تازہ ترین

Marquee xml rss feed

GB News

مودی کی انتہاپسند پالیسیوں سے جنوبی ایشیا کا امن خطرے میں ہے، علی امین گنڈاپور

Share Button

وفاقی وزیر امور کشمیر و گلگت بلتستان علی امین گنڈاپور نے کہا ہے کہ پاکستان کی امن کی خواہش کو ہماری کمزوری نہ سمجھا جائے،پاکستان کسی قسم کی جارحیت کا منہ توڑ جواب دینے کی صلاحیت رکھتا ہے، مسئلہ کشمیر پر بامقصد مذاکرات کیلئے ہمارے دروازے کھلے ہیں ،ہم خطے میں دیر پا امن کیلئے پر عزم ہیں ،مودی سرکار کی انتہاپسند پالیسیز کی وجہ سے جنوبی ایشیا کا امن خطرے میں ہے،بھارت کے اندر اقلیتیں بھی مودی کی ہندو انتہا پسند پالیسیز کا شکار ہیں، موجودہ حکومت نے مسئلہ کشمیر سے متعلق ایک واضع پالیسی اپنائی ہے،وزیر خارجہ نے بھی اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کے فورم پر مسئلہ کشمیر کو بھرپور طریقے سے اجاگر کیا،آفس آف ہومین رائٹس کمشنر کی رپورٹ نے بھارت کا اصل چہرہ دنیا کے سامنے بے نقاب کیا ہے۔ جمعرات کو روٹری کلب اسلام آباد اور روٹری کلب گلوبل کے زیر اہتمام یوم یکجہتی کشمیر کے حوالے سے اسلام آباد کلب میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے وفاقی وزیر امور کشمیر و گلگت بلتستان علی امین گنڈاپور نے کہا کہ اندرون و بیرون ملک یوم یکجہتی کشمیر بھرپور طریقے سے منایا گیا ،حکومت مسئلہ کشمیر کے حل کیلئے ٹھوس اور موثر اقدامات کر رہی ہے، مسئلہ کشمیر کے حوالے سے دن منانے اور مذمتی بیانات سے آگے بڑھ کر اقدامات کر رہے ہیں،کشمیر پاکستان کی شہ رگ ہے، موجودہ حکومت نے مسئلہ کشمیر سے متعلق ایک واضع پالیسی اپنائی ہے،وزیر اعظم نے بھارت کو مسئلہ کشمیر پر بامقصد مذاکرات کی دعوت دی،وزیر خارجہ نے بھی اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کے فورم پر مسئلہ کشمیر کو بھرپور طریقے سے اجاگر کیا، مسئلہ کشمیر پر برطانوی پارلیمنٹ میں کامیاب کانفرنس ایک بڑی کامیابی ہے ۔انہوں نے کہا کہ پاکستان کے مثبت اقدامات کا مودی کی انتہا پسند حکومت نے ہٹ دھرمی سے جواب دیا،مودی سرکار کی انتہاپسند پالیسیز کی وجہ سے جنوبی ایشیا کا امن خطرے میں ہے،بھارت کے اندر اقلیتیں بھی مودی کی ہندو انتہا پسند پالیسیز کا شکار ہیں،بھارت کے ذی شعور حلقے تسلیم کر رہے ہیں کہ بھارت کو مقبوضہ کشمیر میں شکست ہوچکی ہے،ہم خطے میں دیر پا امن کیلئے پر عزم ہیں ، مسئلہ کشمیر پر بامقصد مذاکرات کیلئے ہمارے دروازے کھلے ہیں ،پاکستان کی امن کی خواہش کو ہماری کمزوری نہ سمجھا جائے،پاکستان کسی قسم کی جارحیت کا منہ توڑ جواب دینے کہ صلاحیت رکھتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ بھارت میں انتخابات کے بعد نئی حکومت سے مسئلہ کشمیر پر با مقصد مذاکرات کی امید کرتے ہیں،بھارت مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی پامالی کا سلسلہ جاری رکھے ہوئے ہے،8لاکھ بھارتی فوج کشمیریوں کا ماورائے عدالت قتل ، خواتین کی عصمت دری اور بدرترین تشدد کا سلسلہ بغیر کسی روک ٹوک کے جاری رکھے ہوئے ہے،8لاکھ بھارتی فوج کشمیریوں کا ماورائے عدالت قتل ، خواتین کی عصمت دری اور بدرترین تشدد کا سلسلہ بغیر کسی روک ٹوک کے جاری رکھے ہوئے ہے،مقبوضہ کشمیر میں بھارت کا انسانی حقوق کی پامالی کے حوالے سے بد ترین چہرہ بے نقاب کر رہے ہیں، آفس آف ہومین رائٹس کمشنر کی رپورٹ نے بھارت کا اصل چہرہ دنیا کے سامنے بے نقاب کیا ہے،مقبوضہ کشمیر میں بھارتی جنگی جرائم اور انسانی حقوق کی پامالی کی تحقیق کیلئے انکوائری کمیشن تشکیل دیا جائے۔انہوں نے کہا کہ پاکستان کی حکومت مقبوضہ کشمیر کے بہنوں اور بھائیوں کی سیاسی ، سفارتی اور اخلاقی حمایت جاری رکھیں گے۔(اح)

Facebook Comments
Share Button