تازہ ترین

Marquee xml rss feed

ضروری مرمت 26 سے 30 اکتوبر تک روزان� بجلی کی �را�می معطل ر�ے گی،کیسکو-احتساب عدالت نے جعلی �ائوسنگ سوسائٹی کے نام پر لوگوں کو لوٹنے والے ملزم کی پلی بارگین کی درخواست منظور کر لی ملزم 10 سال کے لئے سرکاری ع�دے اور مراعات کیلئے نا ا�ل قرار، ... مزید-بادشا�ی مسجد کی بحالی و تزئین نو کا �یصل�،وزیراعلیٰ عثمان بزدار کی جامع پلان جلد تیار کرنے کی �دایت، کمیٹی تشکیل اوقا� کی اراضی واگزار کرانے کیلئے آپریشن اورداتا دربار ... مزید-وزیراعلیٰ عثمان بزدار کی محمد نواز شری� کو علاج معالجے کی ب�ترین س�ولتیں �را�م کرنے کی �دایت-وزیراعلیٰ عثمان بزدار کی زیرصدارت پنجاب کابین� کا اجلاس، پنجاب ای سٹیمپ رولز 2016 میں ترامیم کی منظوری کسی کو عوام کے معمولات زندگی میں خلل ڈالنے کی �رگز اجازت ن�یں دی ... مزید-وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدارسے و�اقی وزیر قانون بیرسٹر �روغ نسیم کی ملاقات عمومی صورتحال اور وکلاء کی �لاح و ب�بود کیلئے کئے جانے والے اقدامات پر تبادل� خیال-ناردرن نے بلوچستان کو 7 وکٹوں سے شکست دے کر پوائنٹس ٹیبل پر پ�لی پوزیشن حاصل کرلی-’’وائس آ� الحمرا ‘‘ کا �ائنل آج منعقد �وگا،ملک میں گائیکی کا مستقبل شاندار �ے،اط�ر علی خان-صدرمملکت ڈاکٹر عار� علوی کی ش�نشا� جاپان نارو �یٹوکی تاج پوشی کی تقریب میں شرکت صدر مملکت اور خاتون اول نے ش�نشا� جاپان کو مبارک باد اورش�نشا� جاپان کی طر� سے دیئے گئے ... مزید-حکو مت صوبے میں کاروباری ا�راد کی حوصل� ا�زائی ،سرمای� کاری کے �روغ کیلئے مختل� اقدامات اٹھا ر�ی �ے،اکبر ایوب خان وزیر مواصلات کے پی کے

GB News

بابری مسجد کیس، بھارتی سپریم کورٹ نے تین رکنی ثالثی کمیٹی قائم کردی

Share Button

بھارتی سپریم کورٹ نے بابری مسجد کی زمین کی ملکیت کے تناع پر 3 رکنی ثالثی کمیٹی تشکیل دے دی جو 8 ہفتوں کے اندر اپنا فیصلہ سنائے گی۔بین الاقوامی خبر رساں ادارے کے مطابق بھارتی سپریم کورٹ نے تاریخی بابری مسجد کی زمین کی ملکیت پر 3 فریقین کے درمیان تنازع کو حل کرنے کے لیے جسٹس ایف ایم کلیف اللہ کی سربراہی میں 3 رکنی ثالثی کمیٹی تشکیل دے دی ہے، سری سری روی شنکر اور ایڈوکیٹ سری رام پنچو کمیٹی کے رکن ہوں گے۔سپریم کورٹ نے کمیٹی کو 8 ہفتوں کے اندر فیصلہ سنانے کا حکم دیا ہے، ان کیمرہ سماعت کا آغاز فیض آباد میں اسی ہفتے سے کیا جائے گا۔ نقص امن کو مدنظر رکھتے ہوئے سماعت کی کارروائی کو خفیہ رکھنے کا فیصلہ کیا گیا ہے جب کہ اس سے متعلق دیگر تفصیلات بھی عام نہیں کی جائیں گی۔بابری مسجد کی زمین کی ملکیت کے لیے 3 نمایاں فریقین میں سے ایک ہندو فریق نرموہی اکھاڑا نیعدالت کے فیصلے کی مخالفت کی جب کہ مسلم فریق سنی وقف بورڈ اور ہندو فریق رام للا نے عدالتی فیصلے کی تائید کی ہے۔ سپریم کورٹ نے بدھ کے روز فیصلہ محفوظ کیا تھا۔واضح رہے کہ الہ آباد کی ہائی کورٹ میں بابری مسجد کی 2.77 ایکڑ زمین کی ملکیت کے لیے سنی وقف بورڈ، نرموہی اکھاڑا اور رام للا نے 14 اپیلیں دائر کی تھیں جس میں بابری مسجد کی زمین کو فریقین میں 3 برابر حصوں میں تقسیم کرنے کا مطالبہ کیا گیا تھا۔

Facebook Comments
Share Button