تازہ ترین

Marquee xml rss feed

فیس بک پے در پے مشکلات کا شکار شئیرہولڈرز نے فیس بک کے بانی مارک زکربرگ کو سربراہی سے ہٹانے کی کوششیں شروع کردیں-تحریک انصا ف نے جو وعدے عوام سے کئے ہیں وہ ضرور پورے کرے گی ‘صمصام بخاری تحریک انصاف موجودہ حالات میںچند دشواریوں کا سامناہے اور ان انشاء اللہ جلدان مسائل سے نکل آئیںگے ... مزید-وزیراعظم اورچیئرمین نیب کی خفیہ اور سرعام ملاقاتوں سے انتقامی کارروائی کاتاثرملتاہے، بلاول بھٹو زرداری پریس کانفرنس میں آزاد اداروں کو کھلے عام دھمکیاں دی جاتی ہیں، ... مزید-حکومت کے اتحادی ہیں، وزارت ہماری ترجیح نہیں،سردار اختر مینگل بلوچستان کا مسائل کا حل چاہتے ہیں وزیراعظم لوگوں کی امیدوں پر پورا اتریں گے تو مبارک باد دوں گا کسی کی ... مزید-وزیر خزانہ اسد عمر کی زیرصدارت اجلاس، تفصیلی اور جامع اصلاحات پروگرام کیلئے وزیر مملکت حماد اظہر کی سربراہی میں کمیٹی تشکیل دیدی گئی-چیف آف آرمی سٹاف جنرل قمر جاوید باجوہ کی قندھار واقعہ کی شدید مذمت-حکومت کے 60 دن مکمل وزیراعظم عمران خا ن نے وزراء سے 60 روزہ کاکردگی کی رپورٹ مانگ لی-صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی سے معروف گلوکار فخر عالم کی ملاقات-پشاور، تبدیلی کے نعرے پر آنے والی حکومت ابھی تک عوام کو کوئی ریلیف نہیں دے سکی،سینیٹر سراج الحق تبدیلی صرف قیمتوں میں آئی ہے مہنگائی میں اضافہ ہونے سے دکاندار اور گاہک ... مزید-عمران خان نے قندہار واقعے میں قیمتی جانوں کا ضیاع پر رنج و غم کا اظہار امن و امان کے قیام کیلئے افغانستان کے عوام اور سیکورٹی فورسز نے بھاری قیمت ادا کی ہے، وزیراعظم ... مزید

GB News

ذوالفقار علی بھٹو نے گلگت بلتستان سے ایف سی آر جیسے کالے قانون کو ختم کیا،اکبر تابان

Share Button

اسلام آباد(چیف رپورٹر)سینئر وزیر حاجی اکبر تابان نے کہا ہے کہ گلگت بلتستان کے آئینی مسئلے کو حل کرنے کیلئے ماضی کی حکومتوں نے اپنے طور پر مختلف کوشش کی ہیں ہماری موجودہ اسمبلی نے متفقہ طور پر قرار داد پاس کی تھی کہ گلگت بلتستان کو ملک کا پانچواں آئینی صوبہ بنایا جائے۔ ہم تمام اداروں میں گلگت بلتستان کو نمائندگی دینے کی بات کی ہے سابق وزیراعظم ذوالفقار علی بھٹو نے گلگت بلتستان سے ایف سی آر جیسے کالے قانون کو ختم کیا سابق صدر آصف علی زرداری نے سیلف گورننس آرڈر کی شکل میں انتظامی نظام دیا اس سے پہلے کی حکومتوں نے بھی آئینی حقوق کی طرف پیشرفت کی ہے ۔ سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ سیلف گورننس میں موجود نقائض کو دور کرنے کیلئے کوشش کرنے کی ضرورت ہے سی پیک کو کامیاب بنانے کیلئے گلگت بلتستان کی آئینی حیثیت کا تعین وقت کی اہم ترین ضرورت ہے آئینی اصلاحات کمیٹی کی سفارشات کو پبلک نہ کرنا بڑی زیادتی کی بات ہے ہماری حکومت نے صوبہ بنانے کی سفارش کی ہے آئینی حقوق کے مسئلے پر خطے کے 95 فیصد لوگ متفق ہیں انہوں نے کہا کہ آئینی حقوق کے لئے اب ہمیں مزید اتحاد کا عملی مظاہرہ کرنا ہو گا ہم مختلف تعصبات کا شکار رہیں گے تو حقوق کبھی نہیں ملیں پاکستان تحریک انصاف کی رہنما و سابق رکن اسمبلی آمنہ انصاری ایڈووکیٹ نے کہا ہے کہ آئینی حقوق نہ ملنے کی ذمہ دار پیپلزپارٹی اور مسلم لیگ ن ہے دونوں جماعتوں نے آئینی مسئلے پر بڑے جھوٹے وعدے کئے اور نعروں کے سوا عملی طور پر دونوں جماعتوں نے کچھ نہیں کیا اب تمام سیاسی مذہبی جماعتوں کو متحد ہونا ہو گا۔

Facebook Comments
Share Button