GB News

دیامر،آرمی پبلک سکول سمیت 11گرلز سکولوں کو شرپسندوں نے تباہ کردیا

Share Button
 چلاس شہر میں واقع گرلز سکول رونئی اور گرلز سکول تکیہ میں دھماکے کئے گئے۔تحصیل چلاس کے علاقے ہوڈر اور تھور میں واقع گرلز سکول میں آگ لگا دی گئی ۔ضلع دیامر کے تحصیل داریل میں واقع ایک سکول سمیت گیال گاو ں میں واقع گرلز سکول ،تبوڑ میں واقع دو گرلز سکولوں ، اور کھنبری میں واقع گرلز سکول کو بھی آگ لگا دی گئی ہے۔دیامر کی تحصیل تانگیر میں جنگلوٹ میں واقع ایک سکول سمیت گلی بالا اور گلی پائین میں واقع ایک ایک گرلز سکول کو بھی آگ لگا دی گئی ہے ۔مجموعی طور پر بارہ گرلز سکولوں کو نشانہ بنایا گیا ہے۔پولیس نے علاقے میں سرچ آپریشن کا آغاز کیا ہے۔صورتحال کاجائزہ لینے کیلئے جبکہ فورس کمانڈر کی سربراہی میں ہنگامی اجلاس طلب کرلیاگیا ہے ۔ترجمان دیامر انتظامیہ کے مطابق شرپسندوں نے ضلع دیامر کے بعض زیر تعمیر اور تکمیل کے قریب سکولوں کو نشانہ بنایا اور آگ لگاکر نقصان پہنچانے کی کوشش کی ،مقامی انتظامیہ اور پولیس کی کارروائی کی کے بعد شرپسندعناصر موقع سے فرار ہوگئے ، اس ضمع میں ہیڈ کوارٹر چلاس میں مقامی انتظامیہ ،پولیس ،قانون نافذ کرنے والے ادارے اور محکمہ تعلیم کے افسران کا ہنگامی اجلاس طلب کی گیا جس می ںسکولوں کی فول پروف سکیورٹی کو یقینی بنانے کے اقدامات کا جائزہ لیاگیا اور کسی بھی ایسی کارروائی کی صورت میں شرپسند عناصر کیخلاف بلاتفریق سخت سے سخت کارروائی کرنے کا فیصلہ کیاگیا تاکہ امن و امان کی صورتحال اور سکولوں کی حفاظت کو یقینی بناکر تعلیمی ماحول کو محفوظ اور یقینی بنایا جاسکے، ترجمان کے مطابق پولیس اور دیگر قانون نافذ کرنے والے ادارے کارروائی میں مصروف ہیں مختلف چھاپہ مار ٹیمیں تشکیل دے کر علاقے میں روانہ کردی گئی ہے ،صوبائی ہیڈکوارٹر گلگت میں حالات کا مسلسل جائزہ لینے کے لیے محکمہ داخلہ گلگت نے تمام قانون نافذ کرنےوالے اداروں کا اجلاس بلایا ہے جوکہ جامع حکمت عملی بنانے میں مصروف ہیں، ترجمان کے مطابق صورتحال کا جائزہ لینے کیلئے فورس کمانڈر کی سربراہی میںہنگامی اجلاس بھی طلب کیاگیا ہے ۔
Facebook Comments
Share Button