تازہ ترین

Marquee xml rss feed

حکومت اور تحریک لبیک پاکستان میں بیک ڈور رابطے تحریک لبیک کے 322 رہنماؤں اور کارکنان کو رہا کر دیا گیا-سپریم کورٹ کا علیمہ خان کو 29.4 ملین روپے جمع کروانے کا حکم-چیف جسٹس آف پاکستان جسٹس ثاقب نثار کا تھر کا دورہ چیف جسٹس کے دورے کے دوران کئی اہم انکشافات سامنے آ گئے-خواجہ سعد رفیق ریلوے خسارہ کیس کی سماعت کے لیے سپریم کورٹ میں پیشی سابق وزیر ریلوے کو نیب اور پولیس کی تحویل میں عدالت میں لایا گیا-سپریم کورٹ نے پاکپتن اراضی کیس میں جے آئی ٹی تشکیل دے دی تین رکنی جے آئی ٹی کے سربراہ خالد داد لک ہوں گے جب کہ تحقیقاتی ٹیم میں آئی ایس آئی اور آئی بی کا ایک ایک رکن بھی شامل ... مزید-لاہور میں پنجاب اسمبلی کی خالی نشست پی پی 168 پر ضمنی انتخاب‘نون لیگ اور تحریک انصاف میں مقابلہ پولنگ کا آغاز صبح 8 بجے سے 5 بجے تک جاری رہے گی-نواز شریف کے خلاف العزیزیہ ریفرنس کی سماعت‘فیصلہ محفوظ کیے جانے کا امکان نیب پراسیکیوٹر سردار مظفر عباسی جواب الجواب دے رہے ہیں‘حسن، حسین کی پیش دستاویزات کو انڈورس ... مزید-صدر مملکت عارف علوی کی عمرہ کی ادائیگی صدر مملکت کے لیے خانہ کعبہ کا دروازہ بھی کھولا گیا-گوگل پر احمق (Idiot) لکھیں صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی تصاویردیکھیں کمپنی نے کانگریس کی کمیٹی کے سامنے پیش ہوکر مبینہ الزام کو مسترد کردیا-آئندہ چوبیس گھنٹوں کے دوران ملک کے شمالی علاقوں میں موسم شدید سرد اور خشک رہے گا، محکمہ موسمیات

GB News

ہم شہر کو خوبصورت بنانے کیلئے مزید منصوبوں پر کام کررہے ہیں،وزیر اعلیٰ

Share Button

گلگت(خصوصی رپورٹ)وزیر اعلیٰ گلگت بلتستان حافظ حفیظ الرحمن نے کہا ہے کہ جنگ آزادی گلگت بلتستان کے شہداء ،غازیوں اور ہیروز کو خراج عقیدت پیش کرنے کیلئے ہمارا فرض بنتا ہے کہ ان شہداء کے جائے شہادت اور جائے پیدائش کو زندہ سلامت رکھیں اسی جذبے کے تحت ہم نے جنگ آزادی گلگت بلتستان کے شہدا کی یاد گار کی تعمیر نو اور تزئین آرائش کی گئی ہے انہوںنے منگل کی شام کو چنار باغ گلگت میں یاد گار شہدائے گلگت بلتستان کی تعمیر نو کے بعدافتتاحی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ گزشتہ سال یکم نومبر کو ہم جشن آزادی گلگت بلتستان کے موقع پر شہدا کی یاد گارپر پھول چڑھانے کیلئے گئے تو یاد گار کی حالت زار دیکھ کر ہمیں دکھ ہوا اورہم نے یادگار شہدا کی تعمیرنو کا فیصلہ کیا انہوںنے کہا کہ ماضی میں بہت سی حکومتیں آئیں انہوںنے بہت سے غیر ضروری اخراجات کئے ایک ایک گھر کی تزئین آرائش پرکروڑوں خرچ کئے گئے مگر کسی نے قوم کی یاد گار پر کوئی توجہ نہیں دی انہوںنے کہا کہ ہم نے شہدا کی یاد گار کی تعمیر نو کا عہد کیا جی ڈی اے نے ایک سال کے عرصے میں مکمل کرنے کی یقین دہانی کرادی پہلے تھری ڈی نقشہ بنایا اور ایک سال کے قلیل عرصے میں اس منصوبے کو زمین پر اتارا۔انہوںنے کہا کہ ماضی میں گلگت بلتستان کی پہچان ادھورے منصوبوں کا قبرستان بن چکا تھا ایک ایک رابطہ سٹرک پندرہ سال گزرنے کے باوجود بھی نامکمل رہتی تھی اسمبلی کی بلڈنگ کی تعمیر کا کام 2004میں شروع ہوا مگر اب تک نامکمل ہے ۔مگر اب ہمارے دور حکومت میں ترقیاتی منصوبے تیزی سے مکمل ہورہے ہیں انہوںنے کہا کہ ترقیاتی منصوبے کسی کے ذاتی منصوبے نہیں ہیں یہ گلگت بلتستان کے عوام کے مفاد کے منصوبے ہیں اگرہم ان ترقیاتی منصوبوں کو بروقت مکمل کریں اور معیار برقرار رکھیں تو اس سے عوام کو فائد ہوگا۔انہوںنے کہا کہ گلگت شہر نے بڑے بڑے خون خرابے دیکھے ہیں،کشت و خون دیکھا ہے دس سال شہر کے لوگوں نے کرفیو دیکھا ہے اب سیکورٹی اداروں ،سیاسی جماعتوں اورعوام کی کوششوں کی وجہ سے علاقے میں امن قائم ہوا ہے جس کی وجہ سے رواں برس پندرہ لاکھ سیاح آئے اب ہماری ذمہ داری بنتی ہے کہ یہاں آنے والے سیاحوں کو صاف ستھرا ماحول فراہم کریں سیاحوںکو بیٹھنے کی جگہ ہو دیکھنے کیلئے خوبصورت مقامات ہوںاس لئے ہم شہر کو خوبصورت بنانے کیلئے مزید منصوبوں پر کام کررہے ہیں زیروپوائنٹ پر خوبصورت پارک بنارہے ہیں لالک جان سٹیڈیم کی تزئین و آرائش کررہے ہیں خواتین کیلئے الگ پارک بنارہے ہیں اس موقع پر بروقت یاد گار شہدا کی تعمیرکرنے پرٹھیکیدار فردوس احمد کو شیلڈ اور نقد بیس ہزار روپے انعام دینے کا اعلان کیا انہوں نے جی ڈی اے کی کارکردگی کوبھی سراہا۔

Facebook Comments
Share Button