تازہ ترین

Marquee xml rss feed

پاک فوج نےالیکشن میں دھاندلی نہ ہونےکی یقین دہانی کروائی 2013ء میں بھی انتخابات دھاندلی کا شکارہوگئےتھے،کراچی میں ایم کیوایم اور پنجاب میں ن لیگ نےدھاندلی کی۔پی ٹی آئی ... مزید-کلثوم نوازکی بیماری ڈھونگ ہے،ہمارےبھی وہاں ذرائع ہیں،نعیم الحق کلثوم نوازتیزی سےصحتیاب ہورہی ہیں، ہماری دعائیں ان کیساتھ ہیں،دعا ہے کہ کلثوم نوازجلدازجلد صحتیاب ہوکر ... مزید-عوامی ورکرز پارٹی کا تحریک انصاف ،ن لیگ اور دیگر سیاسی جماعتوں کے امیدواروں کو ایک ہی پلیٹ فارم پر اپنا منشور عوام کے سامنے پیش کرنے کا چیلنج نتخابات کے موقع پر ہی نظر ... مزید-نوازشریف کے ساتھ کیا اختلافات تھے مناسب وقت پر سچ سچ بتائوں گا ، کوئی ٹکٹ کے ساتھ آئے یا بغیر ٹکٹ کے یہاں کے عوام انہیں رد کریں گے، مجھے کشمیریوں کے قاتل راج ناتھ کو جواب ... مزید-صاف پانی سیکنڈل کیس ،نیب کا شہباز شریف کیلئے 25 سے زائد سوالات پر مشتمل سوالنامہ تیار-پشاور،مزدور کسان پارٹی کا انتخابات 2018میں قومی وطن پارٹی کے امیدواروں کی مکمل حمایت کا اعلان-پی ٹی آئی ایک پاکستان کا نعرہ لگا رہی ہے اور پارٹی ٹکٹ امیروں اور سرمایہ داروں میں تقسیم کئے، آفتاب شیر پائو ہم نے پارٹی ٹکٹوں کی تقسیم میرٹ پر کی ہے اور اہل امیدواروں ... مزید-متحدہ مجلس عمل پی کے 79 کے زیر اہتمام علماء کنونشن کل ہو گا،ملک نوشاد خان-تحریک انصاف سمیت دیگرسیاسی جماعتیں ایم ایم اے کے پانچ سالہ دوراقتدارکامقابلہ نہیں کرسکتی ہیں،حاجی غلام علی-آنے والے الیکشن انتہائی اہم اور اس ملک کی تقدیر کے لئے فیصلہ کن ہیں، اسد قیصر

GB News

واں مالی سال کے 9مہینوں میں صوبائی حکومت نے کل بجٹ کا 36فیصد خرچ کرلیا،راجہ جہانزیب

Share Button

گلگت(فہیم اختر سے)ممبرقانون سازاسمبلی گلگت بلتستان راجہ جہانزیب نے کہا ہے کہ رواں مالی سال کے 9مہینوں میں صوبائی حکومت نے کل بجٹ کا 36فیصد خرچ کرلیا ہے اور آئندہ صرف تین مہینوں کیلئے بجٹ کا 64فیصد حصہ باقی ہے جس سے یہ خدشہ آرہا ہے کہ ترقیاتی بجٹ کی خطیر رقم خرچ نہیں ہوسکے گی جو کہ گلگت بلتستان کے ساتھ سنگین مذاق کے مترادف ہے صوبائی حکومت نے اب تک عوامی نمائندوں سے اے ڈی پی کیلئے منصوبے ہی طلب نہیں کئے ہیں مزید تاخیر کی صورت میں 15لاکھ عوام کے ووٹوں سے منتخب ممبران کا نہ صرف استحقاق مجروح ہوگا بلکہ عوام کے مفاد میں 1روپیہ بھی خرچ نہیں ہوگا جوکہ صوبائی حکومت کی نااہلی ہے کے پی این سے گفتگو کرتے ہوئے رکن صوبائی اسمبلی راجہ جہانزیب نے کہا کہ بجٹ خرچ کرنے کے حوالے سے صوبائی حکومت نے نااہلی کی انتہا کردی ہے صرف 3ماہ کیلئے بجٹ کا 64فیصد حصہ بقایا ہونا اور 9ماہ میں صرف 36فیصد خرچ ہونا اس نااہلی کا منہ بولتا ثبوت ہے گزشتہ سال رانی عتیقہ کی سربراہی میں قائمہ کمیٹی میں ہم نے ہفتہ وار بنیادوں پر تمام اداروں کی چیک اینڈ بیلنس کی اور نہ صرف مکمل بجٹ خرچ کرنے میںہم کامیاب ہوئے بلکہ سابقہ سال کے 4ارب سے زائد رقم کو بھی خرچ کرایا اسی بنیاد پر صوبائی حکومت نے وفاق سے بجٹ میں اضافہ کا مطالبہ کردیا اور بجٹ دوگناہ کردیاگیا مگر بدقسمتی سے رواں مالی سال صوبائی حکومت نے اسمبلی معاملات اور قائمہ کمیٹی میں دلچسپی نہیں لی جس کی وجہ سے قائمہ کمیٹی کا کوئی بھی اجلاس طلب نہیں ہوسکا ہے قائمہ کمیٹی کا بذات خود غیر فعال ہونا سمجھ سے باہر ہے تاہم اس کا نزلہ عوام پر گر رہاہے انہوںنے کہا کہ صوبائی حکومت سے باربار مطالبہ کرنے اور وزیراعلیٰ سے پوچھنے کے باوجود ممبران اسمبلی سے اب تک ترقیاتی منصوبے طلب نہیں کئے گئے ہیں گزشتہ سال دسمبر سے اب تک صرف جلد ہی کے نام پر ٹرخایا جارہا ہے راجہ جہانزیب نے مزید کہا کہ صوبائی حکومت کے پاس بجٹ خرچ کرنے کے حوالے سے صلاحیت ہی نہیں ہے ممبران اسمبلی کے 2016-17کے منظور شدہ منصوبوں کے ٹینڈرز ابھی تک نہیں ہوئے رواں سال اب تک بجٹ کا کل 36فیصد خرچ کیاگیا ہے جبکہ آئندہ بجٹ کیلئے اب تک ممبران اسمبلی سے سکیمیں طلب ہی نہیں کئے گئے ہیں صوبائی حکومت اخبارات کی حد تک اچھی کارکردگی دکھا رہی ہے جبکہ عملی طورپر کارکردگی صفر ہے ممبران اسمبلی کو صرف یاد دہانیاں کرائی جارہی ہے۔

 

Facebook Comments
Share Button