تازہ ترین

Marquee xml rss feed

گاڑیوں اور بھینسوں کے بعد 11کھلاڑی بھی نیلام کیے جائیں کھلاڑی نیلام کرنے سے تین ہزار ارب GB ڈیٹا اور 20 ہزار میگا واٹ سالانہ بجلی کی بچت ہو گی جو قوم کرکٹ میچ دیکھنے میں خرچ ... مزید-پنجاب کو آ پریٹو بینک اور سوسائٹی کے ریکارڈ روم میں آگ لگائے جانے کا انکشاف آگ شارٹ سرکٹ سے نہیں بلکہ پٹرولیم سے لگائی گئی تھی،جس وقت آ گ لگی اس وقت چوکیدار بھی موجود نہیں ... مزید-نواز شریف روزانہ بیگم کلثوم نواز کی قبر پر کچھ وقت گزارتے ہیں نواز شریف کو پچھتاوا ہے کہ وہ آخری وقت میں کلثوم نواز کے ساتھ نہیں تھے-پاکستان چین کے تعاون سے گوادر پورٹ کو دنیا کی جدید ترین بندرگاہ بنا کر سمندری راستے سے عالمی تجارت کو فروغ دینے کیلئے بھرپور اقدامات کر رہا ہے وفاقی وزیر منصوبہ بندی، ... مزید-امریکی سرمایہ کاروں کو پاکستان کے دورے کی دعوت، ویزے آسان بنانے کی کوشش جاری ہے امریکا میں پاکستان کے سفیر علی جہانگیر صدیقی کی ایف پی سی سی آئی کے صدر غضنفر بلور سے ... مزید-سابق صدر پرویز مشرف کی دبئی میں 4.5 ملین سے زائد کی جائیداد سپریم کورٹ میں جمع کروائے گئے بیان حلفی میں جائیدادوں کی تفصیل سامنے آ گئی-وزیراعظم عمران خان کا آج قوم سے خطاب متوقع وزیراعظم عمران خان قوم سے خطاب میں اہم اعلان کریں گے-کیپٹن (ر) صفدر کو بیرون ملک بھیجنے کی تیاریاں کیپٹن (ر) صفدر کو علاج کے لیے بیرون ملک منتقل کیا جا سکتا ہے-ضمنی انتخابات میں تحریک انصاف کی جیت یقینی ہے،لیاقت خان خٹک-چترال میں چینی انجینئرزکی گاڑی کوحادثہ ، 6 افراد زخمی

GB News

ایل پی جی ایئرمکس منصوبہ

Share Button

وزیر اعلی گلگت بلتستان حافظ حفیظ الرحمان نے گلگت میں ڈیڑھ ارب روپے کے ایل پی جی ایئرمکس منصوبے کا سنگ بنیاد رکھتے ہوئے کہا ہے گلگت بلتستان کیلئے ایل پی جی ایئرمکس منصوبہ انقلاب کی حیثیت رکھتا ہے اس منصوبے سے گلگت بلتستان کے عوام کو سستے نرخوں پر سبسڈائز گیس کی فراہمی ممکن ہوگی۔ اس اہم منصوبے میں حکومت اور انتظامیہ کا کردار قابل تحسین رہا ہے ۔اس منصوبے کے آغاز سے گلگت بلتستان میں ایک نئے دورکا آغاز ہوگا۔ پہلے مرحلے میں گلگت کے عوام کو ایل پی جی ایئرمکس منصوبے کے ذ ریعے گیس فراہم کی جائے جسے بتدریج تمام اضلاع تک وسعت دی جائے گی۔ ایل پی جی ایئرمکس منصوبے کے آغاز سے جنگلات کے کٹائو کو روکنے اور بجلی کے بحران پر قابو پانے میں مدد ملے گی۔ گیس منصوبہ بلاشبہ ایک اہم پیشرفت ہے جس سے شہریوں کو سہولت میسر آئے گی’ابتدائی مرحلے میں گلگت شہر کے 35ہزار کے قریب کمرشل و رہائشی یونٹس کو ایل پی جی پر منتقل کیا جائے گا جبکہ 2020تک تمام دس اضلاع کے کمرشل و رہائشی یونٹس ایل پی جی پر منتقل کر دیے جائیں گے جس سے پلوشن میں بھی کمی ہو گی اور ایندھن کے استعمال کیلئے جنگلات کے بے دریغ کٹائو کو بھی روکا جا سکے گا یہ منصوبہ ماحول دوست بھی ثابت ہو گا کیونکہ اس وقت لوگ ایندھن کی ضرورت پورا کرنے کے لیے درختوں کو بے تحاشاکاٹتے ہیںسردیوں میں یہ سلسلہ کچھ زیادہ ہی بڑھ جاتا ہے کیونکہ سرد موسم کے باعث لکڑیوں کا استعمال کیا جاتا ہے اسی طرح کھانے پکانے کے لیے بھی لکڑیوں کا استعمال عام ہے اس لیے ضرورت اس بات کی ہے کہ جلد از جلد تمام شہریوں تک یہ سہولت بہم پہنچانے کی سعی کی جائے۔

Facebook Comments
Share Button