تازہ ترین

Marquee xml rss feed

سابق وزیر اعلیٰ پنجاب چوہدری پرویز الہٰی نے انتخابات کے حوالے سے بڑا اعلان کر دیا سابق وزیر اعلیٰ پنجاب چوہدری پرویز الہٰی نے این اے 65 سے الیکشن لڑنے کا اعلان کردیا-وزیراعظم شاہدخاقان عباسی کا جمرودخیبرایجنسی کامختصردورہ ،گرڈ سٹیشن کاافتتاح کیا-سبیکا شیخ پاکستان کی بیٹی ہے جس کے بچھڑے پر ہر آنکھ غم پر نم ہے ، حلیم عادل شیخ رہنماء پی ٹی آئی-ایم کیو ایم کے لیڈرز کبھی الگ صوبے کی بات کرتے ہیں اور کبھی معافی مانگ لیتے ہیں،وزیراعلیٰ سندھ سندھ ٹوڑنے کی بات کرنے والے آج خود ٹوٹ گئے ہیں، عوام ایم کیو ایم کا اصل ... مزید-خود ساختہ جلاوطنی اختیار کیے ہوئے بلوچ علیحدگی پسند براہمداغ بگٹی نے نواز شریف کی حمایت کردی-بلوچستان سی پیک کا مرکز ہے ،پاکستان کا چین سے گہرا تعلق ہے جو وقت کے ساتھ ساتھ مزید مستحکم اور مضبوط ہورہا ہے، میر عبدالقدوس بزنجو سی پیک کی تکمیل ہمارا مقصد ہے جس سے پورے ... مزید-اورنج لائن پیکیج ٹو پر بھی میٹرو ٹرین آزمائشی طور پر کامیابی سے چلا دی گئی ‘خواجہ احمد حسان تعمیر و ترقی کے سفر اور عام شہریوں کو عزت دینے کی کوششوں میں کسی کو رکاوٹ ... مزید-شہبازشریف کی ورکنگ بائونڈری پر بھارتی فوج کی بلااشتعال فائرنگ کی شدید مذمت ،حوالدار شاہد ،شہری محمد اسلم کی شہادت پر اظہار افسوس بھارت کسی غلط فہمی میں نہ رہے،پوری ... مزید-قائم مقام صدر صادق سنجرانی نے سینیٹ کا اجلاس (کل) سہ پہر تین بجے طلب کرلیا-الیکشن کمیشن نے عام انتخابات کیلئے پولنگ سکیم کا مسودہ ویب سائٹ پر جاری کردیا

GB News

گلگت، نابیناد افراد کی کفن پوشن احتجاجی مظاہرے کی دھمکی

Share Button

گلگت بلتستان کے نابینا افراد کی تنظیم نے مطالبات منظور نہ ہونے کی صورت میں کفن پوش احتجاج کی دھمکی دیدی ۔ گزشتہ دس مہینوں سے معذور اور نابینا افراد کو در در کے ٹھوکریں کھانے پر مجبور کیا جارہا ہے اگر جلد از جلد ہمارے مطالبات کو حل کرتے ہوئے 2فیصد معذوروں کے کوٹے پر عملدرآمد نہیں کرایا گیا تو کفن پوش دھرنا دینگے ۔ وزیراعلیٰ حافظ حفیظ الرحمن اپنے ہاتھوں سے ہماری لاشیں اٹھائیگا اس کے علاوہ ہمارے پاس کوئی چارہ نہیں رہا ہے ۔ گلگت میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے نابینا افراد کی تنظیم کے رہنمائوں مصطفیٰ کمال ، فرحان بیگ اور خوش احمد نے کہا کہ گزشتہ سال اگست کے مہینے میں صوبائی حکومت کے ساتھ احتجاجی مظاہرے کے نتیجے مذاکرات ہوئے تھے جس پر وزیراعلیٰ گلگت بلتستان نے نابینا افراد کے مسائل کے حل کے لئے صوبائی وزیر قانون اورنگزیب ایڈوکیٹ کی سربراہی میں کمیٹی قائم کردی تھی ۔ مگر اورنگزیب ایڈوکیٹ اور کمیٹی نے نابینا افراد کے مسائل حل کرنے کی بجائے نابینا افراد کے سابقہ صدر ارشاد کاظمی کو زاتی مفادات دیکر ہماری تحریک سے جدا کردیا اس کے باوجود ہمیں اورنگزیب ایڈوکیٹ کی سربراہی میں قائم کمیٹی سے توقعات وابستہ تھی لیکن بعد میں ہمیں مکمل مایوس کردیا گیا ۔ مذکورہ کمیٹی نے دس ماہ کے دورانیہ میں ایک بار بھی ہمارے ساتھ ملاقات نہیں کی اور نہ ہی کوئی اجلاس طلب کیا ہے ۔ ہمارا بنیادی مسئلہ اور مطالبہ نابینا افراد اور معذور افراد کو 2فیصد کوٹے کے مطابق میرٹ پر نوکری دینے کا ہے مگر آج تک کسی بھی محکمے میں دو فیصد کوٹے پر عملدرآمد نہیں ہوا ہے انہوں نے کہا کہ وزیراعلیٰ گلگت بلتستان کے پاس مطالبات لیکر گئے تو انہوں نے فنڈز کی کمی کا رونا رویا جبکہ مسلم لیگ ن کی حکومت پنجاب نے 15سو سے زائد نابینا اور معذور افراد کو روزگار فراہم کیا ہے ۔ صوبائی حکومت کے ان پالیسیوں کی وجہ سے معذور اور نابینا افرادمیں مایوسی اور تشویش پھیل رہی ہے ہمارے پاس اور کوئی راستہ نہیں بچا ہے ہم اعلیٰ تعلیم حاصل کرنے کے باوجود ڈگریاں لیکر دربدر ٹھوکریں کھارہے ہیں اب آخری راستہ کفن پوش دھرنے کا ہے جس میں یا ہمیں میرٹ اور قانون کے مطابق روزگار فراہم کردیا جائیگا یا پھر وزیراعلیٰ گلگت بلتستان حافظ حفیظ الرحمن ہماری لاشوں کو اپنے ہاتھوں سے اٹھائیگا۔

Facebook Comments
Share Button