GB News

پندرہ سو مقامات پر مجالس، صرف پانچ سو اہلکار، سکیورٹی سوالیہ نشان بن گئی

Share Button

پولیس نفری کی کمی کے باعث سکردو شہر اور گردونواح میں فول پروف سکیورٹی سوالیہ نشان بن گئی اس وقت سکردو شہر اور مضافاتی علاقوں میں تقریبا15سو سے زائد مقامات پر بیک وقت مجلس ہوتی ہے لیکن محکمہ پولیس سکردو کے پاس پانچ سو سے زائد نفری موجود نہیں ہے پوری انتظامیہ اور پولیس کے ان تمام دعوؤں کی قلعی گھل گئی کہ سکردو میں محرم الحرام کے دوران سکیورٹی کے فول پروف انتظامات کئے گئے ہیں اورعزاداروں کو بھرپور طریقے سے سکیورٹی فراہم کی جارہی ہے سوال یہ ہے کہ جب انتظامیہ اور پولیس کے پاس سکیورٹی کی مطلوبہ تعداد ہی موجود نہیں ہے تو فول پروف سکیورٹی کیسے فراہم کرے گی ؟کیا ایسا ممکن ہے کہ پانچ سکیورٹی اہلکارو پورے شہر کو سنبھالیں جہاں سکیورٹی اہلکارو کی کمی سے مسائل پیش آرہے ہیں وہیں جلوسوں کی گزرگاہوں پرنصب سی سی ٹی وی کیمروں کے خرا ب ہونے کی شکایات بھی سامنے آرہی ہے پولیس نفری کی کمی اور خفیہ کیمروں کی خرابی سے عزاداروں میں عدم تحفظ کا احساس بڑھتا جارہا ہے ادھر پولیس ذرائع نے دعویٰ کیا ہے کہ سکردو شہر میں جہاں جہاں مجالس عزاء برپا ہو رہی ہیں وہاں بھرپور سکیورٹی فراہم کی جارہی ہے دستیاب وسائل کے اندر رہتے ہوئے عوام کی جان ومال کے تحفظ کیلئے اقدامات کئے جارہے ہیں جی بی سکاوٹس کے دوپلاٹونز کی خدمات بھی حاصل کی جائیں گی ضرورت پڑنے پر فوج بھی طلب کی جائے گی دوسری جانب مختلف ماتمی انجمنوں ، سماجی ، سیاسی تنظیموں نے سکیورٹی کی صورتحال کو غیر تسلی بخش قرار دیتے ہوئے کہاہے کہ سکردو میں سکولوں کے بچوں کو پولیس کی وردی پہنا کر عوام کو سکیورٹی کے نام پر بے وقوف بنایا جارہا ہے عوام سکیورٹی انتظامات سے کسی طور پر بھی مطمئن نہیں ہیں ۔

Facebook Comments
Share Button