تازہ ترین

Marquee xml rss feed

وزیر اعظم عمران خان کی روضہ رسول ﷺ پر حاضری، سعودی حکام کی جانب سے روضہ رسولﷺ کے دروازے خصوصی طور پر کھول دیئے گئے-آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ کی چین کے سنٹرل ملٹری کمیشن کے وائس چیئرمین جنرل یانگ یوشیا سے ملاقات کی، دہشتگردی کے خاتمے، ہتھیاروں و سازوسامان کی ٹیکنالوجی اور ٹریننگ ... مزید-ڈاکٹر بننے کا خواب دیکھنے والی خاتون نے ٹرک چلانا شروع کر دیا ناگرپارکر سے تعلق رکھنے والی خاتون مالی مشکلات کی وجہ سے ڈاکٹر نہیں بن سکی تھی-موسمیاتی تغیرات کے اس دور میں بجلی پیدا کرنے کیلئے ایٹمی توانائی کا استعمال امید افزاء آپشن ہے، ہم پاکستان میں نیوکلیئر ٹیکنالوجی کے پرامن استعمال کے فروغ کیلئے آئی ... مزید-سعودی عرب اور پاکستان کے درمیان دوستانہ اور تاریخی تعلقات قائم ہیں، وزیراعظم عمران خان کا دورہ انتہائی اہمیت کا حامل ہے،سعودی عرب اور پاکستان دنیا میں اسلام کی حقیقی ... مزید-کیا کل نواز شریف اور مریم نواز کی سزا معطل کی جا رہی ہے؟ نیب عدالت کو مطمئن نہیں کر پا رہی اس سے اندازہ ہو رہا ہے کہ معاملات کس طرف جا رہے ہیں،ملزمان کا پلڑہ بھاری نظر آ ... مزید-اسد عمر اور اسحاق ڈار میں کوئی فرق نہیں اسد عمر نے بھی اعدادو شمار کا ہیر پھیر کر کے اسحاق ڈار والے کام کیے-پی ٹی آئی نے جو منشور دیاتھا اور جو اعلانات کیے ، ان پر عملدرآمد حکومت کا امتحان ہے ‘سراج الحق عوام نے انہیں گیس ، بجلی اور پٹرول مہنگا کرنے کے لیے نہیں، سستا کرنے کے ... مزید-اہل بیت کی عظم قربانی درحقیقت پوری امت مسلمہ کے لئے درخشاں مثال ہے‘چوہدری محمد سرور اللہ کی رسی کو مضبوطی سے تھامے رکھنا اور فرقہ واریت کو جڑ سے اکھاڑ پھینکنا وقت کی ... مزید-وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال خان کا وزیراعلیٰ سیکریٹریٹ کے مختلف شعبوں کا معائنہ

GB News

آرمی چیف نے 13دہشت گردوں کو سزائے موت دینے کی توثیق کر دی

Share Button

راولپنڈی (آئی این پی) چیف آف آرمی سٹاف جنرل قمر جاوید باجوہ نے 13دہشت گردوں کو سزائے موت دینے کی توثیق کر دی،7دہشت گردوں کو عمرقید کی سزا سنائی گئی،دہشت گردپاک فوج اور قانون نافذ کرنے والے اداروں پر حملوں، تعلیمی اداروں کی تباہی اور معصوم لوگوں کے قتل میں ملوث تھے۔پیر کو پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ( آئی ایس پی آر)کی جانب سے جاری کردہ اعلامیہ میں کہا گیا کہ آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ نے 13دہشت گردوں کو سزائے موت کی توثیق کر دی ہے،دہشت گرد 202 افراد کے قتل میں ملوث تھے، انہوں نے 151 عام شہریوں اور اور آرمڈ فورسز سمیت قانون نافذ کرنے والے اداروں کے 51اہلکاروں کو قتل کیا جب کہ ان کے حملوں میں 249 سیکیورٹی اہلکار زخمی بھی ہوئے، دہشت گرد پاک فوج اور قانون نافذ کرنے والے اداروں پر حملوں، تعلیمی اداروں کی تباہی اور معصوم لوگوں کے قتل میں بھی ملوث تھے۔دہشت گردوں کے خلاف فوجی عدالتوں میں مقدمات چلائے گئے،دہشت گردوں کے قبضے سے دھماکہ خیز مواد بھی برآمد ہوا تھا۔دہشت گردوں نے جوڈیشل مجسٹریٹ اور ٹرائل کورٹ کے آگے اپنے جرائم کا اعتراف اورانہیں فوجی عدالتوں نے سزائیں سنائیں۔سزائے موت پانے والوں میں منیر رحمان ولد فضل رحمان، محمد بشیر ولد عبدالرشید، حافظ عبداللہ ولد محمد اقبال، بخت اللہ خان ولد اجمل خان، شاہ خان ولد عبدالبادشاہ ، محمد سہیل خان ولد رضا خان،داؤد شاہ ولد میاں گل زادہ ، محمد منیر ولد سید بادشاہ، حبیب اللہ ولد محمد امین، محمد آصف ولد عنایت الرحمان ،گل شاہ ولد غنچہ گل،جلال حسین ولد شیر افضل خان اور علی شیر ولد رحمدال خان شامل ہیں۔

Facebook Comments
Share Button