تازہ ترین

Marquee xml rss feed

خیبرکالج آف ڈینسٹری کی کوآرڈینیشن کونسل کااجلاس-جامعہ پشاور میں الیکٹرانک میڈیا تربیتی کورس اختتام پذیر-عوام 2018ء کے الیکشن میں مسلم لیگ (ن) کو ووٹ دے کر کامیاب بنائیں گے ،سیدعمران-صوابی،سپورٹس گالا میں جاری بیڈ منٹن اوروالی بال مقابلے اختتام پذیر-جے ٹی آئی شیخ الہند پابینی یونٹ صوابی کی کابینہ تشکیل-اداکارہ کاجول پہلی بار ایک گلوکارہ کے روپ میں نظر آئیں گی اداکارہ بہت جلد اپنے شوہر اجے دیوگن کی پروڈکشن میں بننے والی فلم ’’ایلا‘‘ کی شوٹنگ کاآغاز کریں گی-سنجے لیلا کی درخواست پر اکشے نے فلم کی نمائش موخر کر دی اب فلم پیڈمین 25 جنوری کے بجائے 9 فروری کو پیش کی جائیگی-جدید سنیما گھروں کے قیام سے فلم انڈسٹری میں نئی جان پڑی ہے، قرة العین عینی انڈسٹری کی طرف ویلکم کہنے اور پہلی فلم پر لوگوں کی طرف سے ملنے والے رسپانس کا سوچا بھی نہیں تھا‘انٹرویو-عامر خان چین میں اپنی ایک اور فلم کیساتھ بڑی کامیابی حاصل کرنے کیلئے تیار عامر خان کی فلمز ’دھوم 3‘، ’پی کے‘ اور ’دنگل‘ بھی چین میں نمائش کے لیے پیش کی جاچکی ہیں-کرن جوہر نے مس ورلڈ مانوشی کو اپنی فلم میں کام دینے کی تردید کردی کرن نے مانوشی کو اپنی فلم ’’اسٹوڈنٹ آف دی ایئر2‘‘میں کام کرنے کی پیشکش کی ہے، بھارتی میڈیا کا دعویٰ

GB News

گریڈ 1 سے 5 تک کے کنٹیجنٹ ملازمین کو بغیر ٹیسٹ انٹرویو مستقل کرنے کی پیشکش

Share Button

گلگت (نمائندہ خصوصی) حکومت نے گریڈ 1 سے 5 تک کے کنٹیجنٹ ملازمین کو بغیر ٹیسٹ انٹرویو مستقل کرنے کی پیشکش کردی جبکہ گریڈ 6 اور اس سے اوپر کے ملازمین ٹیسٹ انٹرویو کے ذریعے مستقل کئے جائیں گے، جمعرات کے روز اسسٹنٹ کمشنر گلگت اتحاد چوک پر دھرنا دینے والے ملازمین کے پاس آئے اور ایک تحریری معاہدہ دکھایا جس میں کہا گیا تھا کہ گریڈ ایک سے پانچ تک کے ملازمین کا سکریننگ ٹیسٹ نہیں ہوگا بلکہ معمولی نوعیت کا انٹرویو ہوگا۔ گریڈ پانچ سے نیچے کے ملازمین کو آسامیاں خالی ہونے پر بھرتی کیا جائیگا۔ اسسٹنٹ کمشنر نے کہاکہ اس مقصد کیلئے ایک کمیٹی بھی بنائی گئی ہے جس میں ڈی سی گلگت، ایس ایس پی اور کنٹیجنٹ ملازمین کی تنظیم کے صدر شامل ہونگے۔ اس موقع پر عابد فراز نے شرکاء سے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ ہمیں ڈی سی نے عزت دی ہے اور جو مطالبات ہم نے پیش کئے ہیں اس کے مطابق کام کیا گیا ہے۔ سروسز ڈیپارٹمنٹ کی جانب سے نوٹیفکیشن جاری کیا گیا ہے۔ انہوں نے دھرنے کے شرکاء سے رائے لی تو اکثر نے اس نوٹیفکیشن کو مسترد کردیا اور نامنظور نامنظور کے نعرے لگائے۔اس کے بعد دھرنا جاری رکھنے کا اعلان کیا گیا مطالبہ کیا کہ کمیٹی میں کابینہ کا کوئی وزیر ہونا چاہیے جبکہ نوٹیفکیشن چیف سیکرٹری کی جانب سے ہی جاری کیا جائے۔ دھرنے کے شرکاء نے 6 نکاتی چارٹر آف ڈیمانڈ پر عمل نہ ہونے کی صورت میں کفن پوش لانگ مارچ کی دھمکی بھی دیدی۔

Facebook Comments
Share Button