہے، جس میں اس نے بے شمار قربانیاں دیں اور اہم کردار ادا کیا ہے۔ یادرہے کہ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے افغانستان کیلیے امریکی پالیسی میں پاکستان سے متعلق پالیسی بیان کرتے ہوئے الزام لگایا تھا کہ پاکستان افراتفری پھیلانے والے افراد کو پناہ دیتا ہے۔

Facebook Comments
Share Button