تازہ ترین

Marquee xml rss feed

عمران خان کے لیے راستہ صاف، سابق وفاقی وزیر نے این اے 131لاہور سے کاغذات نامزدگی واپس لے لیے پاکستان تحریک انصاف میں شمولیت اختیار کرنے والے ہمایوں اختر نے عمران خان کے ... مزید-سندھ کے عوام کو وڈیروں نے اپنی طاقت کے زور سے نسل درنسل غلام بنائے رکھا، عائشہ گلالئی پیپلز پارٹی نے سندھ کو 10 میں بہتر بنانے کے بجائے مزید خراب کردیا، ضلع سجاول میں ... مزید-سندھ پولیس کی سطح پر شجرکاری مہم کا فوری طور پر آغاز کیا جائے ، آئی جی سندھ کی ہدایات-شاہ عبدالطیف بھٹائی انسائیکلوپیڈیا کی تین جلدیں شائع ہونا تھیں جن میں سے آج پہلی جلد شائع ہوگئی، نگراں وزیراعلیٰ سندھ شاہ عبداللطیف بھٹائی انسائیکلو پیڈیا سندھی ... مزید-پی پی پی کے حلقہ پی بی 25سے امیدوار شریف خلجی (کل) پریس کانفرنس کرینگے-سندھ کو پیپلزپارٹی اور ایم کیو ایم نے مل کر تباہ کردیا ہے، عوام بنیادی مسائل حل نہ ہونے سے پریشان ہیں، مصطفی کمال سندھ میں اگلا وزیر اعلیٰ پی ایس پی کا یا پھر ہمارا حمایت ... مزید-ایم ایم اے کے انتخابی دفتر پر پولیس کی فائرنگ پولیس اہلکار کو معطل کر کے واقعے کی مزید انکوائری کا حکم دے دیا گیا، پولیس-حکومت اور اس کے کارندوں نے 80 سالہ بزرگ پنشنرز کو عمر کے آخری دور میں بھی شدید عذاب میں مبتلا کررکھا ہے، جنرل سیکریٹری ایمپلائز ایسوسی ایشن چیف جسٹس کے ریمارکس عدالت ... مزید-عابد باکسر نے شہباز شریف کے لیے نئی مصیبت کھڑی کردی جائیداد ہتھیانے کے لیے مجھ سے قتل کروایا گیا،بعد میں مجھے ہی کیسسز میں ملوث کروا کر جعلی مقابلے میں قتل کروانے کی کوشش ... مزید-بلاول بھٹو زرداری انتخابات میں شفافیت پر بات کرنے سے قبل نواز شریف کا ساتھ دینے پر قوم سے معافی مانگیں ،ْفواد چوہدری بلاول کی جانب سے کسی نام نہاد سازش کی جانب اشارہ ... مزید

GB News

چیف سیکرٹری کی پوسٹ کا گریڈ 21سے بڑھا کر 22کرنے کی سفارش

Share Button

اسلام آباد (آئی این پی)سینٹ کی قائمہ کمیٹی برائے امور کشمیر و گلگت بلتستان نے گلگت بلتستان کے چیف سیکرٹری کی پوسٹ کا گریڈ 21سے بڑھا کر 22کرنے کی سفارش کر دی ،جبکہ گلگت بلتستان میں سیاحت کو فروغ دینے کے لئے پبلک اور پرائیویٹ پارٹنر شپ میں ٹوارزم پروموشنل بورڈ بنانے کی بھی تجویز دے دی،کمیٹی نے گلگت بلتستان حکومت سے آغا خان رورل سپورٹ پروگرام کی فنڈنگ سمیت دیگر تفصیلات بھی طلب کر لیں ، کمیٹی کو گلگت بلتستان حکومت کے حکام کی جانب سے بتایا گیا کہ ہم چھ نئے ریسٹ ہائوس بنا رہے ہیں عطاء آباد جھیل کے مقام پر بھی ریزورٹ بنایا جائے گا، گلگت کے نئے ایئرپورٹ کے حوالے سے بھی کام ہورہا ہے،جب تک شتونگ نالے سے پانی کا رخ تبدیل نہیں کیا جائے گا ہم سدپارا ڈیم سے پوری طرح استفادہ حاصل نہیں کر سکتے ، شتونگ نالے سے ایک سو پانچ کیوسک پانی کا رخ موڑیں گے۔بدھ کو سینٹ کی قائمہ کمیٹی برائے امور کشمیر و گلگت بلتستان کا اجلاس سینیٹر پروفیسر ساجد میر کی صدارت میں ہوا۔ چیئرمین کمیٹی نے کہا کہ گلگت بلتستان کی دستوری حیثیت کے معاملے پر سرتاج عزیز کی سربراہی میں کمیٹی بنی تھی ۔اس موقع پر سیکرٹری وزارت امور کشمیر وگلگت بلتستان نے کہا کہ سرتاج عزیز کمیٹی کی چار میٹنگز ہوئیں اور اس کی رپورٹ 28ستمبر کو وزیراعظم کو بھجوا دی گئی ہیں ۔ اس موقع پر سینیٹر رحمن ملک نے کہا کہ وہ رپورٹ ہمیں بھجوا دی جائے۔ گلگت کو صوبے کا درجہ دیا گیا تھا اگر اسے دیگر صوبوں کے برابر درجہ دیا گیا ہے تو اس کو ملنے والی سہولیات اور بجٹ دیگر صوبوں کے برابر نہیں ہیں۔ اس رپورٹ کی سفارشات آئی ہی نہیں ہیں تو یہ معاملہ کمیٹی اجلاس کے ایجنڈے پر کیوں رکھا گیا ہے۔ اس موقع پر چیئرمین کمیٹی نے کہا کہ گلگت میں پاور پراجیکٹس کے سٹاف کی کمی سامنے آئی ہے۔ جس پر سیکرٹری فنانس گلگت بلتستان نے بریفنگ دیتے ہوئے کہا کہ واٹر اینڈ پاور ڈیپارٹمنٹ میں 1478 ریگولر پوسٹیں ہیں جبکہ 4426 ڈائنگ کارڈر پوسٹیں ہیں۔ کل پوسٹیں 5904 ہیں اسی طرح ورکس ڈیپارٹمنٹ میں 2085 ریگولر اور 6894ڈائنگ کارڈر پوسٹیں ہیں۔ ورکس ڈیپارٹمنٹ میں ٹوٹل 8979 پوسٹیں ہیں۔ ہمارے پاس ورکس ڈیپارٹمنٹ میں 2800پوسٹیں شارٹ ہیں۔ 4426پوسٹیں اگر نکال لیں تو ہمارے پاس صرف 1478 باقی بچتی ہیں۔ سیکرٹری فنانس نے کہا کہ 17گریڈ کی پوسٹوں میں 75فیصد حصہ گلگت بلتستان حکومت کا ہے جبکہ 25فیصد حصہ وفاقی حکومت کا ہے۔ اسی طرح 18گریڈ کی پوسٹوں پر 60فیصد حصہ گلگت بلتستان کا ہے۔ چیف سیکرٹری کی پوسٹ گریڈ 21کی ہے جس پر سینیٹر رحمن ملک نے کہا کہ چیف سیکرٹری گریڈ 22کا ہونا چاہئے۔ اس موقع پر نیشنل ہائی وے اتھارٹی حکام کی جانب سے بریفنگ میں کہا گیا کہ گلگت سے شندور تک روڈ کی لمبائی 216کلومیٹر ہے جبکہ چترال سے شندور تک 154کلومیٹر ہے۔ گلگت سے چترال روڈ کے لئے حکومت پاکستان کی طرف سے200ملین کی رقم مختص کی گئی ہے جس پر سینیٹر رحمن ملک نے کہا کہ 200ملین آٹے میں نمک کے برابر بھی نہیں اس میں آپ کیا کریں گے۔ نیشنل ہائی وے اتھارٹی کے حکام نے کہا کہ مارچ تک گلگت سے شندور تک روڈ کی فیزیبلٹی مکمل کرلیں گے۔ روڈ بننے کے بعد پورا علاقہ ترقی کی دوڑ میں شامل ہوجائے گا۔ اس موقع پر واپڈا حکام کی جانب سے بتایا گیا کہ سدپارا ڈیم 2014 میں بناجس سے 17.4میگاواٹ بجلی پیدا ہوتی ہے اس وقت ہمیں روکا گیا کہ شتونگ نالے کا رخ نہیں موڑنا ۔ اس پر سیکرٹری واٹر اینڈ پاور گلگت بلتستان نے کہا کہ جب تک شتونگ نالے سے پانی کا رخ تبدیل نہیں کیا جائے گا ہم سدپارا ڈیم سے پوری طرح استفادہ حاصل نہیں کر سکتے ۔ ہم شتونگ نالے سے ایک سو پانچ کیوسک پانی کا رخ موڑیں گے۔ کمیٹی نے اس معاملے پر محکمہ ماحولیات اور واپڈا کو کمیٹی کے اگلے اجلاس میں طلب کرلیا۔ اس موقع پر سینیٹر رحمن ملک نے کہا کہ سوئٹزر لینڈ گلگت بلتستان کی خوبصورتی کا دس فیصد بھی نہیں ہے۔ گلگت میں پبلک پرائیویٹ پارٹنر شپ میں ٹورازم پروموشنل بورڈ بنایا جائے جو وہاں سیاحت کی سرگرمیوںکو فروغ دے ۔سیکرٹری فنانس گلگت بلتستان نے بتایا کہ ہم چھ نئے ریسٹ ہائوس بنا رہے ہیں عطاء آباد جھیل کے مقام پر بھی ریزورٹ بنایا جائے گا۔ گلگت کے نئے ایئرپورٹ کے حوالے سے بھی کام ہورہا ہے جس پر رحمن ملک نے کہا کہ گلگت بلتستان میں نئے ایئر پورٹبنانے کی کوشش کی جائے۔ گلگت میں صرف سی ون تھرٹی اور اے ٹی آر طیارہ ہی لینڈ کرسکتا ہے۔ وہاں کوئی بڑا جیٹ طیارہ لینڈ نہیں کرسکتا۔ اس موقع پر سینیٹر رحمن ملک کی طرف سے استفسار کیا گیا کہ اگر گلگت بلتستان میں ایک آرگنائزیشن باہر کی فنڈنگ کررہی ہے تو اس کا ریگولیٹر کون ہے؟ ۔کمیٹی نے آغاخان رورل سپورٹ پروگرام کی فنڈنگ اور دیگر تفصیلات آئندہ اجلاس میں طلب کرلیں۔

Facebook Comments
Share Button