تازہ ترین

Marquee xml rss feed

وزیراعلیٰ پنجاب ش�بازشری� کا سابق و�اقی وزیر میر نواز خان مروت کے انتقال پر اظ�ار تعزیت-وزیراعلیٰ کی ورکنگ بائونڈری پر بھارتی ا�واج کی بلااشتعال �ائرنگ سے ش�ید �ونیوالے ش�ریوں کے لواحقین کیلئے مالی امداد کا اعلان ش�داء کے لواحقین کو 5لاکھ �ی کس کے حساب ... مزید-وزیراعلیٰ پنجاب ش�بازشری� کا سعودی عرب کے قومی دن کے موقع پر پیغام-وزیراعلیٰ کی زیرصدارت اجلاس، پاک میڈیکل �یلتھ نمائش کے انعقاد کے انتظامات کا جائز� نمائش ما� رواں کے آخر میں منعقد �وگی،ترک وزارت صحت کے اعلیٰ حکام، ترک اور پاکستانی ... مزید-محرم الحرام ، عوام کے جان و مال کے تح�ظ اورامن و امان کے قیام کیلئے سکیورٹی کے �ول پرو� انتظامات کیے جائیں‘ش�بازشری� گزشت� برسوں سے بڑھ کر سکیورٹی انتظامات کئے جائیں ... مزید-وزیراعلیٰ پنجاب کی سیالکوٹ ورکنگ بائونڈری پر بھارتی �وج کی �ائرنگ و گول� باری کی شدید مذمت قیمتی انسانی جانوں کے ضیاع پر اظ�ار ا�سوس، ش�داء کے لواحقین سے دلی �مدردی ... مزید-آئند� مالی سال کے بجٹ میں شعب� تعلیم میں مجموعی طور پر 345ارب روپے کی رقم مختص کی گئی �ے،رانا مش�ود احمد-چیئر مین سینیٹ کا ایوان بالا اجلاس میں وزیر مملکت داخل� کی عدم حاضری پر شدید اظ�اربر�می وزارت داخل� سے متعلق 33 سوالات �یں، وزیر مملکت داخل� ابھی تک ن�یں آئے، ی� سینیٹ ... مزید-پی آئی اے میں مالی بحران کے باعث کیبن کریو کو دو ما� کی ادائیگی ن�یں کی جاسکی ، جون 2017ء تک 3.2 ملین روپے �لائنگ الائونس کی مد میں دیئے گئے، دو ما� کے بقایا جات آئند� ایک ... مزید-پرویز مشر� کا بیان پیپلزپارٹی کے خلا� ساز ش �ے ،این اے 120 الیکشن میں ایک خاص �ضا بنائی گئی ،عوام بلاول بھٹو کے ساتھ �ے،جو ایم این اے بننے کا ا�ل ن�یں و� پارٹی صدارت کا بھی ... مزید

GB News

شریف خاندان، ڈار کے خلاف ریفرنسز کی منظوری

Share Button

قومی احتساب بیورو(نیب) کے ایگزیکٹو بورڈ نے پانامہ کیس میں سابق وزیراعظم نواز شریف، ان کے بچوں، کیپٹن(ر)صفدر اور سینیٹر اسحاق ڈار کے خلاف 4ریفرنسزکی منظوری دے دی جو (آج) راولپنڈی اسلام آباد کی احتساب عدالت میں دائر کر دیئے جائیں گے،3ریفرنسز نواز شریف اور ان کے بچوں جبکہ ایک ریفرنس وزیر خزانہ سینیٹر اسحاق ڈار کے خلاف تیار کیاگیا ہے،نواز شریف اور ان کے بچوں کے خلاف لندن فلیٹس، آف شور کمپنیوں اور عزیزیہ سٹیل اور ہل میٹل کمپنی کے ریفرنسز بنائے گئے ہیں جبکہ سینیٹر اسحاق ڈار اور ان کے بچوں کے خلاف آمدن سے زائد اثاثے رکھنے کا ریفرنس تیار کیا گیا ہے،چاروں ریفرنسز میں جے آئی ٹی کے سربراہ اور ایڈیشنل ڈائریکٹر جنرل ایف آئی اے واجد ضیاء سرکاری گواہ ہوں گے، ریفرنسز میں سابق وزیراعظم نواز شریف، حسن نواز، حسین نواز، مریم نواز، کیپٹن صفدر اور سینیٹر اسحاق ڈار کو ملزم نامزد کیاگیا ہے،ریفرنسز میں نامزد ملزمان کے نام ای سی ایل میں ڈالنے اور ان کے اثاثے منجمند کرنے کا معاملہ احتساب عدالت پر چھوڑ دیا گیا ہے، چیئرمین نیب قمر زمان چوہدری نے نیب راولپنڈی اور لاہور کی طرف سے دیئے گئے وقت کے اندر ریفرنسز تیار کرنے کے کام کو سراہتے ہوئے نیب کے پراسیکیوشن ونگ کو ہدایت کی کہ چاروں ریفرنسز کی احتساب عدالت میں بھرپور انداز میں پیروی کی جائے۔نیب کی طرف سے جاری اعلامیے کے مطابق جمعرات کو نیب کے ایگزیکٹو بورڈ کا اجلاس چیئرمین قمر زمان چوہدری کی زیر صدارت نیب ہیڈکوارٹرز میں ہوا۔ اجلاس میں ڈپٹی چیئرمین نیب، پراسیکیوٹر جنرل نیب،ڈی جی آپریشنز، ڈی جی راولپنڈی سمیت دیگر افسران نے شرکت کی جبکہ نیب لاہور کے ڈی جی اور ان کی ٹیم وڈیو لنک کے ذریعے اجلاس کی کارروائی میں شامل ہوئی، نیب راولپنڈی کی ٹیم نے سابق وزیراعظم نواز شریف،حسین نواز، حسن نواز ،مریم نواز اور کیپٹن صفدر کے خلاف تیار کئے گئے دو ریفرنسز پر اجلاس کو بریفنگ دی اور بتایا کہ ان دونوں ریفرنسز میں جے آئی ٹی کے سربراہ واجد ضیاء سرکاری گواہ ہوں گے اور واجد ضیاء کا بیان بھی ان ریفرنسز کا حصہ بنایا گیا ہے جبکہ نیب لاہور کی ٹیم نے ویڈیو لنک کے ذریعے اجلاس کو ریفرنسز پر بریفنگ دی، نیب لاہور نے سابق وزیراعظم نواز شریف اور ان کے بچوں کے خلاف ایک ریفرنس جبکہ سینیٹر اسحاق ڈار کے خلاف ایک ریفرنس تیار کیا۔ پراسیکیوٹر جنرل نیب نے اجلاس کو تیار کئے گئے ریفرنسز کے قانونی پہلوئوں سے آگاہ کیا،3گھنٹے تک جاری رہنے والے نیب بورڈ کے اجلاس میں چارں ریفرنسز کی منظوری دے دی گئی ہے اور یہ چاروں ریفرنس نیب پراسیکیوشن ونگ کی جانب سے (آج) جمعہ کو راولپنڈی اسلام آباد کی احتساب عدالت میں دائر کر دیئے جائیں گے، ان چاروں ریفرنسز میں سابق وزیراعظم نواز شریف،حسن نواز، حسین نواز، مریم نواز، کیپٹن صفدر اور سینیٹر اسحاق ڈار نامزد ملزم ہیں۔ سابق وزیراعظم نواز شریف اور ان کے بچوں کے خلاف لندن فلیٹس،فلیگ شپ انوسٹمنٹ اور 15آف شور کمپنیوںاور عزیزیہ سٹیل اور ہل میٹل کمپنی کے ریفرنسز بنائے گئے ہیں جبکہ سینیٹر اسحاق ڈار اور ان کے بچوں کے خلاف آمدن سے زائد اثاثے رکھنے کا ریفرنس تیار کیا گیا ہے۔نیب ذرائع کے مطابق سابق وزیراعظم نواز شریف، ان کے بچوں، داماد کیپٹن(ر) صفدر اور وزیر خزانہ سینیٹر اسحاق ڈار کے نام ای سی ایل میں ڈالنے اور ان کے اثاثے منجمند کرنے کا معاملہ احتساب عدالت پر چھوڑ دیا گیا ہے۔واضح رہے کہ سپریم کورٹ آف پاکستان کی طرف سے پانامہ کیس میں جے آئی ٹی کی رپورٹ کی روشنی میں نیب کو 6ہفتوں کے اندر ریفرنسز تیار کر کے متعلقہ احتساب عدالت میں دائر کرنے کا حکم دیا گیا تھا اور یہ 6 ہفتے (آج) جمعہ 8ستمبر کو مکمل ہوجائیں گے اور (آج) جمعہ کے روز ہی نیب یہ ریفرنسز احتساب عدالت میں دائر کر کے عدالتی حکم کی تعمیل کر دے گا۔ چیئرمین نیب قمر زمان چوہدری نے پراسیکیوشن ونگ کو ہدایت کی کہ چاروں ریفرنسز میں بھرپور انداز میں پیروی کی جائے، انہوں نے نیب راولپنڈی اور لاہور ریجنز کی طرف سے مقررہ وقت کے اندر ریفرنسز کی تیاری کے کام کو سراہا۔

Facebook Comments
Share Button