تازہ ترین

Marquee xml rss feed

سابق وزیر اعلیٰ پنجاب چوہدری پرویز الہٰی نے انتخابات کے حوالے سے بڑا اعلان کر دیا سابق وزیر اعلیٰ پنجاب چوہدری پرویز الہٰی نے این اے 65 سے الیکشن لڑنے کا اعلان کردیا-وزیراعظم شاہدخاقان عباسی کا جمرودخیبرایجنسی کامختصردورہ ،گرڈ سٹیشن کاافتتاح کیا-سبیکا شیخ پاکستان کی بیٹی ہے جس کے بچھڑے پر ہر آنکھ غم پر نم ہے ، حلیم عادل شیخ رہنماء پی ٹی آئی-ایم کیو ایم کے لیڈرز کبھی الگ صوبے کی بات کرتے ہیں اور کبھی معافی مانگ لیتے ہیں،وزیراعلیٰ سندھ سندھ ٹوڑنے کی بات کرنے والے آج خود ٹوٹ گئے ہیں، عوام ایم کیو ایم کا اصل ... مزید-خود ساختہ جلاوطنی اختیار کیے ہوئے بلوچ علیحدگی پسند براہمداغ بگٹی نے نواز شریف کی حمایت کردی-بلوچستان سی پیک کا مرکز ہے ،پاکستان کا چین سے گہرا تعلق ہے جو وقت کے ساتھ ساتھ مزید مستحکم اور مضبوط ہورہا ہے، میر عبدالقدوس بزنجو سی پیک کی تکمیل ہمارا مقصد ہے جس سے پورے ... مزید-اورنج لائن پیکیج ٹو پر بھی میٹرو ٹرین آزمائشی طور پر کامیابی سے چلا دی گئی ‘خواجہ احمد حسان تعمیر و ترقی کے سفر اور عام شہریوں کو عزت دینے کی کوششوں میں کسی کو رکاوٹ ... مزید-شہبازشریف کی ورکنگ بائونڈری پر بھارتی فوج کی بلااشتعال فائرنگ کی شدید مذمت ،حوالدار شاہد ،شہری محمد اسلم کی شہادت پر اظہار افسوس بھارت کسی غلط فہمی میں نہ رہے،پوری ... مزید-قائم مقام صدر صادق سنجرانی نے سینیٹ کا اجلاس (کل) سہ پہر تین بجے طلب کرلیا-الیکشن کمیشن نے عام انتخابات کیلئے پولنگ سکیم کا مسودہ ویب سائٹ پر جاری کردیا

GB News

ناقص اور دو نمبر اشیاء کی بھرمار

Share Button

راولپنڈی اسلام آباد کے نجی ہسپتالوں میں گلگت بلتستان سے تعلق رکھنے والے 23 افراد کے دل کے آپریشن کئے گئے، رواں سال بڑی تعداد میں لوگ دل کے عارضے میں مبتلا ہونے کے باعث اسلام آباد لائے گئے ہیں، ان میں اکثریت کو ادویات دی جارہی ہیں، گلگت بلتستان سے تعلق رکھنے والے بلڈ پریشر، گردے، معدے، دمے، کینسر اور ہارٹ کے مریضوں سے بھر گئے ہیں،ناقص اشیائے خورونوش اور ادویات کی بھرمارکی وجہ سے گلگت بلتستان میں پیچیدہ امراض خاص طور پر امراض قلب میں خوفناک حد تک اضافہ ہوگیا ہے، جب تک ناقص ادویات اور اشیائے خورونوش پر پابندی عائد نہیں ہوگی تب تک پیچیدہ امراض پر قابو نہیں پایا جاسکتا’دولت کے پجاری طویل عرصے سے لوگوں کی زندگیوںسے کھیلتے ہوئے ناقص و دونمبر اشیاء کی فروخت جاری رکھے ہوئے لاکھوں شہریوں میں کھلے عام موت کا بیو پار کر رہے ہیں مضر صحت اور خطرناک تیزابی اجزا کی آمیزش سے تیار کردہ ملاوٹی اشیا جن میں مرچ ،ہلدی ،فاسٹ فوڈ ،مصالحہ جات ،مربہ جات ،جوس ،گھی ،کوکنگ آئل ،سلانٹی آٹا ،سگریٹ ،صابن ،سوئٹس ،بچوں کی ٹافیاں ،مشروبات وغیرہ شامل ہیں جبکہ بعض درندہ صفت مینو فیکچرز مردہ جانوروں کی ویسٹ اور چربی سے بھی گھی ،آئل ،مکھن وغیرہ تیار کرتے ہیں کھلے عام تھوک وپرچون فروخت کی جا رہی ہیں اور بیشتر طاقتور با اثر جعلساز سرکاری مشینری کے خصوصی تعاون سے ان ملاوٹی اور انسانی صحت کی قاتل اشیاء کو ملٹی نیشنل اور معیاری کمپنیوں کی جعلی پیکنگ میں پیک کر کے فروخت کر نے کے دھندے میں ملوث ہیں اور اس مکروہ دھندے کو حقیقت کا رنگ دینے کیلئے انہوں نے باقاعدہ طور پر اصلی کمپنیوں کی جعلی مہریں ،سٹکرز ،مونو گرام اور کیش میمو بھی بنوا رکھے ہیں جبکہ یہ ملاوٹی اور دو نمبر اشیاء روزانہ کے حساب سے بڑی مقدار میں خریدو فروخت کیلئے لائی جاتی ہیں اور اس میں کئی معروف سرمایہ دار ،تاجر ملوث ہیں ان جعلسازوں نے متعدد سیلز مین کمیشن ایجنٹ ،بروکر اور رکھے ہوئے ہیں جنہیں تنخواہ کی بجائے سیلز پالیسی کے تحت بھاری کمیشن دیا جاتا ہے اور اس بات کا بالکل خیال نہیں کیا جاتا کہ لوگ ان کے استعمال سے موذی و مہلک بیماریوں میں مبتلا ہو رہے ہیں اس لیے ان عناصر کے خلاف سخت اقدامات کی ضرورت ہے تاکہ یہ لوگوں کی زندگیوں سے کھیلنے میں کامیاب نہ ہو سکیں۔

Facebook Comments
Share Button