تازہ ترین

Marquee xml rss feed

شیریں مزاری نے ایران میں سیاہ برقع کیوں پہنا؟ ایران میں خواتین کا سر کو ڈھانپ کر رکھنا سرکاری طور پر لازمی ہے، اس قانون کا اطلاق زوار، سیاح مسافر خواتین، غیر ملکی وفود ... مزید-وفاقی وزیر برائے تعلیم کا پاکستان نیوی کیڈٹ کالج اورماڑہ اور پی این ایس درمان جاہ کا دورہ-پاکستانی لڑکیوں سے کئی ممالک میں جس فروشی کروائے جانے کا انکشاف لڑکیوں کو نوکری کا لالچ دیکر مشرق وسطیٰ لے جا کر ان سے جسم فروشی کرائی جاتی ہے، اہل خانہ کی جانب سے دوبارہ ... مزید-جدید بسیں اب پاکستان میں ہی تیار کی جائیں گی، معاہدہ طے پا گیا چینی کمپنی پاکستان میں لگژری بسوں اور ٹرکوں کا پلانٹ تعمیر کرے گی، 5 ہزار نوکریوں کے مواقع پیدا ہوں گے-وفاقی وزارتِ مذہبی امور نے ملک میں ایک ساتھ رمضان کے آغاز کے لیے صوبوں سے قانونی حمایت مانگ لی ملک بھر میں ایک ہی دن رمضان کے آغاز کے لیے وزارتِ مذہبی امور نے صوبائی اسمبلیوں ... مزید-جہانگیر ترین یا شاہ محمود قریشی، کس کے گروپ کا حصہ ہیں؟ وزیراعلی پنجاب نے بتا دیا میں صرف وزیراعظم عمران خان کی ٹیم کا حصہ ہوں، کسی گروپنگ سے کوئی تعلق نہیں: عثمان بزدار-اسلام آباد میں طوفانی بارش نے تباہی مچا دی جڑواں شہروں راولپنڈی، اسلام آباد میں جمعرات کی شب ہونے والی طوفانی بارش کے باعث درخت جڑوں سے اکھڑ گئے، متعدد گاڑیوں، میٹرو ... مزید-گورنر پنجاب چوہدری سرور کی جانب سے اراکین اسمبلی،وزراء اور راہنماؤں کے لیے دیے جانے والے اعشائیے میں جہانگیرترین کو مدعونہ کیا گیا 185میں سے صرف 125اراکین اسمبلی شریک ہوئے،پرویز ... مزید-بھارت کی جوہری ہتھیاروں میں جدیدیت اور اضافے سے خطے کا استحکام کو خطرات لاحق ہیں،ڈاکٹر شیریں مزاری جنوبی ایشیاء میں ہتھیاروں کی دوڑ سے بچنے کیلئے پاکستان کی جانب سے ... مزید-وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا نے ضلع کرم میں میڈیکل کالج کے قیام اور ڈسٹرکٹ ہیڈکوارٹر ہسپتال کی اپ گریڈیشن کا اعلان کردیا ضلع کرم میں صحت اور تعلیم کے اداروں کو ترجیحی بنیادوں ... مزید

GB News

گلگت بلتستان کی معدنیات پر گلگت بلتستان کے عوام کا حق ہے، عمائدین ناصر آباد

Share Button

گلگت( خبر نگار خصوصی) ہنزہ ناصر آباد کے عمائدین نے غیر مقامی افراد کو معدنیات کا لیز دینے کے خلاف پریس کلب گلگت تک احتجاجی ریلی نکالی ، احتجاجی ریلی میں سینکڑوں کی تعداد میں مظاہرین نے شرکت کی جن کے ہاتھوں میں پلے کارڈز تھے ، احتجاجی ریلی پریس کلب گلگت کے سامنے آکر دھرنے میں تبدیل ہوگئی ۔ جس کی وجہ سے سڑک دونوں اطراف سے ٹریفک کے لئے معطل ہوگئی ،احتجاجی ریلی سے خطاب کرتے ہوئے صدر ماربل سوسائیٹی غلام عباس، جنرل سیکریٹری نسیم اللہ ، ڈائریکٹر اکبر حسین ، رہنما پیپلزپارٹی ضلع ہنزہ ظہورکریم ، رہنما تحریک انصاف فاروق احمد، عوامی ایکشن کمیٹی کے وائس چیئرمین فدا حسین ، جنرل سیکریٹری عوامی ایکشن کمیٹی یعصب الدین و دیگر نے کہا ہے کہ گلگت بلتستان کی معدنیات پر گلگت بلتستان کے عوام کا حق ہے جن کی منظوری اور ررضامندی کے بغیر کسی قسم کا معاہدہ نہیں ہوسکتا ہے سیکریٹری منرلز جان بوجھ کر غیر مقامی افراد کو نوازرہے ہیں تاکہ مقامی لوگوں میں پسماندگی پھیل سکے ، سیکریٹری منرلز بددیانت اور اپنے عہدے سے ناانصافی کررہے ہیں گلگت بلتستان کے عوام ایسی کسی بھی قسم کے فیصلے کو قبول نہیں کریںگے اور اس فیصلے کے خلاف ہر فورم پر جائیںگے اور مزاحمت کریںگے ، ناصرآباد سے نکلنے والے معدنیات پر عوام ناصر آباد کا پہلا حق ہے جسے منظور اور قبول کرنے کی ضرورت ہے ، مبینہ طور پر ملی بھگت کے ذریعے غیر مقامی افراد کو لیز دینے کے فیصلے مقامی لوگوں کا معاشی قتل کے مترادف ہے ۔ احتجاجی ریلی میں عوامی ایکشن کمیٹی کے رہنمائوں نے شرکت کرکے مظاہرین سے اظہاریکجہتی کی اور کہا کہ مقامی افراد کو نظر انداز کرکے غیر مقامی افراد کو نوازنے کی پالیسی کسی صورت قبول نہیں کریںگے ناصر آباد ہنزہ کے عوام کے ساتھ ہونے والے ظلم پر ان کے ساتھ کھڑے ہیں عوامی ایکشن کمیٹی اپنی پوری قوت کے ساتھ عوام کے پشت پر ہے زور زبردستی کرکے فیصلے کرنے والوں سے نمٹنا جانتے ہیں ۔ اس موقع پر متفقہ قرار داد منظور کرکے مطالبہ کیا گیا کہ غیر مقامی ا فراد کے لیز کو منسوخ کرکے مقامی ا فراد کو ترجیح دی جائے ۔ ناصر آباد ماربل مائن کو دھوکہ دہی سے’مہمند دادامنرلزلمیٹڈ’نامی کمپنی کو دی گئی ہے جس کے لیز کو فوری منسوخ کرکے ناصر آبادکی الناصر ملٹی پرپوزکوآپریٹوسوسائیٹی کو دیا جائے ۔ انہوں نے کہاکہ حکومت اور انتظامیہ میں بعض عناصر ماربل منرلز کے لیز کے سلسلے میں روٹے اٹکارہے ہیں ایسے عناصر کے خلاف شدید احتجاج کرتے ہیں اس معاشی بحران میں معدنیات کے کام میں رکاوٹیں اور خلل پیدا کرنا معاشی قتل کے مترادف ہے ۔ماربل منرلز کے مسائل پر قابو پانے کے لئے الناصر ملٹی پرپزکوآپریٹو سوسائیٹی نے اپنی مدد آپ کے تحت ماربل مائن تک ٹرک ایبل روڈ بنایا ہے جس کی لاگت ایک کروڑ سے زائد ہے اور سال 1989سے 2004تک حکومت پاکستان کو اس مد میں ٹیکس بھی دیکر استفادہ کررہے ہیں بدقسمتی سے محکمہ معدنیات کے غیر زمہ دار آفیسران نے اس ایریا کو مہمند دادا منرلز لمیٹڈ نامی کمپنی کو الٹ کرنے کی کوشش کی ہے جس کی دھوکہ دہی کے زریعے نقشوں پر دستخط کے حوالے سے تحریری اعتراف بھی کرچکے ہیں اس کے باوجود 2004 سے اب تک لیز منسوخ نہیں کیا جارہا ہے لہٰذا بذریعہ قرارداد وزیراعظم پاکستان، صدر مملکت ، آرمی چیف ،وزیراعلیٰ گلگت بلتستان،اور گورنر گلگت بلتستان سے مطالبہ کرتے ہیں کہ مہمندداد کے لیز کو فوری طور پر منسوخ کیا جائے مظاہرین نے سیکریٹری منرلز کے استعفیٰ کا بھی مطالبہ کردیا ۔

Facebook Comments
Share Button