تازہ ترین

Marquee xml rss feed

نعیم الحق نے شہباز شریف کے پروڈکشن آرڈر ضبط کرنے کی دھمکی دے دی شہباز شریف اور اس کے چمچوں کی اتنی جرات کہ وہ قومی اسمبلی میں وزیر اعظم پر ذاتی حملے کریں۔کیا وہ جیل میں ... مزید-وزیراعظم کا سانحہ ساہیول پر وزراء متضاد بیانات پر سخت برہمی کا اظہار آئندہ بغیر تیاری میڈیا پر بیان بازی نہ کی جائے انسانی زندگیوں کا معاملہ ہے کسی قسم کی معافی کی گنجائش ... مزید-5 ارب روپے قرض حسنہ کیلئے مختص کرنا خوش آئند ہے، فنانس بل میں غریب آدمی کو صبر کا پیغام دیا گیا ہے امیر جماعت اسلامی سینیٹر سراج الحق کی پارلیمنٹ ہائوس کے باہر میڈیا ... مزید-فنانس بل سے متوسط طبقہ کو ریلیف ملا ہے، عوام کا پیسہ عوام پر خرچ ہو گا، اپوزیشن کے پاس بات کرنے کو کچھ نہیں وفاقی وزیر آبی وسائل فیصل واوڈا کی پارلیمنٹ ہائوس کے باہر میڈیا ... مزید-صوبائی اسمبلی کے حلقہ پی ایس94 کے ضمنی الیکشن کے موقع پر سیکورٹی کو غیرمعمولی بنایا جائے، آئی جی سندھ-وزیر خزانہ اسد عمر کی طرف سے قومی اسمبلی میں پیش کردہ ضمنی مالیاتی (دوسری ترمیم) بل 2019 کا مکمل متن-جنوری کو ہونے والے ضمنی انتخابات کراچی کی سیاست میں نئی راہیں متعین کرے گا،مصطفی کمال پی ایس پی کسی فرد یا گروہ کا نام نہیں ہے بلکہ ایک تحریک کا نام ہے جو مظلوم و محکوموں ... مزید-ملک کا اقتصادی مستقبل کراچی کی معاشی ترقی میں مضمر ہے۔گورنر سندھ-سی پیک پاکستان اور چین کے مابین تعلقات کو مزید گہرا کرنے کے لئے مستحکم بنیاد، خطے کو منسلک کرنے میں اہم کردارادا کر رہا ہے، سی پیک تمام خطے میں امن و استحکام لانے میں ... مزید-احتساب عدالت اسلام آباد میں اسحاق ڈار کیخلاف آمدن سے زائد اثاثوں کے مقدمے میں دو مزید گواہوں کے بیانات ریکارڈ

GB News

اسلام آباد میں کرکٹ سٹیڈیم بنانا چاہتے ہیں:نجم سیٹھی، جگہ لینے میں مدد کریں گے،چیف جسٹس

Share Button

اسلام آباد:چیف جسٹس پاکستان ثاقب نثار نے اسلام آباد میں کرکٹ سٹیڈیم کی تعمیر کے لئے چیئرمین پی سی بی نجم سیٹھی کو مدد کرنے کی پیشکش کردی ۔

تفصیلات کے مطابق سپریم کورٹ میں شکر پڑیاں کرکٹ سٹیڈیم کی تعمیرسے متعلق کیس کی سماعت ہوئی تو اس موقع پر چیئرمین پی سی بی بھی عدالتی کارروائی کا حصہ بنے جبکہ چیف جسٹس نے ریمارکس دیئے کہ سپورٹس کی حوصلہ شکنی نہیں ہونی چاہیے بلکہ حوصلہ افزائی کرنی چاہیے ،سپورٹس نہ ہو تو ہم ” جھلے “ ہوجائیں گے، ہم پی سی بی کواسلام آباد میں کرکٹ سٹیڈیم کیلئے جگہ لینے میں مدد کریں گے

دوران سماعت پی سی بی کے وکیل نے عدالت کو بتایا کہ سی ڈی اے کو 50 کروڑ روپے دیے ہیں۔ چیف جسٹس نے ریمارکس دیے کہ ایم او یو کی کوئی قانونی حیثیت نہیں ہے، پی سی بی نے جو درخت کاٹے وہ لگانے پڑیں گے، قانون کی خلاف ورزی کر کے سٹیڈیم کی تعمیر نہیں ہونے دیں گے۔جسٹس ثاقب نثار نے اپنے ریمارکس میں مزید کہا کہ دیکھنا ہے کہ شکرپڑیاں نیشنل پارک کا حصہ ہے یا نہیں؟ اگرحصہ ہے تو وہاں سٹیڈیم کی تعمیر نہیں ہوسکتی۔

چیئرمین سی ڈی اے نے کہا کہ پی سی بی اور سی ڈی اے کے مابین ایم او یو پر عمل نہیں ہوسکا،چیف جسٹس نے ریمارکس دیئے کہ ایم او یو کی کوئی قانونی حیثیت نہیں۔ پی سی بی کے وکیل نے عدالت کو بتایا کہ سی ڈی اے کو 50 کروڑ روپے دیے ہیں۔

نجم سیٹھی نے عدالت سے استدعا کی کہ سی ڈی اے ہمیں سٹیڈیم کیلئے متبادل جگہ دے دے جس پر چیف جسٹس نے کہا کہ سی ڈی اے کو متبادل جگہ کیلئے کہہ دیتے ہیں،ہمیں آئے روز اس طرح کے مسائل کا سامنا ہے کلر کہار میں کئی سیمنٹ فیکٹریاں لگانے کی اجازت دے دی گئی، جس کے بعد فیکٹریوں نے اربوں گیلن زیر زمین پانی بے دریغ استعمال کیا۔

ہم آپ کواسلام آباد میں کرکٹ سٹیڈیم کیلئے جگہ لینے میں مدد کریں گے اور نیشنل پارک میں متاثرہ سائٹ کو اس کی اصل شکل میں بحال کرائیں گے۔
چیئرمین پی سی بی نے عدالت کو بتایا کہ پی سی بی کو پارک میں سٹیڈیم تعمیر کرنے میں دلچسپی نہیں ہے ، نیشنل پارک میں کرکٹسٹیڈیم کی تعمیر نہیں ہونی چاہیے، جب چیئرمین پی سی بی بنا توکہاکہ اس سائٹ پرسٹیڈیم تعمیرنہیں ہونا چاہیے،سی ڈی اے کی ذمے داری تھی کہ وہ ہمیں نیشنل پارک میں جگہ ہی نہ دیتے۔

چیف جسٹس نے کہا کہ سپورٹس کی حوصلہ شکنی نہیں ہونی چاہیے بلکہ حوصلہ افزائی کرنی چاہیے ۔ بعدازاں کیس کی سماعت کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے چیئرمین پی سی بی نے کہا کہ اسلام آباد میں سٹیڈیم تعمیر کرنا چاہتے ہیں جبکہ راولپنڈی کا سٹیڈیم بھی ٹھیک کریں گے،ہم کرکٹ کی بحالی کے لیے کوشاں ہیں، ہرضلع میں کرکٹ سٹیڈیم ہوناچاہیے، اسلام آباد میں بھی کرکٹ سٹیڈیمہونا چاہیے کیونکہ یہاں بھی ضرورت ہے۔

نہوں نے کہا پی سی بی نے سوچا کہ اسلام آباد میں کرکٹ سٹیڈیم تعمیر کریں لیکن عدالت میں درخواست دائرکردی گئی، ہم یہ نہیں چاہتے کہ ماحولیات پراثر پڑے، ہم عدالت اور انوائرمینٹل ایجنسی کے ساتھ ہیں اور ہمیں کہیں اورزمین مل گئی تو4،3سال میںسٹیڈیم بن جائے گا۔
خیال رہے کہ چیئرمین پی سی بی نجم سیٹھی شکر پڑیاں میں کرکٹ سٹیڈیم کی تعمیر سے متعلق کیس کی سماعت کے سلسلے میں سپریم کورٹ میں پیش ہوئے تھے۔

Facebook Comments
Share Button