تازہ ترین

Marquee xml rss feed

شیریں مزاری نے ایران میں سیاہ برقع کیوں پہنا؟ ایران میں خواتین کا سر کو ڈھانپ کر رکھنا سرکاری طور پر لازمی ہے، اس قانون کا اطلاق زوار، سیاح مسافر خواتین، غیر ملکی وفود ... مزید-وفاقی وزیر برائے تعلیم کا پاکستان نیوی کیڈٹ کالج اورماڑہ اور پی این ایس درمان جاہ کا دورہ-پاکستانی لڑکیوں سے کئی ممالک میں جس فروشی کروائے جانے کا انکشاف لڑکیوں کو نوکری کا لالچ دیکر مشرق وسطیٰ لے جا کر ان سے جسم فروشی کرائی جاتی ہے، اہل خانہ کی جانب سے دوبارہ ... مزید-جدید بسیں اب پاکستان میں ہی تیار کی جائیں گی، معاہدہ طے پا گیا چینی کمپنی پاکستان میں لگژری بسوں اور ٹرکوں کا پلانٹ تعمیر کرے گی، 5 ہزار نوکریوں کے مواقع پیدا ہوں گے-وفاقی وزارتِ مذہبی امور نے ملک میں ایک ساتھ رمضان کے آغاز کے لیے صوبوں سے قانونی حمایت مانگ لی ملک بھر میں ایک ہی دن رمضان کے آغاز کے لیے وزارتِ مذہبی امور نے صوبائی اسمبلیوں ... مزید-جہانگیر ترین یا شاہ محمود قریشی، کس کے گروپ کا حصہ ہیں؟ وزیراعلی پنجاب نے بتا دیا میں صرف وزیراعظم عمران خان کی ٹیم کا حصہ ہوں، کسی گروپنگ سے کوئی تعلق نہیں: عثمان بزدار-اسلام آباد میں طوفانی بارش نے تباہی مچا دی جڑواں شہروں راولپنڈی، اسلام آباد میں جمعرات کی شب ہونے والی طوفانی بارش کے باعث درخت جڑوں سے اکھڑ گئے، متعدد گاڑیوں، میٹرو ... مزید-گورنر پنجاب چوہدری سرور کی جانب سے اراکین اسمبلی،وزراء اور راہنماؤں کے لیے دیے جانے والے اعشائیے میں جہانگیرترین کو مدعونہ کیا گیا 185میں سے صرف 125اراکین اسمبلی شریک ہوئے،پرویز ... مزید-بھارت کی جوہری ہتھیاروں میں جدیدیت اور اضافے سے خطے کا استحکام کو خطرات لاحق ہیں،ڈاکٹر شیریں مزاری جنوبی ایشیاء میں ہتھیاروں کی دوڑ سے بچنے کیلئے پاکستان کی جانب سے ... مزید-وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا نے ضلع کرم میں میڈیکل کالج کے قیام اور ڈسٹرکٹ ہیڈکوارٹر ہسپتال کی اپ گریڈیشن کا اعلان کردیا ضلع کرم میں صحت اور تعلیم کے اداروں کو ترجیحی بنیادوں ... مزید

GB News

فلم انڈسٹری کی آڑ میں جسم فروشی کا نیٹ ورک بھی چل رہا ہے‘بھارتی اداکارہ کا انکشاف

Share Button

ممبئی:بھارتی فلم انڈسٹری میں نئی آنے والی لڑکیوں کے جنسی استحصال کے بارے میں کچھ عرصہ قبل کچھ انکشافات سامنے آئے تو لوگوں نے ملے جلے ردعمل کا اظہار کیا۔ کوئی اسے سچ قرار دے رہا تھاتو کوئی محض افواہیں کہہ رہا تھا، لیکن کسے معلوم تھا کہ اصل صورتحال تو کہیں زیادہ بھیانک اور شرمناک ہے۔

اب پتہ چل رہا ہے کہ نہ صرف ادکاراؤں کو استحصال کا سامنا رہتا ہے بلکہ فلم انڈسٹری کی آڑ میں جسم فروشی کا بین الاقوامی نیٹورک بھی چل رہا ہے۔ تازہ ترین انکشافات تامل فلم انڈسٹری کی مشہور اداکارہ ہنی روز سامنے لائی ہیں جن کا کہنا ہے کہ ادکاراؤں کا جنسی استحصال فلم انڈسٹری کا ایک ایسا تاریک راز ہے جسے سب جاننے کے باوجود اس کی پردہ پوشی کرتے ہیں۔ ان کے اس بیان سے چند روز پہلے ہی تامل ادکاراؤں کو امریکہ لے جا کر ان سے جسم فروشی کروانے کا ایک تہلکہ خیز سکینڈل سامنے آ چکا ہے۔

امریکہ میں ایک بھارتی نژادد جوڑے کو بھی گرفتار کیا گیا ہے جو بھارتی ادکاراؤں کو بیرون ملک لے جا کر ان سے جسم فروشیکروانے میں ملوث ہے۔ ایک رپورٹ میں اداکارہ ہنی روز کہتی ہیں کہ یہ بات سچ ہے کہ فلم انڈسٹری میں یہ سب کچھ ہو رہا ہے۔ جب تک کہ آپ بہت بڑی سٹار نہیں ہیں آپ کو ان حالات کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔

میں نے بھی اپنے ابتدائی دنوں میں ایسے بہت سے واقعات کا اپنی آنکھوں سے مشاہدہ کیا ہے۔ یہ چیز فلم انڈسٹری سے ختم نہیں ہوگی۔ ہمیں خود سوچنا ہوگا کہ ہمیں کیا فیصلے کرتے ہیں اور ان کے ہم پر کیا اثرات مرتب ہوتے ہیں۔ آپ صرف اسی وقت تک محفوظ ہیں جب تک آپ کسی کی جسمانی لذت کا سامان نہیں بنتی ہیں۔

اسی وجہ سے میرے والدین ہمیشہ میرے ساتھ ہوتے تھے اور وہ سیٹ پر بھی میرے قریب موجود رہتے تھے۔واضح رہے کہ ہنی روز سے پہلے تامل فلم انڈسٹری کی اداکارہ سنجنا گلرانی اور سری ریڈی بھی اسی طرح کے انکشافات کر چکی ہیں ۔

سری ریڈی نے بتایا تھا کہ ادکاراؤں کو ان کی مقبولیت کے لحاظ سے رقم دے کر ان سے جنسی دھندہ کروایا جاتا ہے۔ ان ادکاراؤں کو 1000 ڈالر (تقریباً سوا لاکھ پاکستانی روپے) سے لے کر 10000 ڈالر (تقریباً ساڑھے بارہ لاکھ پاکستانی روپے) تک کی پیشکش کی جاتی ہے اور بہت سی اداکارائیں ہیں جو اس پیشکش کو قبول کرتی ہیں اور بیرون ملک جا کر جسم فروشی کرتی ہیں۔

Facebook Comments
Share Button