تازہ ترین

Marquee xml rss feed

پی ٹی آئی کے رکن پنجاب اسمبلی مظہر عباس انتقال کر گئے مظرہ عباس راں کو گذشتہ روز صحت کی خرابی پر پنجاب اسمبلی سے اپستال منتقل کیا گیا تھا-حکومت پاکستان کا رواں برس حج پر 40 ہزار روپے سبسڈی دینے پر غور سبسڈی کی منظوری کے بعد فی کس حج اخراجات 4 لاکھ 20 ہزار روپے ہو جائیں گے-خاتون کو شادی کی تقریب میں اپنے کزن نذیر احمد کو کھانے کی پلیٹ دینا مہنگا پڑ گیا شکی شوہر نے بیوی پر کاروکاری کا الزام دیا، بھائیوں کے ساتھ مل کر خاتون کو قتل کرنے کی کوشش ... مزید-اپوزیشن لیڈر پنجاب اسمبلی حمزہ شہباز کو بیرون ملک جانے کی اجازت مل گئی حمزہ شہباز نے نام بلیک لسٹ میں ڈالنے کا اقدام لاہور ہائیکورٹ میں چیلنج کیا تھا-امریکی گلوکار ایکون بھی پاکستان میں ڈیمز کی تعمیر کی حمایت میں سامنے آ گئے پاکستانی مہمند فنڈ میں بڑھ چڑھ کر حصہ لیں۔ ایکون نے اپنے ویڈیو پیغام میں دنیا بھر کے پاکستانیوں ... مزید-سندھ سے پیپلز پارٹی کا صفایا ہونے والا ہے ، فاطمہ بھٹو کو گورنر لگایا جائے گا پیپلزپارٹی سے متعلق سینئیر صحافی چوہدری غلام حسین نے بڑی خبر دے دی-وزیراعظم نے ندیم افضل چن کو اپنا ترجمان مقرر کرنے سے پہلے کیا ہدایت کی؟ وزیراعظم عمران خان نے مجھے ہدایت کی ہے کہ لہجے میں عاجزی و انکساری لاؤ متکبرانہ رویہ نہیں ہونا ... مزید-خان صاحب آپ سے ایک بات کرنی ہے میرا بچہ بیمار ہے لیکن اس کے لیے یہاں بیڈ موجود نہیں ہے۔ وزیراعظم عمران خان نے بے نظیر بھٹو شہید اسپتال انتظامیہ کو فوراََ روتے ہوئے باپ ... مزید-سپریم کورٹ آف پاکستان نے اٹھارہویں ترمیم سے متعلق محفوظ شدہ فیصلہ سنا دیا سپریم کورٹ نے اٹھارہویں ترمیم سے متعلق سندھ حکومت کی درخواست مسترد کر دی-پاکستان تحریک انصاف کی حکومت کے لیے خطرے کی گھنٹی بج گئی اتحادی اختر مینگل کا اپوزیشن کے اجلاس میں جا کر بیٹھنا موجودہ حکومت کے لیے سیاسی خطرہ ہے۔ عامر متین

GB News

نواز شریف اصولوں کی خاطر جیل جانے کو تیار ہیں، وزیراعظم

Share Button

اسلام آباد: وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے کہا ہے کہ سابق وزیراعظم نواز شریف اصولوں کی خاطر جیل جانے کو تیار ہیں، قومی احتساب بیورو (نیب) عدالت سے انہیں انصاف ملنے کی کم از کم مجھے کوئی توقع نہیں۔

جیو نیوز کے پروگرام ’نیا پاکستان‘ میں گفتگو کرتے ہوئےانہوں نے کہا کہ نیب کا ادارہ ایک آمر نے سیاستدانوں کو دبانے کے لیے بنایا تھا، ہماری کوشش تھی کہ اس کو اتفاق رائے سے ختم کردیا جائے۔

 انہوں نے کہا کہ ڈائیلاگ میں غور کیا جائے کہ نیب جو کر رہا ہے وہ ملک کے مفاد میں ہے یا نہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ اس وقت نیب کی وجہ سے جو حالات پیدا ہوئے ان سے ملک کو 90 فیصد نقصان ہورہا ہے۔

نگراں وزیراعظم کے معاملے پر شاہد خاقان عباسی کا کہنا تھا کہ قائد حزب اختلاف خورشید شاہ کے ساتھ اتفاق نہ ہوا تو معاملہ کمیٹی کو بھیجیں گے۔

انہوں نے کہا کہ بدقسمتی سے اب تک خورشید شاہ کے ساتھ معاملے پر اتفاق نہیں ہوسکتا، امید ہے کل اتفاق کرلیا جائے گا۔

انہوں نے کہا کہ بدقسمتی سے اب تک خورشید شاہ کے ساتھ معاملے پر اتفاق نہیں ہوسکتا، امید ہے کل اتفاق کرلیا جائے گا۔

ان کا کہنا تھا کہ پیپلز پارٹی کا اصرار ہے کہ نگراں وزیراعظم کیلئے ان کے نام پر اتفاق ہو جبکہ ہمارا اصرار ہے کہ معاملے پر ہمارے دیے گئے نام پر اتفاق ہو۔

وزیراعظم نے کہا کہ ہر حلقے میں مسلم لیگ ن کے 3 سے 4 مضبوط امیدوار ہیں، پارٹی چھوڑنے والے 4 سال 11 مہینے ساتھ رہے، بہتر ہےجن پر اعتماد نہ کرسکیں تو وہ پارٹی چھوڑ دیں۔

انہوں نے کہا کہ مسلم لیگ ن کا بیانیہ ووٹ کو عزت دو اور کارکردگی والا ہے۔

انہوں نے کہا کہ نوازشریف کے بیان سے پیدا ہونے والی صورتحال ختم کرنے کیلئے قومی سلامتی کمیٹی کا اجلاس طلب کرنا ضروری تھا۔

شاہد خاقان عباسی کے مطابق آنے والی حکومت کو بھی مشکلات کا سامنا ہوگا تاہم آج جو حالات ہیں اس میں ملک چلانا نا ممکن ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ جس ملک میں قیادت فیصلہ کرنا چھوڑ دے وہ ملک کیسے ترقی کرے گا؟ موجودہ صورتحال میں بیوروکریسی کوئی سمری پیش کرنے کو تیار نہیں۔

وزیراعظم نے کہا کہ تمام ممالک معیشت بہتر بنانےکیلئے دوسرے ملکوں سے ادھار لیتے ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ ایمنسٹی اسکیم میں لوگوںٕ کو ٹیکس نیٹ میں آنے کا موقع دیا گیا۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ ٹیکس ریٹ آدھے کردئے گئے ہیں، جو لوگ کاروبار کررہے ہیں ان پر لازم ہے کہ ٹیکس اداکریں۔

Facebook Comments
Share Button