تازہ ترین

Marquee xml rss feed

اںڈے برآمد ہونے کے بعد سیکیورٹی اہلکار چوکنے ہوگئے رانا ثنا اللہ نے کہا ہے کہ سیکیورٹی اہلکارہر بار ان سے پوچھتے ہیں کہ ان کے پاس انڈے تو نہیں ہیں-گرفتار رکن کو پنجاب اسمبلی میں لانے کیلئے شہبازشریف نے رولز میں ترمیم نہیں کی تھی‘ چودھری پرویزالٰہی سب سے زیادہ فلاحی کام ہمارے دور میں ہوئے‘باباجی خالد محمود مکی ... مزید-یکم جنوری سے تمام کمرشل ڈرائیورز کی سکریننگ اور مرحلہ وار خصوصی تربیتی کورسز کرانے کا فیصلہ 6ماہ میں ہر ڈرائیور کو اس عمل سے گزارا جائے ،آگاہی مہم جاری رکھی جائے‘عبدالعلیم ... مزید-آئی ایم ایف کی شرائط کے انتظار سے پہلے ہی معیشت کی بہتری کیلئے ازخود اقدامات کئے ‘ اسد عمر اصلاحات کے معاملے پر آئی ایم ایف اور حکومت کے درمیان اختلافات ہیں ،اقدامات ... مزید-سعودی عرب سے امداد حاصل کرنے پر پاکستان کو شرمندگی نہیں ہونی چاہیئے ہمیں شرم کرنے کا کہنے کی بجائے مغربی ملکوں کے رہنماوں کو شرم آنی چاہیے جو جمہوریت اور آزادی کی بات ... مزید-لندن میں پاکستانی تاجر کا کروڑوں کا کاروبار جل کر راکھ نسل پرستوں نے پاکستانی تاجر کی کروڑوں روپے مالیت کی گاڑیاں جلا ڈالیں-احتساب عدالت نے شوکت عزیز کیخلاف دائر ریفرنس میں شریک ملزم عارف علاؤالدین کو عدم حاضری کی بناء پر اشتہاری قرار دیدیا-جنگی حکمت عملی میں ہمیں ہائبرڈوار فئیر اور سائبر وار فئیر کے خلاف چوکنا رہنا ہے ،ْ نیول چیف ایڈمرل ظفر محمود عباسی جیو اسٹریٹجک حالات کو مدنظر رکھتے ہوئے ہمیں اپنے قومی ... مزید-ْ پروٹوکول میں جو بات بتائی گئی اس میں کوئی بھی چیز یہاں موجود نہیں ،ْ چیف جسٹس ثاقب نثار-امریکہ نے پاکستان کو باعث تشویش ممالک پر عائد معاشی پابندیوں سے استثنیٰ دے دیا گذشتہ روز امریکہ نے پاکستان کو مذہبی آزادی کی خلاف ورزی کرنے والے ممالک کی فہرست میں ... مزید

GB News

سکردو روڈ کا ڈیزائن کیا ہے، پانچ ٹنل کہاں ہیں، ڈپٹی سپیکر

Share Button

ڈپٹی سپیکر جعفراللہ خان نے کہا ہے کہ گلگت سکردو روڈ صرف بلتستان ریجن کیلئے نہیں بلکہ پورے گلگت بلتستان کے فائدے کیلئے ہے موٹروے کے بعد بہت بڑا منصوبہ ہے اس منصوبے کو ہم کسی بھی صورت میں خراب ہونے نہیں دیں گے انہوںنے جمعرات کے روز گلگت سکردو روڈ کے حوالے سے ایوان میںپیش ہونے والی ایک قرارداد پر اپنے ریمارکس میں کہا کہ گزشتہ ماہ وزیراعظم شاہدخاقان عباسی سکردو آئے تھے وہاں پر این ایچ اے کے حکام نے وزیر اعظم کوبریفنگ دیتے ہوئے بتایا تھا کہ اس روڈ پر پانچ ٹنل ہونگے جس سے نہ صرف فاصلہ کم ہوگا بلکہ چڑھائی اور اترائی بھی نہیں ہوگی اب ہم اس قرارداد کو این ایچ اے حکام کوبجھوادیں گے تاکہ وہ ممبران اسمبلی کے خدشات کو دورکرسکیں اس سے قبل پارلیمانی سیکرٹری میجر(ر) محمدامین نے ایک قرارداد ایوان میں پیش کرتے ہوئے کہا کہ گلگت سکردو روڈ دفاعی اہمیت کی حامل سٹرک ہے اس سٹرک پر کام شروع ہو چکا ہے مگر اس روڈ کی ڈیزائنگ کے حوالے سے ہم مکمل لاعلم ہیں ہمیں کچھ علم نہیں ہے کہ آسمانی موڑ کی چڑھائی کیسے ختم ہوگی مالو پا چڑھائی کیسے ختم کیا جائیگا روڈ کی ڈرائنگ اورڈیزائن سے ہم سب لاعلم ہیں اس لئے یہ ایوان این ایچ اے کے حکام سے مطالبہ کرتا ہے کہ این ایچ اے کے ذمہ دار حکام اس ایوان کو گلگت سکردو روڈ کی ڈیزائن اورڈرائنگ پرتفصیلی بریفنگ دے اور اس ایوان کے خدشات کو دور کرے کا چو امتیاز حیدر نے قرارداد کی حمایت کرتے ہوئے کہا کہ یہ بہت بڑا منصوبہ ہے اس کی تعمیر شروع کرنے پر ہم سابق وزیراعظم نوازشریف اور وزیر اعلیٰ گلگت بلتستان کا شکریہ ادا کرتے ہیںانہوںنے کہا کہ گلگت سکردوروڈ پرتیز رفتاری سے کام ہورہاہے مگرابھی تک روڈکا ڈیزائن فائنل نہیں ہوا ہے سکندر علی نے قراردادکی حمایت کرتے ہوئے کہا کہ گلگت سکردو روڈ بلتستان کے عوام کیلئے بہت بڑا تحفہ ہے ہم وفاقی اور صوبائی حکومت کا شکر گزار ہیں ۔جاوید حسین نے قراردادکی حمایت کرتے ہوئے کہا کہ یہ دفاعی اہمیت کا حامل منصوبہ ہے چالیس ارب کا پراجیکٹ ہے اس سٹرک کی تعمیر لاہور موٹروے طرز پر ہوناچاہیے اورنگزیب ایڈووکیٹ نے قرارداد کی مخالفت کرتے ہوئے کہا کہ رول آف پروسیجر کے تحت منصوبوں کے حوالے سے قراردادیں ایوان میں پیش نہیں ہوسکتی ہیں اس موقع پر ڈپٹی سپیکر جعفر اللہ خان نے قرارداد این ایچ اے کے اعلیٰ حکام کوبجھوانے کا اعلان کیا۔

Facebook Comments
Share Button