تازہ ترین

Marquee xml rss feed

اںڈے برآمد ہونے کے بعد سیکیورٹی اہلکار چوکنے ہوگئے رانا ثنا اللہ نے کہا ہے کہ سیکیورٹی اہلکارہر بار ان سے پوچھتے ہیں کہ ان کے پاس انڈے تو نہیں ہیں-گرفتار رکن کو پنجاب اسمبلی میں لانے کیلئے شہبازشریف نے رولز میں ترمیم نہیں کی تھی‘ چودھری پرویزالٰہی سب سے زیادہ فلاحی کام ہمارے دور میں ہوئے‘باباجی خالد محمود مکی ... مزید-یکم جنوری سے تمام کمرشل ڈرائیورز کی سکریننگ اور مرحلہ وار خصوصی تربیتی کورسز کرانے کا فیصلہ 6ماہ میں ہر ڈرائیور کو اس عمل سے گزارا جائے ،آگاہی مہم جاری رکھی جائے‘عبدالعلیم ... مزید-آئی ایم ایف کی شرائط کے انتظار سے پہلے ہی معیشت کی بہتری کیلئے ازخود اقدامات کئے ‘ اسد عمر اصلاحات کے معاملے پر آئی ایم ایف اور حکومت کے درمیان اختلافات ہیں ،اقدامات ... مزید-سعودی عرب سے امداد حاصل کرنے پر پاکستان کو شرمندگی نہیں ہونی چاہیئے ہمیں شرم کرنے کا کہنے کی بجائے مغربی ملکوں کے رہنماوں کو شرم آنی چاہیے جو جمہوریت اور آزادی کی بات ... مزید-لندن میں پاکستانی تاجر کا کروڑوں کا کاروبار جل کر راکھ نسل پرستوں نے پاکستانی تاجر کی کروڑوں روپے مالیت کی گاڑیاں جلا ڈالیں-احتساب عدالت نے شوکت عزیز کیخلاف دائر ریفرنس میں شریک ملزم عارف علاؤالدین کو عدم حاضری کی بناء پر اشتہاری قرار دیدیا-جنگی حکمت عملی میں ہمیں ہائبرڈوار فئیر اور سائبر وار فئیر کے خلاف چوکنا رہنا ہے ،ْ نیول چیف ایڈمرل ظفر محمود عباسی جیو اسٹریٹجک حالات کو مدنظر رکھتے ہوئے ہمیں اپنے قومی ... مزید-ْ پروٹوکول میں جو بات بتائی گئی اس میں کوئی بھی چیز یہاں موجود نہیں ،ْ چیف جسٹس ثاقب نثار-امریکہ نے پاکستان کو باعث تشویش ممالک پر عائد معاشی پابندیوں سے استثنیٰ دے دیا گذشتہ روز امریکہ نے پاکستان کو مذہبی آزادی کی خلاف ورزی کرنے والے ممالک کی فہرست میں ... مزید

GB News

حکومت عوامی امنگوں کے مطابق کام کرنے میں مکمل ناکام ہو چکی ،راجہ جہانزیب

Share Button

گلگت(ثاقب عمرسے )پاکستان تحریک انصاف کے رکن قانون سازاسمبلی گلگت بلتستان راجہ جہانزیب نے کہاہے کہ اکیس اپریل کو آل پارٹیزکانفرنس گاہکوچ میں بلائی جائیگی اور غذرمیں کم سے کم تین اضلاع بنانے کا مطالبہ حکومت کے سامنے رکھ کر اضلاع بنائو تحریک کابھرپور آغاز کیا جائیگا۔اب تک حکومت عوامی امنگوں کے مطابق کام کرنے میں مکمل ناکام ہو چکی ہے حکومت کے پہلے سال کے اے ڈی پیز پر کام نہیں ہوسکاہے 22گھنٹے کی لوڈشیڈنگ ہے پیپلزپارٹی اورمسلم لیگ ن دونوں عوام کیلئے ایک سفید بیل اور ایک کالا بیل ہیں جو عوام کو روندنے کے علاوہ کچھ نہیں کررہے ہیں۔انہوںنے کے پی این سے گفتگوکرتے ہوئے کہا کہ نوجوان نسل ڈگریاں لے کر دردر کی ٹھوکریں کھارہے ہیں اور نو کریوں کے اعلانات ہورہے ہیں لیکن کسی کو بھی نو کری نہیں مل رہی ہے۔وعدوں پر وعدے ہورہے ہیں لیکن عملی کام ہوتا نظر نہیں آرہاہے سب سے زیادہ اس وقت غذر کے ساتھ سوتیلی ماں کاسلوک کیا جارہاہے اور ہر وقت یاسین کے عوام کو لالی پاپ دینے کی کوشش ہوئی ہے لیکن اس مرتبہ غذر کے باشندے اضلاع بنائو تحریک کا آغازکرینگے۔اورسٹرکوں پر آئینگے۔انہوںنے کہا کہ غذرمیں کم سے کم تین اضلاع سے کم کوئی بھی سیٹ اپ قبول نہیں ہے اوراب کی بار حکومت کو ٹف ٹائم دیا جائیگا حکومت نے لالی پاپ تھمانے کی کوشش کی تو اس کے سنگین نتائج برآمد ہونگے۔اکیس اپریل کو تمام جماعتوں کے ساتھ مل کر اے پی سی میںآئندہ کا لائحہ عمل طے کیا جائیگا اگر حکومت نے اس مرتبہ بھی اضلاع نہیں بنائے تو یہ حکومت کیلئے خطرناک ثابت ہوگا۔انہوںنے کہا کہ شہدا کی سرزمین غذرکے ساتھ سوتیلی ماں سلوک رکھنے کی وجہ سے آج غذر کے یوتھ مایوس ہو چکے ہیں اوریہ مایوسی ہم سے برداشت نہیں ہوتی ہے ہرطرف بیڈ گورننس کی انتہا ہو چکی ہے لیکن اب صبر کاپیمانہ لبریز ہو چکاہے انہوںنے کہا کہ غذر کے مسائل کے حوالے سے اسمبلی فلور پر بھی لڑپڑے ہیںاور غذر کے بنیادی حقوق کیلئے عوامی عدالت سجایا جائیگا اور اے پی سی کے بعد آئندہ کا جو لائحہ عمل ہوگا وہ شدید ہوگا اور جب تک غذرمیں کم سے کم تین اضلاع نہیں بنائے جاتے ہیں تب تک چین سے نہیں رہیںگے ۔انہوںنے کہا کہ حکومت اضلاع بنانے کیساتھ لوڈشیڈنگ کے خاتمے اورنوکریوں کے حوالے سے نوجوان نسل کو مایوسی سے نکالنے کیلئے کام کرے اور ساتھ ہی جو ترقیاتی کا ٹھپ پڑے ہیں اورجگہ جگہ ترقیاتی کام قبرستانوں کا منظر پیش کررہے ہیں ان کو مکمل کیا جائے دیگر صورت حکومت کے لئے یہ رویہ خطرناک ثابت ہوگا انہوںنے کہا کہ آنیوالے ایام حکومت کیلئے امتحان کے ہیں اس لئے حکومت سنجیدگی کے ساتھ عوامی تحفظات دور کرے۔

 

Facebook Comments
Share Button