تازہ ترین

Marquee xml rss feed

لڑکی کو ہراساں کرنے والے ڈرائیور کا بیان سامنے آ گیا لڑکی گاڑی کی پچھلی سیٹ پر تھی کیسے ہراساں کر سکتا تھا؟ حلفیہ کہتا ہوں کہ لڑکی کو ہراساں نہیں کیا-جمائما کا شادی کے بعد عمران خان کے ساتھ رہنے والے گھر کو فروخت کرنے کا فیصلہ جمائما گولڈ سمتھ نے پہلی بار اپنے عالیشان گھر کی تصاویر شئیر کر دیں-مشہور کارٹون کیریکٹر ٹام اینڈ جیری اب لائیو ایکشن میں نظر آئیں گے وارنر بروز کی تخلیق کردہ ٹام اینڈ جیری کارٹون کو لائیو ایکشن میں بنانے کی تیاریاں شروع کی جاچکی ہیں-گلوکاری اور اداکاری کے بعد فرحان سعید کی فلم انڈسٹری میں انٹری سکرپٹ کے مراحل مکمل ‘فلم کی عکس بندی کا آغاز رواں برس دسمبر سے کیا جائے گا-اداکارہ ماہ نور کلین اینڈ گرین مہم کا حصہ بن گئیں بحریہ ٹائون میں اپنے گھرکے باہر پودا لگایا اور سٹرک پر جھاڑو بھی دیا-اداکارہ ساکشی تنورنے بچی گود لے لی یہ بچی میری دعاؤں کا انعام ہے جسے پاکر میں بے انتہا خوش ہوں‘اداکارہ-لوک ورثہ فیسٹیول2نومبر کوشکر پڑیاں میں شروع ہوگا-شلپا شندے نے ریب سے متعلق انکشاف کر کے سب کو حیران کردیا شوبز انڈسٹری میں سمجھوتے کے تحت کچھ لو اور کچھ دو کی بنیاد پر چیزیں ہوتی ہیں شوبز میں ریپ یا زبردستی نہیں بلکہ سب ... مزید-اداکار فیصل قریشی نے فلم بنانے کا اعلان کر دیا یہ فلم 2019 میں نمائش کے لیے پیش کی جائے گی-میںہر نئی فلم کو اپنی پہلی فلم سمجھتا ہوں، ایوشمان کھرانہ میری 3 فلمیں ناکام رہیں جو میری زندگی کا سیکھنے کا بہترین تجربہ تھا، بالی ووڈ اداکار

GB News

امریکی شہری پاکستان کا سفر نہ کریں،امریکی حکومت کی ہدایت

Share Button

امریکہ نے اپنے شہریوں کو متنبہ کیا ہے کہ وہ جہاں تک ممکن ہو پاکستان کے سفر سے پرہیز کریں اور اگر وہاں ہوں تو خیبر پختونخوا، بلوچستان اور پاکستان کے زیرِ انتظام کشمیر نہ جائیں کیونکہ ان کے لیے وہاں خطرہ ہے۔

امریکی محمکۂ خارجہ کی ویب سائٹ پر ایک پیغام میں امریکی شہریوں کو پاکستان جانے کے خطرات سے آگاہ کیا گیا ہے اور کہا گیا ہے کہ وہ پاکستان میں دہشت گردی کی وجہ سے وہاں جانے کے فیصلے پر ازسرِنو غور کریں۔ویب سائٹ پر چھپنے والے پیغام میں کہا گیا ہے کہ پاکستان کے صوبے بلوچستان، خیبر پختونخوا اور وفاق کے زیرِ انتظام قبائلی علاقوں (فاٹا) میں دہشت گردی کی وجہ سے سفر نہ کریں۔

اسی طرح پاکستان کے زیرِ انتظام کشمیر میں دہشت گردی اور ممکنہ مسلح جنگ کے خطرے کے باعث سفر سے اجتناب کیا جائے۔’دہشت گرد گروہپاکستان میں حملوں کے منصوبے بناتے رہتے ہیں۔ دہشت گرد کسی ہلکی سی وارننگ یا پھر اس کے بھی بغیر حملے کر سکتے ہیں اور ان کا نشانہ سیاحتی مقام، مواصلاتی ذرائع، مارکیٹ/شاپنگ مال، فوجی یا سرکاری تنصیبات، ہوائی اڈے، یونیورسٹیاں، سکول، ہسپتال، عبادت گاہیں اور مقامیحکومت دفاتر ہو سکتا ہے۔

گذشتہ چھ ماہ میں پاکستان میں کم از کم 40 دہشت گرد حملے ہو چکے جن میں 225 سے زیادہ افراد ہلاک اور 475 کے قریب زخمی ہوئے ہیں۔ ان میں زیادہ تر حملے بلوچستان، کے پی کے، اور فاٹا میں ہوئے ہیں۔ ویب سائٹ پر ماضی کا حوالہ دیتے ہوئے بھی کہا گیا ہے کہ پہلے بڑے پیمانے پر ہونے والے حملے میں سینکڑوں لوگ مارے گئے تھے۔

امریکی شہریوں کے لیے پیغام میں وزارتِ خارجہ نے کہا ہے کہ پاکستان میں سیکیورٹی کے حالات کے پیشِ نظر امریکی حکومت کے پاس اپنے شہریوں کو ہنگامی سروس پہنچانے کی صلاحیت محدود ہے۔ پیغام میں کہا گیا ہے کہ امریکی حکومت کے اہلکاروں کے پاکستان میں سفر پر پابندی لگا دی گئی ہے، اور امریکی حکومت کے اہلکاروں کے سفارتی تنصیبات سے باہر جانے پر بھی مقامی اور سکیورٹی حالات کے پیشِ نظر، جو کہ اچانک بدل سکتے ہیں، کسی وقت بھی اضافی پابندی عائد کر دی جائے گی۔

دہشت گردوں نے ماضی میں بھی امریکی سفارتکاروں اور سفارتی تنصیبات کو نشانہ بنایا ہے اور شواہد بتاتے ہیں کہ وہ ایسا کرتے رہیں گے۔

وزارتِ خارجہ نے اپنی ویب سائٹ پر دیے گئے پیغام میں لکھا کہ انڈیا اور پاکستان کی سرحد پر دونوں طرف ایک بڑی فوج موجود ہے۔ ’ان افراد کے لیے جو پاکستان اور انڈیا کے شہری نہیں ہیں واحد انڈیا۔ پاکستان سرحدی کراسنگ صوبہ پنجاب میں واہگہ، پاکستان جبکہ اٹاری، انڈیا میں ہے۔ مسافروں کو مشورہ دیا جاتا ہے کہ وہ سفر پر نکلنے سے پہلے سرحدی کراسنگ کی حالت کے متعلق معلوم کر لیں۔ انڈیا داخل ہونے کے لیے انڈین ویزہ چاہیے اور سرحد پر ویزہ کی کوئی سہولت نہیں ہے۔‘

Facebook Comments
Share Button