تازہ ترین

Marquee xml rss feed

لڑکی کو ہراساں کرنے والے ڈرائیور کا بیان سامنے آ گیا لڑکی گاڑی کی پچھلی سیٹ پر تھی کیسے ہراساں کر سکتا تھا؟ حلفیہ کہتا ہوں کہ لڑکی کو ہراساں نہیں کیا-جمائما کا شادی کے بعد عمران خان کے ساتھ رہنے والے گھر کو فروخت کرنے کا فیصلہ جمائما گولڈ سمتھ نے پہلی بار اپنے عالیشان گھر کی تصاویر شئیر کر دیں-مشہور کارٹون کیریکٹر ٹام اینڈ جیری اب لائیو ایکشن میں نظر آئیں گے وارنر بروز کی تخلیق کردہ ٹام اینڈ جیری کارٹون کو لائیو ایکشن میں بنانے کی تیاریاں شروع کی جاچکی ہیں-گلوکاری اور اداکاری کے بعد فرحان سعید کی فلم انڈسٹری میں انٹری سکرپٹ کے مراحل مکمل ‘فلم کی عکس بندی کا آغاز رواں برس دسمبر سے کیا جائے گا-اداکارہ ماہ نور کلین اینڈ گرین مہم کا حصہ بن گئیں بحریہ ٹائون میں اپنے گھرکے باہر پودا لگایا اور سٹرک پر جھاڑو بھی دیا-اداکارہ ساکشی تنورنے بچی گود لے لی یہ بچی میری دعاؤں کا انعام ہے جسے پاکر میں بے انتہا خوش ہوں‘اداکارہ-لوک ورثہ فیسٹیول2نومبر کوشکر پڑیاں میں شروع ہوگا-شلپا شندے نے ریب سے متعلق انکشاف کر کے سب کو حیران کردیا شوبز انڈسٹری میں سمجھوتے کے تحت کچھ لو اور کچھ دو کی بنیاد پر چیزیں ہوتی ہیں شوبز میں ریپ یا زبردستی نہیں بلکہ سب ... مزید-اداکار فیصل قریشی نے فلم بنانے کا اعلان کر دیا یہ فلم 2019 میں نمائش کے لیے پیش کی جائے گی-میںہر نئی فلم کو اپنی پہلی فلم سمجھتا ہوں، ایوشمان کھرانہ میری 3 فلمیں ناکام رہیں جو میری زندگی کا سیکھنے کا بہترین تجربہ تھا، بالی ووڈ اداکار

GB News

کنٹیجنٹ پیڈ ملازمین کو ان کے سروسز کے تحت حق دیا جائے ،قاضی نثار احمد

Share Button

گلگت(نمائندہ خصوصی)امیر تنظیم اہلسنت والجماعت گلگت بلتستان و کوہستان و امام جمعہ والجماعت مولانا قاضی نثار احمد نے کہا ہے کہ کنٹیجنٹ پیڈ ملازمین کو ان کے سروسز کے تحت حق دیا جائے حکومت غریب پروری کا مظاہرہ کرتے ہوئے غریب ملازمین کی دادرسی کرے ان کے چولہے ٹھنڈے ہونے سے بچائے ۔ انہوں نے کے پی این سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ گلگت بلتستان میں روزگار کے مواقع زیادہ نہیں ہیں پرائیویٹ سیکٹر  بھی نہیں  جہاں سے غریب عوام کو روزگار کے مواقع میسر ہو سکیں غریب ملازمین کو اس طرح احتجاج پر لاکر ان کے مسائل حل کر نے سے قبل ہی حکومت فوری اقداما ت اٹھائے تا کہ اس شدید سردی میں ملازمین کو مزید مسائل کا سا منا کرنا نہ پڑے اور حکومت کو بھی مسائل کا سامنا نہ ہو ۔ انہوں نے کہا کہ کنٹیجنٹ ملازمین پچیس اور پندرہ سالوں سے خدمات سرانجام دے رہے ہیں ایسے میں غریب ملازمین کو مسائل میں ڈالنا حکومت کے لئے ٹھیک نہیں ہے کیونکہ ان غریب ملازمین کے بھی گھر ہیں ان ملازمین کے بھی اہل وعیال ہیں اور گلگت بلتستان میں سرکاری ملازمتوں کے علاوہ اور کوئی وسائل نہیں ہیں جہاں سے غریب ملازمین کو فائدہ حاصل ہو سکے ایسے میں حکومت غریب ملازمین کے زخموں پہ مرہم رکھے اور ان ملازمین کو ان کا حق دے تا کہ حکومت کے لئے مزید مشکلات کا سامنا کرنا نہ پڑے اور ملازمین کے مسائل حل کرنا حکومت کی ذمہ داری ہے اور حکومت اپنی ذمہ داری پوری کرے اور عرصہ دراز سے جو ملازمین نوکری کر رہے ہیں ان کو مستقل کیا جائے ۔

Facebook Comments
Share Button