تازہ ترین

Marquee xml rss feed

شیریں مزاری نے ایران میں سیاہ برقع کیوں پہنا؟ ایران میں خواتین کا سر کو ڈھانپ کر رکھنا سرکاری طور پر لازمی ہے، اس قانون کا اطلاق زوار، سیاح مسافر خواتین، غیر ملکی وفود ... مزید-وفاقی وزیر برائے تعلیم کا پاکستان نیوی کیڈٹ کالج اورماڑہ اور پی این ایس درمان جاہ کا دورہ-پاکستانی لڑکیوں سے کئی ممالک میں جس فروشی کروائے جانے کا انکشاف لڑکیوں کو نوکری کا لالچ دیکر مشرق وسطیٰ لے جا کر ان سے جسم فروشی کرائی جاتی ہے، اہل خانہ کی جانب سے دوبارہ ... مزید-جدید بسیں اب پاکستان میں ہی تیار کی جائیں گی، معاہدہ طے پا گیا چینی کمپنی پاکستان میں لگژری بسوں اور ٹرکوں کا پلانٹ تعمیر کرے گی، 5 ہزار نوکریوں کے مواقع پیدا ہوں گے-وفاقی وزارتِ مذہبی امور نے ملک میں ایک ساتھ رمضان کے آغاز کے لیے صوبوں سے قانونی حمایت مانگ لی ملک بھر میں ایک ہی دن رمضان کے آغاز کے لیے وزارتِ مذہبی امور نے صوبائی اسمبلیوں ... مزید-جہانگیر ترین یا شاہ محمود قریشی، کس کے گروپ کا حصہ ہیں؟ وزیراعلی پنجاب نے بتا دیا میں صرف وزیراعظم عمران خان کی ٹیم کا حصہ ہوں، کسی گروپنگ سے کوئی تعلق نہیں: عثمان بزدار-اسلام آباد میں طوفانی بارش نے تباہی مچا دی جڑواں شہروں راولپنڈی، اسلام آباد میں جمعرات کی شب ہونے والی طوفانی بارش کے باعث درخت جڑوں سے اکھڑ گئے، متعدد گاڑیوں، میٹرو ... مزید-گورنر پنجاب چوہدری سرور کی جانب سے اراکین اسمبلی،وزراء اور راہنماؤں کے لیے دیے جانے والے اعشائیے میں جہانگیرترین کو مدعونہ کیا گیا 185میں سے صرف 125اراکین اسمبلی شریک ہوئے،پرویز ... مزید-بھارت کی جوہری ہتھیاروں میں جدیدیت اور اضافے سے خطے کا استحکام کو خطرات لاحق ہیں،ڈاکٹر شیریں مزاری جنوبی ایشیاء میں ہتھیاروں کی دوڑ سے بچنے کیلئے پاکستان کی جانب سے ... مزید-وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا نے ضلع کرم میں میڈیکل کالج کے قیام اور ڈسٹرکٹ ہیڈکوارٹر ہسپتال کی اپ گریڈیشن کا اعلان کردیا ضلع کرم میں صحت اور تعلیم کے اداروں کو ترجیحی بنیادوں ... مزید

GB News

سیاست کے اونٹ کی کوئی کل سیدھی نہیں

Share Button

تحریک انصاف کی حکومت کے خلاف بظاہر اپوزیشن جماعتوں کا اتحاد قائم ہوگیا ہے لیکن اگر اس اتحاد کا گہرائی میں جا کر تجزیہ کیا جائے تو بظاہر یہ آصف زرداری کا ڈرامہ دکھائی دیتا ہے جو حکومت پر دبائو ڈالنے اور اسے بلیک میل کرنے کے مقاصد کے تابع ہے لیکن درحقیقت مسلم لیگ (ن) کا رویہ قدرے مختلف ہے نواز شریف اور مریم نواز کی معنی خیز خاموشی خاصی طویل ہوچکی ہے جبکہ دوسری طرف صرف آصف زرداری جلسوں سے خطاب کررہے ہیں دوسرے لفظوں میں مسلم لیگ (ن) متحرک سیاست میں پیپلز پارٹی کے ساتھ نہیں ہے بعض مبصرین کی رائے ہے کہ آصف زرداری جو کبھی مولانا فضل الرحمان کی طرف سے اے پی سی طلب کرنے کے معاملے میں لیت و لعل سے کام لیتے تھے منی لانڈرنگ اور جعلی بنک کھاتوں کے سلسلے میں سپریم کورٹ کی قائم کردہ جے آئی ٹی کی سفارشات سامنے آنے کے بعد تیزی سے متحرک ہوئے ہیں اس کا ثبوت مولانا فضل الرحمان کی رہائش گاہ پر ان کی دوبار حاضری ہے جبکہ قومی اسمبلی کے اجلاس کے دوران شہباز شریف سے ملاقات میں انہوں نے مسلم لیگ (ن) اور پیپلز پارٹی کے درمیان اشتراک عمل کی بات کی اور اس تجویز پرشہباز شریف نے مثبت ردعمل کا اظہار کیا ہے شہباز شریف کا لہجہ آصف زرداری سے خاصا مختلف ہے آصف زرداری اپنے جلسوں میں بار بار کہتے ہیں کہ موجودہ حکومت پانچ سال پورے نہیں کرسکے گی اسے گرانے کیلئے کسی کی ضرورت نہیں یہ اپنے بوجھ اور کرتوتوں سے خود ہی گر جائے گی لیکن شہباز شریف حکومت کو وقت دینے کے حق میں ہیں مجموعی طور پر مسلم لیگ (ن) کا رویہ حکومت کے معاملے میں بہت مثبت محسوس ہوتا ہے۔حمزہ شہباز ہائیکورٹ کی اجازت سے دس دنوں کیلئے ملک سے باہر گئے ہیں ان کی روانگی معنی خیز ہے اس سے قبل انہوں نے جیل میں نواز شریف سے ملاقات کی ہے باور کیا جاتا ہے کہ وہ حسن نواز اور حسین نواز سے ملاقات کرکے ان کے قانونی معاملات کودرست کرنے کی کوشش کریں گے اس وقت وہ دونوں اشتہاری ملزم ہیں ان کے معاملات ضمانت کے مرحلے تک کیسے پہنچیں گے اگرچہ یہ ایک خاصا مشکل کام ہے تاہم شریف فیملی اسے حل کرنے کے معاملے میں سنجیدہ دکھائی دیتی ہے اب پیپلز پارٹی کی اہم شخصیات احتساب کی زد میں آنے والی ہیں آصف زرداری اور فریال تالپور کے معاملات میں کوئی ابہام نہیں جے آئی ٹی کی سفارشات کی روشنی میں ان کے خلاف جلد ہی ریفرنس دائر کیا جانے والا ہے۔

Facebook Comments
Share Button