تازہ ترین

Marquee xml rss feed

گوجرانوالہ میں پاک فوج اور عدلیہ کے حق میں ریلی ، نعرے بھی لگائے گئے-حکمران عوام کی حالت زار بدلنے کے معاملے پر ڈنگ ٹپائو پالیسیوں پر عمل پیرا ہیں ‘ مسرت چیمہ عوام نے موقع دیا تو صحت اور تعلیم سمیت بنیادی ضروریات کی فراہمی اولین ترجیح ہو ... مزید-عروج کے دنوں میں شوبز کو چھوڑنا میرے لیے باعث فخر ہے ‘ اداکارہ زاریہ بٹ-کسی بھی فلم کی کامیابی کیلئے سکرپٹ کا اچھا اور معیاری ہونا لازمی ہے‘ صائمہ نور-گلوکارہ حمیرا چنا سیرو تفریح کے لئے دبئی روانہ-عالمی شہرت یافتہ اداکار وکمپیئر معین اختر کی ساتویں برسی (آج )منائی جائے گی-اداکارہ شیزہ بٹ پر فیصل آباد میں قاتلانہ حملے کے ملزمان تاحال گرفتار نہ ہوسکے پولیس کی پراسرار خاموشی /پاکستان میں فن اور فنکاروں کی جان و مال کی کوئی قدر نہیں‘ شیزہ ... مزید-انعامی بانڈ زپر ٹیکس کی شرح کم کی جائے ‘ پی ٹی آئی کی پنجاب اسمبلی میں قرارداد-حکومتی پالیسیوں سے آئی سی یو میں پڑی معیشت کی سانسیں بحال ہو ئی ہیں‘ (ن) لیگ ٹریڈرز ونگ تاجروں نے نا مساعد حالات کے باوجود ٹیکسز کی ادائیگی کر کے معیشت میں کلیدی کردار کو ... مزید-ملک کو مثبت سمت میں آگے لیجانے کیلئے تمام اسٹیک ہولڈرز کا ایک پیج پر ہونا نا گزیر ہے ‘آل پاکستان انجمن تاجران معیشت کو درپیش مسائل کے حل ،قومی معاملات میں اتفاق رائے کیلئے ... مزید

GB News

گلگت بلتستان میں قدرتی آفات سے نمٹنے کے لیے 100ملین روپوں کے منصوبے کی منظوری

Share Button

گلگت ( پ ر) چیف سیکریٹری گلگت  بلتستان ڈاکٹر کاظم نیاز کی سربراہی میں منعقد ہونے والے گلگت  بلتستان ڈپارٹمنٹل ڈیولپمنٹ ورکنگ پارٹی  کے اجلاس میں ترقیاتی سکیموں کا جائزہ لیا گیا۔  محکمہ داخلہ، تعلیم، سوشل ویلفیئر  اور محکمہ برقیات کے کئی اہم نوعیت کے منصوبوں  کو اجلاس میں منظور کیا گیا ۔ گلگت  بلتستان میں قدرتی آفات سے نمٹنے کے شعبے کو بہتر بنانے کے لیے محکمہ داخلہ کے زیر انتظام 100ملین روپوں کی لاگت سے ایک اہم منصوبے کی بھی منظوری دی گئی ۔  سیاحت ، کھیل  اور ثقافت کے شعبوں میں 240ملین روپوں کی لاگت سے 2سکیموں کی منظوری دی گئی۔ محکمہ سوشل ویلفیئر کی ایک سکیم جس کی کل لاگت 142ملین ہے کی بھی منظوری اس اجلاس میں دی گئی۔  صوبے میں تعلیم کے شعبے کی بہتری کے لیے  100ملین روپے ، صحت کے شعبے میں   671ملین روپے کی لاگت کی کئی سکیموں کی بھی منظوری دی گئی ۔برقیات کے شعبے میں بجلی کی کی پیداواری صلاحیت بڑھانے کے لیے 676ملین روپے لاگت کے دو اہم منصوبے منظوری  کے لیئے  اگلے  فورم  میں بھجوانے کی سفارش کے لیے پیش کیے گئے جن سے 3میگاواٹ اضافی بجلی پیدا کی جاسکے گی۔ جبکہ فیزیبلیٹی کی مد میں  9میگاواٹ پیداواری صلاحیت کی دو سکیموں کی منظوری بھی دی گئی جن کی کل لاگت 35 ملین روپے بنتی ہے۔ چیف منسٹر ہائوس کے ساتھ 247ملین روپوں کی لاگت سے ہاوسنگ اینڈ واٹر سپلائی  کے شعبے میں دو سکیموں کی منظوری بھی اجلا س میں دی گئی۔ لوکل گورنمنٹ کی ایک سکیم برائے سالڈ ویسٹ مینجمنٹ 162ملین روپے کی لاگت سے منظوری کی گئی، اس سکیم کی مدد سے شہروں اور قصبوں میں صفائی کا خاطر خواہ نظام وضع کیا جائے گا۔ چیف سیکریٹری کی زیر صدارت اس اہم اجلاس میں دیگر شعبوں کے علاوہ محکمہ خوراک  کی ایک سکیم بھی منظور ہوئی جس کی لاگت 86ملین روپے ہے۔  اس سکیم کے تحت مختلف اضلاع میں سول سپلائی ڈپو قائم کیے جائیں گے۔ اجلاس میں مواصلات کے شعبے کی 16مختلف سکیموں کا بھی جائزہ لیا گیا،  جس کے تحت  صوبے کے مختلف اضلاع میں پکے پلوں اور سڑکوں کی تعمیر کے اہم منصوبے شامل ہیں ، اس مد میں8   منصوبے جن کی کل لاگت 1208ملین روپے  بنتی ہے منظور کیئے گئے۔ اجلاس میں 1277ملین کی لاگت کے5 منصوبوںکو اگلے فورم میں بھجوانے کی سفارش بھی کی گئی ۔

Facebook Comments
Share Button