تازہ ترین

Marquee xml rss feed

چونیاں واقعہ:وزیراعلیٰ کا ملزمان کی نشاندہی کرنیوالےکونقد انعام دینےکا اعلان جوبھی ملزمان کی نشاندہی کرے گا اس کو 50 لاکھ روپے انعام دیا جائے گا، معطل افسران کی پوسٹنگ ... مزید-تبدیلی کے نام نہاد دعویداروں نے کینسر کے مریضوں کی دوائیاںبند کردی‘پرویز ملک کینسر کی دوائی نہ ملنے کیوجہ سے مرنیوالے 4 مریضوں کے قتل کا مقدمہ وزیر صحت کیخلاف درج کیا ... مزید-آئی جی پنجاب سے کینیڈین ہائی کمیشن کے تین رکنی وفد کی سنٹرل پولیس آفس میں ملاقات دوران ملاقات منشیات فروشوں کے نیٹ ورک کے خلاف آپریشنز کیلئے انفارمیشن شیئرنگ کو مزید ... مزید-آئی جی سندھ سے چین کے قونصل جنرل کی ملاقات ، سیکیورٹی اقدامات سمیت باہمی دلچسپی کے امورپرتفصیلی تبادلہ خیال-اثاثہ جات کیس، خورشید شاہ کو پولی کلینک ہسپتال سے ڈسچارج کر دیا گیا-مہنگائی کی صورتحال آئندہ دو سال تک ایسی ہی رہے گی، ڈپٹی گور نر اسٹیٹ بینک-وزیراعلی سندھ کا پوری صفائی کا کام دستاویزی طریقے سے کرنے کا حکم ہر ضلع صاف کرکے ڈی ایم سی کے حوالے کرنا ہے ، ڈیم ایم سی کو چاہیے پھر صفائی کو برقرار رکھیں،مراد علی شاہ ... مزید-Careem اور MicroEnsure کے باہمی اشتراک سے انشورنس ایپ متعارف کروا دی گئی کریم اور MicroEnsure کے اشتراک سے کریم ایپ کے تمام صارفین (بشمول کریم کپتان اور مسافر) کے لیے ایسی سہولیات متعارف ... مزید-سوشل میڈیا پر اپنے خاوند کے خلاف شکایت کرنے والی فیشن بلاگر آمنہ عتیق اگلے ہی روز مردہ حالت میں پائی گئی آمنہ عتیق نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ فیس بُک پر اپنے شوہر کے ناروا ... مزید-حکومت اورعوام کو تیل اورگیس کے ذخائرکی بڑی خوشخبرمل گئی گولارچی میں خام تیل اورگیس کے 2 بڑے ذخائردریافت، تیل اورگیس کے ذخائرکی تعداد 8 ہوگئی، علاقے میں تیل اور گیس کے ... مزید

GB News

گائے کے گوبر سے گیس اور بجلی پیدا کی جا سکتی ہے، بسیں بھی چلائے جانے کا امکان موجود

Share Button

گائے کے گوبر سے گیس اور بجلی پیدا کی جا سکتی ہے اور اب نہ صرف اس سے لائٹس، اے سی ، پنکھے اور دودھ نکالنے کی مشینیں چلائی جا رہی ہیں بلکہ بسیں چلانے کا بھی امکان موجود ہے۔

80 کی دہائی میں پاکستان ٹیلی وژن کے ایک ڈرامے کے ڈائیلاگ کو مذاق سمجھا جاتا تھا لیکن اب پاکستان میں گائے تو گائے اسکا فضلہ بھی اہم ہے، گوبر سے گیس اور بجلی پیدا ہورہی ہے۔

کراچی کے علاقے پپری کے ایک فارم میں موجود نظام سے گوبر کی ایک ٹرالی، پانی میں اچھی طرح ملا کر ایک پکے گڑھے میں ڈالی جاتی ہے اور اس گڑھے سے گوبر باہر آجاتا ہے جبکہ پکے گڑھے کے اوپر گیس جمع ہو جاتی ہے، گیس پائپس سے گیس ٹینک میں جاتی ہے اور پھراس گیس سےبھاری جنریٹرز چل جاتے ہیں۔

ایک ٹرالی سے تقریبا 20 گھنٹے 50 کے وی اے کے بھاری جنریٹرز چلتے رہتے ہیں، عقل دنگ رہ جاتی ہے کہ کہاں گائے کا گوبر اور کہاں بجلی۔

بائیو گیس کے ماہر اعجاز حسین کے مطابق اس گیس سے سلفر نکالنے کا آلہ چند ہزار میں دستیاب ہوتا ہے جسے لگایا جائے تو حاصل شدہ گیس سے باآسانی سی این جی بنائی جاسکتی ہے جس سے بسیں بھی چلائی جا سکتی ہیں۔ انہوں نے بتایا کہ بھارت میں یہ تجربہ شروع کیا جا چکا ہے۔

Facebook Comments
Share Button