تازہ ترین

Marquee xml rss feed

خیبرکالج آف ڈینسٹری کی کوآرڈینیشن کونسل کااجلاس-جامعہ پشاور میں الیکٹرانک میڈیا تربیتی کورس اختتام پذیر-عوام 2018ء کے الیکشن میں مسلم لیگ (ن) کو ووٹ دے کر کامیاب بنائیں گے ،سیدعمران-صوابی،سپورٹس گالا میں جاری بیڈ منٹن اوروالی بال مقابلے اختتام پذیر-جے ٹی آئی شیخ الہند پابینی یونٹ صوابی کی کابینہ تشکیل-اداکارہ کاجول پہلی بار ایک گلوکارہ کے روپ میں نظر آئیں گی اداکارہ بہت جلد اپنے شوہر اجے دیوگن کی پروڈکشن میں بننے والی فلم ’’ایلا‘‘ کی شوٹنگ کاآغاز کریں گی-سنجے لیلا کی درخواست پر اکشے نے فلم کی نمائش موخر کر دی اب فلم پیڈمین 25 جنوری کے بجائے 9 فروری کو پیش کی جائیگی-جدید سنیما گھروں کے قیام سے فلم انڈسٹری میں نئی جان پڑی ہے، قرة العین عینی انڈسٹری کی طرف ویلکم کہنے اور پہلی فلم پر لوگوں کی طرف سے ملنے والے رسپانس کا سوچا بھی نہیں تھا‘انٹرویو-عامر خان چین میں اپنی ایک اور فلم کیساتھ بڑی کامیابی حاصل کرنے کیلئے تیار عامر خان کی فلمز ’دھوم 3‘، ’پی کے‘ اور ’دنگل‘ بھی چین میں نمائش کے لیے پیش کی جاچکی ہیں-کرن جوہر نے مس ورلڈ مانوشی کو اپنی فلم میں کام دینے کی تردید کردی کرن نے مانوشی کو اپنی فلم ’’اسٹوڈنٹ آف دی ایئر2‘‘میں کام کرنے کی پیشکش کی ہے، بھارتی میڈیا کا دعویٰ

GB News

اسمبلی کی قراردادوں پر عملدرآمد کرانا حکومت کی ذمہ داری ہے، سپیکر

Share Button

گلگت ( نمائندہ خصو صی )سپیکر قانون ساز اسمبلی گلگت بلتستان فدا محمد ناشادنے کہا ہے کہ اسمبلی میں جو قرار داد منظور ہوتی ہے اس پر عمل در آمد کرا نا حکومت کا کام ہے ہم نے ممبران اسمبلی کی متفقہ رائے کے تحت کام کرنا ہے اور اس کے تحت کام کر رہے ہیں کنٹیجنٹ ملازمین کی مستقلی کا مسئلہ اگر جا ئز ہے تو حکومت اس کو حل کرے اگر ملازمین کے مطالبات ناجائز ہیں تو حکومت ملازمین کو سمجھائے میں نے جو بات کرنی ہے وہ ذمہ داری کی بات کر نی ہے اور اسمبلی میں قرار داد پاس ہونے کے بعد اس پہ عملدرآمد کرانا حکومت کا کام ہے اور ملازمین کی مستقلی کے حوالے سے وزیراعلیٰ کو بہتر معلومات حاصل ہیں اور وزیر اعلیٰ ہی بہتر انداز میںبتا سکتے ہیں ۔انہوں نے کے پی این سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ہم یہی چاہتے ہیں کہ ہر ایک کو انصاف فراہم ہو چاہے وہ تاجر ہو ، ملازم ہو ، ٹیکسی ڈرائیور ہو یا ٹھیکیدار ہوسب کو برابری کی بنیاد پر انصاف میسر ہونا چا ہیئے اور یہی گڈگورننس ہے ۔ انہوں نے کہا کہ انسان کے بنیادی حقوق مل جانے چا ہئیں جو انسا نی حقوق ہیں وہ مل جانے چا ہئیں اور ہم اسی پہ کام کرینگے تا کہ ہر فرد کے مسائل حل ہو سکیں ۔انہوں نے کہا کہ کنٹیجنٹ پیڈ ملازمین کے مطالبات درست ہیں یا غلط اس حوالے سے حکومت کے نمائندے کام کریں اور اگر مطالبات جائز ہیں تو ان کے مطالبات حل کئے جائیں اور مطالبات ناجائز ہیں تو ان کو سمجھایا جائے ۔

Facebook Comments
Share Button