تازہ ترین

Marquee xml rss feed

اںڈے برآمد ہونے کے بعد سیکیورٹی اہلکار چوکنے ہوگئے رانا ثنا اللہ نے کہا ہے کہ سیکیورٹی اہلکارہر بار ان سے پوچھتے ہیں کہ ان کے پاس انڈے تو نہیں ہیں-گرفتار رکن کو پنجاب اسمبلی میں لانے کیلئے شہبازشریف نے رولز میں ترمیم نہیں کی تھی‘ چودھری پرویزالٰہی سب سے زیادہ فلاحی کام ہمارے دور میں ہوئے‘باباجی خالد محمود مکی ... مزید-یکم جنوری سے تمام کمرشل ڈرائیورز کی سکریننگ اور مرحلہ وار خصوصی تربیتی کورسز کرانے کا فیصلہ 6ماہ میں ہر ڈرائیور کو اس عمل سے گزارا جائے ،آگاہی مہم جاری رکھی جائے‘عبدالعلیم ... مزید-آئی ایم ایف کی شرائط کے انتظار سے پہلے ہی معیشت کی بہتری کیلئے ازخود اقدامات کئے ‘ اسد عمر اصلاحات کے معاملے پر آئی ایم ایف اور حکومت کے درمیان اختلافات ہیں ،اقدامات ... مزید-سعودی عرب سے امداد حاصل کرنے پر پاکستان کو شرمندگی نہیں ہونی چاہیئے ہمیں شرم کرنے کا کہنے کی بجائے مغربی ملکوں کے رہنماوں کو شرم آنی چاہیے جو جمہوریت اور آزادی کی بات ... مزید-لندن میں پاکستانی تاجر کا کروڑوں کا کاروبار جل کر راکھ نسل پرستوں نے پاکستانی تاجر کی کروڑوں روپے مالیت کی گاڑیاں جلا ڈالیں-احتساب عدالت نے شوکت عزیز کیخلاف دائر ریفرنس میں شریک ملزم عارف علاؤالدین کو عدم حاضری کی بناء پر اشتہاری قرار دیدیا-جنگی حکمت عملی میں ہمیں ہائبرڈوار فئیر اور سائبر وار فئیر کے خلاف چوکنا رہنا ہے ،ْ نیول چیف ایڈمرل ظفر محمود عباسی جیو اسٹریٹجک حالات کو مدنظر رکھتے ہوئے ہمیں اپنے قومی ... مزید-ْ پروٹوکول میں جو بات بتائی گئی اس میں کوئی بھی چیز یہاں موجود نہیں ،ْ چیف جسٹس ثاقب نثار-امریکہ نے پاکستان کو باعث تشویش ممالک پر عائد معاشی پابندیوں سے استثنیٰ دے دیا گذشتہ روز امریکہ نے پاکستان کو مذہبی آزادی کی خلاف ورزی کرنے والے ممالک کی فہرست میں ... مزید

GB News

پائیدار ترقی کے اہداف کے حوالے سے عوام میں مزید شعور اجاگر کرنے کی ضرورت ہے،حاجی فدا محمد ناشاد

Share Button

گلگت(پ۔ر) اقوام متحدہ کے تعین کردہ پائیدار ترقی کے اہداف کے حصول کیلئے قائم گلگت بلتستان اسمبلی کی ٹاسک فورس کا اہم اجلاس سپیکر حاجی فدا محمد ناشاد کی صدارت میں انکے چیمبر میں منعقد ہوا۔اجلاس میں ٹاسک فورس کے ممبران وزیر منصوبہ بندی اقبال حسن،ممبراسمبلی عمران ندیم،ممبر اسمبلی حاجی رضوان علی محکمہ پلاننگ اور گلگت بلتستان پالیسی انسٹی ٹیوت کے ذمہ دران نے بھی شرکت کی۔اجلاس کا مقصد ٹاسک فورس کو مزید فعال بنا کر اقوام متحدہ کے تعین کردہ ترقیاتی اہداف کے حصول کو ممکن بنانے کے لیے لائحہ عمل طے کرنا تھا۔اس موقع پر سپیکر حاجی فدا محمد ناشاد نے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ اگر ہم اپنا ترقیاتی بجٹ پائیدار ترقی کے اہداف کو مد نظر رکھ کر خرچ کرینگے توخطے میں ذندگی کا ہر شعبہ برابر ترقی کریگااور ہمارے بیشتر مسائل اس سے حل ہونگے ۔انہوں نے کہا کہ ترقیاتی اہداف کے لیے قائم اس ٹاسک فورس میں ہم نے تمام اضلاع کو نمائندگی دی ہے تاکہ گلگت بلتستان کا ہر ضلع برابر ترقی کرسکے۔انہوں نے مزید کہا کہ پائیدار ترقی کے اہداف کے حوالے سے عوام میں مزید شعور اجاگر کرنے کی ضرورت ہے ،سپیکر نے اسمبلی ممبران کو ہدایت کی ہے کہ وہ کسی بھی تقریب میں شرکت کرتے ہیں وہاں پر پائیدار ترقی کے اہداف کے حوالے سے عوام کو آگاہی فراہم کرے تاکہ عوام کی تعاون سے ان اہداف کا حصول ممکن بنایا جاسکے۔انہوں نے کہا کہ پائیدار ترقی کے اہداف کو حاصل کر نے کے لیے ضرورت پڑنے پر خصوصی قانون سازی بھی کرینگے تاکہ علاقے کو ترقیاتی یافتہ خطوں کی صف میں لاسکے۔اجلاس میں وزیر منصوبہ بندی اقبال حسن نے کہا کہ ترقیاتی اہداف کے حوالے سے دیگر صوبوں کی نسبت ہماری کارکردگی بہت بہتر ہے اس حوالے سے ہم نے کافی کام کیا ہے،ہمیں ان اہداف میں سے موسمیاتی تبدیلیوں پر خاص توجہ دینے کی ضرورت ہے کیونکہ موسمیاتی تبدیلیوں کی وجہ سے ہماراعلاقہ سب سے ذیادہ متاثر ہورہا ہے۔انہوں نے زور دیا کہ موسمیاتی تبدیلیوں کے اثرات سے نمٹنے کے لیے ہمیں تمام متعلقہ اداروں کے ساتھ ملکر کام کرنے کی ضرورت ہے۔اجلاس میں ممبران اسمبلی عمران ندیم اور حاجی رضوان علی نے ٹاسک فورس کو مزید فعال بنانے پر زور دیتے ہوئے کہا کہ ان ترقیاتی اہداف میں چند ایسے اہداف ہیں جنہیں ہم اپنے وسائل کے ذریعے حاصل کر سکتے ہیںاور باقی اہداف کو حاصل کرنے کے لیے وفاق کی تعاون درکار ہے۔اس پر سپیکر اسمبلی نے کہا کہ پائیدار ترقی کے اہداف کے لیے حکومت جوبجٹ آئندہ مالی سال کے لیے مختص کریگی اس میں سے گلگت بلتستان کا حصہ مختص کرانے کیلئے ضروری کاروائی عمل میں لائی جائیگی تاہم گلگت بلتستان کے ترقیاتی بجٹ سے بھی اپنی اہم ترین ضروریات کو پورا کرنے کے لیے ایک منصوبہ تیار کرینگے۔جس کے لیے سپیکر نے محکمہ پلاننگ ،اسمبلی سیکریٹریٹ اور گلگت بلتستان پالیسی انسٹی ٹیوٹ کو ہدایت کی ہے کہ وہ ان ترقیاتی اہداف کے حصول کے لیے ایک پی سی ون تیار کرے جس سے ٹاسک فورس کو درکار ضروریات اور عوام میں شعور اجاگرکرنے کے لیے وسائل مہیا ہوسکے۔

 

Facebook Comments
Share Button