تازہ ترین

Marquee xml rss feed

سمندری حدود میں کیکڑا 1 کے مقام پر توانائی کے ذخائر کی تلاش کا کام مکمل طور پر ناکام نہیں ہوا جس مقام پر ڈرلنگ کی گئی وہاں آس پاس توانائی کے ذخائر موجود ہیں، کسی دوسری جگہ ... مزید-پاکستان اور بنگلا دیش کے درمیان کشیدی شدت اختیار کر گئی بنگلا دیش حکومت نے پاکستانیوں کو ویزہ جاری کرنے پر پابندی عائد کردی، پاکستان کے لیے پروازوں کو اجرابھی روک دیا ... مزید-آئی جی پنجاب نے ڈولفن فورس کی کارکردگی کا جائزہ لینے کے بعد ہدایات جاری کر دیں جرائم پیشہ عناصر کی جانب سے حملے یا فائرنگ کی صورت میںہی ڈولفن فورس کو جوابی فائر کی اجازت ... مزید-چوہدری محمدسرور سے صوبائی وزیر میاں محمودالرشید اور فہیم خان کی ملاقات حکومت کا مشن عام آدمی کی ترقی اور خوشحالی ہے،گور نر پنجاب کی گفتگو-میاں اسلم اقبال سے جرمن الباء گروپ کے نمائندوں کی ملاقات کوڑا کرکٹ سے بجلی پیدا کرنے کے منصوبوں پر بات چیت کی گئی-گلگت کی سیاسی جماعت کا سربراہ ’راء‘ کا ایجنٹ نکلا، 14رکنی گروہ نے گرفتاری کے بعد بڑے انکشافات کر دیے ’راء‘ نے عبدالحمید کو بھارت بلا کر تربیت دی، پاکستان کو عالمی سطح ... مزید-بلاول بھٹو کا بی این پی مینگل، ایم کیوایم کوبجٹ میں ووٹ نہ دینےکا مشورہ ایم کیو ایم اور بی این پی کے معاہدے پر عمل نہیں ہوا، بی این پی لاپتا افراد کی بازیابی اور ایم کیوایم ... مزید-ڈولفن فورس کا مقصد سٹریٹ کرائم پر قابو پانے کے ساتھ ساتھ کمیونٹی بیسڈ پولیسنگ کو فروغ دینا ہے‘کیپٹن (ر) عارف نواز صرف جرائم پیشہ عناصر کی جانب سے حملے یا فائرنگ کی صورت ... مزید-شرح سود میں اضافے سے مقامی قرضوں پر سود کی مد میں300ارب کا فرق پڑیگا‘معاشی تجزیہ کار بینکوں سے قرض لیکر کی جانیوالی سرمایہ کاری کے رجحان میں کمی سے معیشت سست روی کا شکار ... مزید-وفاقی اور پنجاب حکومت بجٹ میں غر یب آدمی پر فوکس کر یں گی انکو زیادہ سے زیادہ ریلیف دیا جائیگا ‘چوہدری محمد سرو ر کچھ عناصر ملک میں اقتصادی غیریقینی صورتحال پیدا کرنے ... مزید

GB News

متنازعہ حقوق کے حوالے سے عمل در آمد کیلئے عدالت سے رجوع کیا جائے گا ،جاوید حسین

Share Button

گلگت(ثاقب عمر سے ) پاکستان پیپلزپارٹی کے رکن اسمبلی جاوید حسین نے کہا ہے کہ متحدہ اپوزیشن میں مشاورت مکمل ہوچکی ہے بہت جلد سپریم کورٹ آف پاکستان کے فیصلے پر عمل در آمد کے لئے اسلام آباد ہائی کورٹ سے رجوع کیا جائے گا اور گلگت بلتستان میں جس قسم کی بھی قانون سازی ہو یا کوئی کام ہو وہ سپریم کورٹ آف پاکستان کے فیصلے کی روشنی میں ہو اگر کسی نے بھی سپریم کورٹ آف پاکستان کے فیصلے کے برعکس کام کیا تو وہ توہین عدالت کا مرتکب ہوگا اور اس کے خلاف فوری کاروائی ہونی چاہئے ۔انہوں نے کہا کہ وزیر اعلیٰ حفیظ الرحمن سپریم کورٹ آف پاکستان کے فیصلے کو ردی ٹوکری میں ڈالنے کی کوشش کر رہے ہیں جس کے خلاف ہم فوری طر پر توہین عدالت کے حوالے سے عدالت سے بھی رجوع کرینگے اور سپریم کورٹ آف پاکستان کے فیصلے کے روشنی میں ہی اب گلگت بلتستان میں کام کیا جائے ۔انہوں نے کہا کہ وفاقی حکومتوں نے گلگت بلتستان کے آئینی حقوق کے حوالے سے کوئی بھی کام نہیں کیا اور پاکستان کے حکمرانوں کی ناقص پالیسی کے بدولت آج یہ ایشو عالمی سطح پر اجاگر ہوکر مزید مسائل پیداہو رہے ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ وفاق کی جانب سے الحاق پاکستان کو قبول کرکے آئینی حقوق دئے جاتے تو اچھا تھا لیکن بار کونسل نے سپریم کورٹ آف پاکستان سے رجوع کیااب سپریم کورٹ کے فیصلے پر عمل در آمد کے علاوہ ہمارے پاس کوئی اور راستہ نہیں ہے اور ہم نے مشاورت کی ہے اعتزاز حسن ، لطیف کھوسہ سمیت کسی اور قابل وکیل کو متحدہ اپوزیشن اپنا وکیل بناکر اس فیصلے پر من وعن عمل در آمد کے لئے رجوع کرے گی ۔انہوں نے کہا کہ اس سے قبل گلگت بلتستان میں تمام وفاقی ادارے موجود تھے اور اس دوران گلگت بلتستان کے عوام کو قومی دھارے میں شامل نہیں کیا گیا الحاق پاکستان کے تحت گلگت بلتستان کے عوام کو حقوق نہیں دئے گئے اب جو فیصلہ سپریم کورٹ آف پاکستان کی جانب سے گلگت بلتستان کے حوالے سے سات رکنی بنچ نے دیا ہے اس پر عمل در آمد ضروری ہے  سپریم کورٹ کے فیصلے کے خلاف کوئی بھی بر عکس کام گلگت بلتستان کی حکومت نے کیا تو اس کو ہر گز قبول نہیں کیا جائے گا ۔انہوں نے کہا کہ گلگت بلتستان متنازعہ خطہ سپریم کورٹ آف پاکستان نے ڈکلیئر کیا ہے تو گلگت بلتستان کی حکومت متنازعہ خطے کے جو قوانین ہوتے ہیں اس کے تحت ہی کام کرے اور اس کے تحت ہی قانون سازی کرے اور ہر شعبے میں متنازعہ حیثیت سے کام کیا جائے اور اس کے بر عکس کام کے خلاف متحدہ اپوزیشن کام کرنے نہیں دے گی عنقریب متنازعہ حقوق کے حوالے سے عمل در آمد کے لئے عدالت سے رجوع کیا جائے گا ۔

Facebook Comments
Share Button