تازہ ترین

Marquee xml rss feed

جہانگیر ترین نے تحریک انصاف کیلئے ایک اور مشکل ترین کام کر دکھایا بلوچستان عوامی پارٹی کے تحفظات دور کرکے قومی اسمبلی میں اسپیکر، ڈپٹی اسپیکر اور وزیراعظم کے امیدوار ... مزید-وطن عزیز کے استحکام اور بقاء کی خاطر اپنے ذاتی مفادات کو قربان کرنا ہو گا، شیخ آفتاب احمد-حکومت سازی، عمران خان کی زیر صدارت اہم امور پر مشاورت-نامزد گورنر سندھ عمران اسماعیل کو مزارِ قائد میں داخلے سے روکنے کی شدید الفاظ میں مذمت پی پی سے بلاول ہائوس کی حفاظتی دیوار گرانے کی بات کرنے کا بیان دیا تھا، بلاول ہائوس ... مزید-عمران اسماعیل سے گورنرشپ کاعہدہ ہضم نہیں ہورہااگر انہوں نے بدزبانی بند نہیں کی تواحتجاج کریں گے، نثار احمد کھوڑو-انصاف اور مساوات کے رہنما اُصولوں پر گامزن ہوکر ہی پاکستان کو دنیا کا ماڈل بنایا جاسکتا ہے ،سربراہ پاکستان سنی تحریک موجودہ نئی حکومت سے اُمید ہے کہ وہ ملک وقوم کی ترقی ... مزید-صوبائی حکومت انفرا اسٹرکچر، صحت و تعلیم پر خصوصی توجہ دے گی، مراد علی شاہ-پاکستان کی بنیادیں استوار کرنے کیلئے برصغیر کے مسلمانوں نے لاتعداد اور بے مثال قربانیاں دی ہیں، ملک خرم شہزاد-نومنتخب ممبر قومی اسمبلی کو شہری پر تشدد کرنا مہنگا پڑ گیا تحریک انصاف نے رکن سندھ اسمبلی عمران شاہ کو شوکاز نوٹس جاری کردی-لوڈشیڈنگ کے دعوے دھرے رہ گئے ․ پارلیمنٹ لاجز میں بجلی کی طویل بندش ، 282 کے قریب ارکان اسمبلی کو شدید مشکلات کا سامنا ، آئیسکو معقول وجہ بتانے سے قاصر رہا

GB News

کہیں بھی حکومت نام کی چیز نظر نہیں آرہی،امجد حسین ایڈووکیٹ

Share Button

گلگت(ثاقب عمر سے)پاکستان پیپلز پارٹی گلگت بلتستان کے صدر امجد حسین ایڈووکیٹ نے حفیظ الرحمن سے سوال کرتے ہوئے کہا ہے کہ جن دہشت گردوں نے دیامر میں سکول جلائے وہ پہلے بھی سکولوں کی توڑ پھوڑ سمیت جلانے میں ملوث تھے ان افراد کوفورتھ شیڈول سے باہر کیوں رکھاگیا ہے آخر نیشنل ایکشن پلان کس کے خلا ف بنا ہے صرف اپنے مخالفین کے خلاف ایکشن پلان استعمال کیا جارہا ہے اور سیاسی انتقام کے طورپرفورتھ شیڈول استعما ل کیا جارہا ہے انہوںنے کے پی این سے خصوصی گفتگوکرتے ہوئے کہاکہ جب تک حفیظ الرحمن ریکوزیشن نہ کرے فوج اور ریاستی ادارے کارروائی نہیں کرسکتے ہیں اب تک حفیظ الرحمن خاموش اس لئے ہیں کہ اس کا ووٹ بنک خراب ہوتا ہے انہوںنے کہا کہ سکولوں کو جلانے سے بدامنی کا ماحول پیدا ہوا ہے اس کی ذمہ داری حفیظ الرحمن پر عائد ہوتی ہے اور کہیں بھی حکومت نام کی چیز نظر نہیں آرہی ہے ۔ انہوںنے کہا کہ جو لوگ پہلے سے مطلوب تھے ان لوگوں کو حفیظ الرحمن نے فورتھ شیڈول سے باہر رکھا اور اپنے مخالفین کے خلاف سیاسی انتقام لے کر سیاسی کارکنوں کو فورتھ شیڈول میں ڈالا اس سے یہ بات واضح ہوتی ہے کہ دہشت گردوںکو حکومت تحفظ دے رہی ہے ہمیں خدشہ ہے کہ حکومت کے اس رویے سے دیگر اضلاع میں بھی اس قسم کے واقعات رونما نہ ہوں کیونکہ اس سے قبل ضلع غذر میں سکولوں کو جلانے اور توڑنے کے واقعات سامنے آئے ہیں انہوںنے کہا کہ دیامر میں سکول جلانے سے 20دن قبل وزارت داخلہ نے بتایا بھی تھا کہ گلگت بلتستان میں دہشتگردی ہوسکتی ہے لیکن صوبائی حکومت نے ہاتھ پر ہاتھ رکھ کر کوئی بھی ایکشن نہیں لیاگیا جس کی وجہ سے آج سکولوں کے جلانے کا واقعہ رونما ہوا ۔انہوںنے کہا کہ حفیظ الرحمن کا سرینڈر کرنا اپنے ووٹ بنک کو بچانا ہے اورالٹا دہشت گردی کے واقعے کو ریاستی اداروں کے سر پر ڈال کر جان چھڑانے کی کوشش کی آئندہ کوئی اس قسم کا واقعہ ہوا تو حفیظ الرحمن ذمہ دار ہوگا۔

Facebook Comments
Share Button