تازہ ترین

Marquee xml rss feed

سپیرئیر یونیورسٹی شعبہ ابلاغیات اور میڈیا کلب کے زیر اہتمام آزادی کی تقریب کا انعقاد تقریب کے اختتام پر ایک عزمیہ قرارداد پیش کی گئی جس میں ملک بہتری میں کردار ادا کرنے ... مزید-قومی اسمبلی میں حلف برداری کی تقریب میں عمران خان سے مصافحہ لیگی ارکان اسمبلی کی جارحانہ انداز نہ اپنانے پر شہباز شریف پر تنقید-خورشید شاہ نے متحدہ اپوزیشن کی جانب سے اسپیکر قومی اسمبلی کے لیے کاغذات نامزدگی جمع کروادیے موجودہ حالات میں ایسے اسپیکر کی ضرورت ہے جو سب کو ساتھ لے کر چلے، میں نے 30 ... مزید-جشن آزادی پر ہر کسی نے اپنایا الگ انداز ہر کوئی جشن آزادی کے رنگ میں رنگ گیا ، سوشل میڈیا پر دلچسپ ٹویٹ بھی کر دئیے-واہگہ باڈرپر پرچم کشائی کی تقریب میں شہریوں کی شرکت‘سرحدی محافظوں میں مٹھائیوں کا تبادلہ مقبوضہ کشمیر میں پاکستان کے جھنڈے لہرائے گئے‘کشمیری 15اگست کو بھارتی یوم آزادی ... مزید-نواز شریف کی احتساب عدالت میں پیشی پر کارکن اور رکن اسمبلی غائب نواز شریف اور مریم نواز کا سخت ناراضی کا اظہار-چکوال سے 3خواتین قومی اور پنجاب اسمبلی میں پہنچ گئیں آسیہ امجد اور فوزیہ بہرام تحریک انصاف جبکہ مہوش سلطانہ مسلم لیگ نون کے ٹکٹ پر مخصوص نشتشوں کے لیے نامزدہوئیں-قومی اسمبلی کی 11 نشستوں پر ضمنی انتخابات آئندہ 2 ماہ میں منعقد کروانے کا فیصلہ 11 نشستوں میں سے 9 ایسی نشستیں ہیں جو انتخابی امیدواروں نے ایک سے زائد ہونے کی وجہ سے واپس ... مزید-71یوم آزادی کی تقریبات :ملک بھر میں توپوں کی سلامی‘ تحریک پاکستان کے شہدا کو خراج عقیدت پیش کیا گیا جناح کنونشن سینٹراسلام آباد میں یوم آزادی کی مرکزی تقریب ‘ صدرممنون ... مزید-اس یوم آزادی پر میرے دل میں اُمید کا ایک عظیم چراغ روشن ہے یوم آزادی کے موقع پر پاکستان کے متوقع وزیر اعظم عمران خان کا ٹویٹر پیغام

GB News

ناقص اور دو نمبر اشیاء کی بھرمار

Share Button

راولپنڈی اسلام آباد کے نجی ہسپتالوں میں گلگت بلتستان سے تعلق رکھنے والے 23 افراد کے دل کے آپریشن کئے گئے، رواں سال بڑی تعداد میں لوگ دل کے عارضے میں مبتلا ہونے کے باعث اسلام آباد لائے گئے ہیں، ان میں اکثریت کو ادویات دی جارہی ہیں، گلگت بلتستان سے تعلق رکھنے والے بلڈ پریشر، گردے، معدے، دمے، کینسر اور ہارٹ کے مریضوں سے بھر گئے ہیں،ناقص اشیائے خورونوش اور ادویات کی بھرمارکی وجہ سے گلگت بلتستان میں پیچیدہ امراض خاص طور پر امراض قلب میں خوفناک حد تک اضافہ ہوگیا ہے، جب تک ناقص ادویات اور اشیائے خورونوش پر پابندی عائد نہیں ہوگی تب تک پیچیدہ امراض پر قابو نہیں پایا جاسکتا’دولت کے پجاری طویل عرصے سے لوگوں کی زندگیوںسے کھیلتے ہوئے ناقص و دونمبر اشیاء کی فروخت جاری رکھے ہوئے لاکھوں شہریوں میں کھلے عام موت کا بیو پار کر رہے ہیں مضر صحت اور خطرناک تیزابی اجزا کی آمیزش سے تیار کردہ ملاوٹی اشیا جن میں مرچ ،ہلدی ،فاسٹ فوڈ ،مصالحہ جات ،مربہ جات ،جوس ،گھی ،کوکنگ آئل ،سلانٹی آٹا ،سگریٹ ،صابن ،سوئٹس ،بچوں کی ٹافیاں ،مشروبات وغیرہ شامل ہیں جبکہ بعض درندہ صفت مینو فیکچرز مردہ جانوروں کی ویسٹ اور چربی سے بھی گھی ،آئل ،مکھن وغیرہ تیار کرتے ہیں کھلے عام تھوک وپرچون فروخت کی جا رہی ہیں اور بیشتر طاقتور با اثر جعلساز سرکاری مشینری کے خصوصی تعاون سے ان ملاوٹی اور انسانی صحت کی قاتل اشیاء کو ملٹی نیشنل اور معیاری کمپنیوں کی جعلی پیکنگ میں پیک کر کے فروخت کر نے کے دھندے میں ملوث ہیں اور اس مکروہ دھندے کو حقیقت کا رنگ دینے کیلئے انہوں نے باقاعدہ طور پر اصلی کمپنیوں کی جعلی مہریں ،سٹکرز ،مونو گرام اور کیش میمو بھی بنوا رکھے ہیں جبکہ یہ ملاوٹی اور دو نمبر اشیاء روزانہ کے حساب سے بڑی مقدار میں خریدو فروخت کیلئے لائی جاتی ہیں اور اس میں کئی معروف سرمایہ دار ،تاجر ملوث ہیں ان جعلسازوں نے متعدد سیلز مین کمیشن ایجنٹ ،بروکر اور رکھے ہوئے ہیں جنہیں تنخواہ کی بجائے سیلز پالیسی کے تحت بھاری کمیشن دیا جاتا ہے اور اس بات کا بالکل خیال نہیں کیا جاتا کہ لوگ ان کے استعمال سے موذی و مہلک بیماریوں میں مبتلا ہو رہے ہیں اس لیے ان عناصر کے خلاف سخت اقدامات کی ضرورت ہے تاکہ یہ لوگوں کی زندگیوں سے کھیلنے میں کامیاب نہ ہو سکیں۔

Facebook Comments
Share Button