تازہ ترین

Marquee xml rss feed

بحرین کے دورے کے دوران پاک بحریہ کے سربراہ ایڈمرل ظفر محمود عباسی نے بحرین ڈیفنس فورسز کے کمانڈران چیف سے ملاقات کی-ساہیوال کے پر درد واقعے نے ننھی زینب کے والد کو بھی غمزدہ کر دیا ننھی زینب کے والد امین انصاری مقتول خلیل کے یتیم بچوں کے ساتھ وقت گزارنے ان کے گھر پہنچ گئے-کنٹرول لائن کے ساتھ جندروٹ سیکٹر میں بھارتی فوج کی شہری آبادی پر بلااشتعال فائرنگ ، ایک خاتون سمیت تین شہری زخمی ہو گئے، آئی ایس پی آر-قومی اسمبلی کے اجلاس کا وقت تبدیل، (کل) صبح 11 بجے کی بجائے شام ساڑھے چار بجے ہوگا-اسلام آباد ، گاڑیوں کی آن لائن رجسٹریشن کا نظام متعارف کرا دیا گیا-ٹیکس فائلرز کیلئے بینکوں سے رقوم نکلوانے پر ود ہولڈنگ ٹیکس مکمل طور پر ختم، 1300 سی سی تک کی گاڑیاں نان فائلر بھی خرید سکے گا ، 1800 سی سی اور اس سے زائد کی گاڑیوں پر ٹیکس ... مزید-نعیم الحق نے شہباز شریف کے پروڈکشن آرڈر ضبط کرنے کی دھمکی دے دی شہباز شریف اور اس کے چمچوں کی اتنی جرات کہ وہ قومی اسمبلی میں وزیر اعظم پر ذاتی حملے کریں۔کیا وہ جیل میں ... مزید-وزیراعظم کا سانحہ ساہیول پر وزراء متضاد بیانات پر سخت برہمی کا اظہار آئندہ بغیر تیاری میڈیا پر بیان بازی نہ کی جائے انسانی زندگیوں کا معاملہ ہے کسی قسم کی معافی کی گنجائش ... مزید-وزیر خزانہ اسد عمر کی طرف سے قومی اسمبلی میں پیش کردہ ضمنی مالیاتی (دوسری ترمیم) بل 2019 کا مکمل متن-5 ارب روپے قرض حسنہ کیلئے مختص کرنا خوش آئند ہے، فنانس بل میں غریب آدمی کو صبر کا پیغام دیا گیا ہے امیر جماعت اسلامی سینیٹر سراج الحق کی پارلیمنٹ ہائوس کے باہر میڈیا ... مزید

GB News

آرڈرکسی بھی صورت منظور نہیں ،کشمیرطرز کاسیٹ اپ دے دیں،کیپٹن(ر)محمدشفیع

Share Button

گلگت(پ ر)گلگت بلتستان اسمبلی کے اپوزیشن لیڈرکیپٹن(ر)محمدشفیع خان نے کہا کہ آرڈرکسی بھی صورت ہمیں منظور نہیں ہے اگر حکومت پاکستان گلگت بلتستان کوصوبہ بنانے کی پوزیشن میں نہیں ہے تو گلگت بلتستان کی متنازعہ حیثیت کوواضح کرکے ہمیں کشمیرطرز کاسیٹ اپ دے دیںاورقومی وبین الاقوامین سطح پرہمیں کشمیرڈائیلاگ میں شامل کیاجائے آرڈرپرآرڈرہمیںکسی صورت قبول نہیں ہے ہمیں حقوق کے حوالے سے مزیدبے وقوف بنانے کی ضرورت نہیںہے ان خیالات کااظہارانہوں نے اپنے ایک اخباری بیان میںکیا ہے۔انہوں نے مزید کہا کہ ہمارے آباواجدادنے گلگت بلتستان کواپنی مددآپ کے تحت آزادکراکراس لئے پاکستان کے ساتھ غیرمشروط الحاق نہیں کیاہے کہ ہمیں سترسالوں تک بنیادی حقوق سے محروم رکھاجائے۔ہم نے خودآزادی حاصل کرکے الحاق کیاتھا تو ہمیں آرڈروں کے ذریعے کس آئین وقانون کے تحت چلایاجارہا ہے۔گلگت بلتستان کے ہرشہری کاسترسالوں سے یہ مطالبہ رہا ہے کہ حکومت پاکستان ہماری آئینی حیثیت واضح کرے لیکن وفاق نے آج تک اس مطالبے کامثبت جواب نہیں دیا۔گلگت بلتستان کواسی طرح مزیدنظرانداز کیاگیا تویہاں کے عوام اس بات پرمجبور ہوں گے اورحکومت پاکستان سے سوال کریں گے کہ وہ اپنی آئینی حیثیت گلگت بلتستان میںواضح کرے۔کس آئین اورقانون کے تحت وفاق کے آئینی ادارے گلگت بلتستان میں واضح کرے۔کس آئین اورکس قانو ن کے تحت وفاق کے آئینی ادارے گلگت بلتستان میں کام کررہے ہیں بہتر ہے کہ ایسے حالات پیداہونے سے قبل وفاق پاکستان گلگت بلتستان کے عوام کوان کے جائزحقوق فراہم کرے۔انہوں نے واضح کہاکہ اب ہمیں حقوق کی جدوجہد سے روکانہیں جاسکتا ہے ابھی نوجوان نسل باشعورہوچکی ہے ہم ان کوکیاجواب دیں ۔انہوں نے کہا کہ مزید کوئی آرڈرنافذ کیاگیا تو اس کے خلاف سخت احتجاج کیاجائے اوراب عوام فیصلہ کریں گے کہ گلگت بلتستان کو کس طرح چلانا ہے۔

Facebook Comments
Share Button