تازہ ترین

Marquee xml rss feed

اے پی سی میں پیپلز پارٹی کی حکومت کے خلاف سخت موقف اپنانے کی مخالفت پارلیمان کو کمزور کیا گیا تو ملک میں تیسری قوت آجائے گی، پاکستان پیپلز پارٹی کا موقف-گلگت بلتستان میں ٹوپی شانٹی ڈے روایتی جوش و خروش سے منایا گیا-تفصیلی خبر اپوزیشن کی کل جماعتی کانفرنس ناکام ہو گئی، اے پی سی اعلامیہ اپوزیشن کی نالائقی اور تحریری بدتمیزی کا منہ بولتا ثبوت ہے، اے پی سی اعلامیہ کھسیانی بلی کھمبا نوچے ... مزید-وزیرآبپاشی سندھ سید ناصر حسین شاہ کی ہدایت پر رینجرز کی مدد سے سندھ بھر میں آپریشن شروع-اپوزیشن کی کل جماعتی کانفرنس ناکام ہو گئی، اے پی سی اعلامیہ اپوزیشن کی نالائقی اور تحریری بدتمیزی کا منہ بولتا ثبوت ہے، اے پی سی اعلامیہ کھسیانی بلی کھمبا نوچے کے مترادف ... مزید-وزیراعظم کے مشیر برائے تجارت عبدالرزاق دائود سے تمباکو کمپنی فلپ مورس انٹرنیشنل کے ایم ڈی کی ملاقات-خصوصی افراد کو بااختیار بنانا ہماری اولین ترجیح ہے۔ سید قاسم نوید قمر-ابھی کئی اے پی سیز آئیں گی، پاکستان تحریکِ انصاف کے رہنما کا دعویٰ ایسی اے پی سیز آتی رہیں گی اور ایسے ہی ناکام ہوتی رہیں گی، فیصل واوڈا-وزیراعظم عمران خان کو ایوان نے پہلے الیکٹ اور پھر سلیکٹ کیا، فردوس عاشق اعوان سلیکٹ اور الیکٹ کے بعد ریجکٹ کی بھی بات ہونی چاہیے، مشیراطلاعات-اے پی سی کا پہلا شو ہی ناکام ہو گیا‘عوام کو اے پی سی سے زیادہ کرکٹ میچ سے دلچسپی رہی‘ اپوزیشن کا استعفوں و بائیکاٹ کا ایجنڈا ناکام ہو گا‘ اے پی سی جیسے ہتھکنڈے عمران ... مزید

GB News

ڈیڑھ سال معیشت پر بھاری گزریں گے، حکومت

Share Button

وزیر مملکت ریونیو حماد اظہر نے خبردار کیا ہے کہ ملک میں اگلے ڈیڑھ سال معیشت پر مزید بھاری گزریں گے، وزیراعظم عمران خان، وزیر خزانہ اسد عمر اور میں اس مسئلے پر یکساں موقف رکھتے ہیں کیونکہ ماضی میں جس بری طرح سے معیشت کو نقصان پہنچایا گیا اسے ٹھیک کرنے کے لیے مزید وقت درکار ہے ، سیاسی مخالفین کہتے ہیں کہ ہم ماضی کی باتیں نہ کریں بلکہ مستقبل کی پالیسی کا تذکرہ کریں لیکن ماضی کی معاشی پالیسیوں کے اثرات سے متاثر ہو رہے ہیں تو مستقبل کے بارے میں کیا بات کریں، حمزہ شہباز اپنے کیس سے توجہ ہٹانے کیلئے غلط بیانی کررہے ہیں لیکن یہ طے شدہ ہے کہ کسی کو بھی این آر او نہیں ملے گا۔ جمعرات کویہاںاسلام آباد میں پریس کانفرنس کے دوران وزیرریونیو نے کہا کہ جو پالیسی ہم مرتب کررہے ہیں اس کا تعلق براہ راست خراب معاشی پالیسی کے اثرات کو درست کرنا ہے۔ان کا کہنا تھا کہ کراچی کے ساحل سے 250 کلومیڑ دور ڈرلنگ جاری ہے اور اگر گیس کے ذخائر دریافت ہو گئے تو ماہرین کی رائے ہے کہ وہ معدنی ذخائر دنیا کی 10 بڑی معدنیات میں شامل ہوجائیں گے۔وزیر ریونیو نے کہا کہ فیصل واڈا نے معدنی ذخائر سے متعلق بیان میں صرف امید ظاہر کی تھی۔وزیر ریونیو حماد اظہر نے کہا کہ ریکارڈ کے لیے بتادوں کہ ہمیں روپے کی قدر میں کمی کیوں کرنی پڑی، جب ہمارے زرمبادلہ اگست میں اس قدر کم ہو گئے کہ ہم اپنے مختصرالمعیاد ادائیگی کرنے کے بھی قابل نہیں رہے اس لیے ایسی صورتحال میں روپے کی قدر کو مستحکم کرنے کے لیے مارکیٹ میں اربوں ڈالر ڈالنے کی سکت نہیں تھی۔انہوں نے دعویٰ کیا کہ اب روپے کی قدر اصل قدر کے قریب ہے۔حماد اظہر نے واضح کیا کہ حمزہ شہباز اپنے کیس سے توجہ ہٹانے کیلئے غلط بیانی کررہے ہیں لیکن یہ طے شدہ ہے کہ کسی کو بھی این آر او نہیں ملے گا۔ منی لانڈرنگ کرنے والے کبھی ملک واپس نہیں آتے، مسلم لیگ (ن) نے معیشت کا بیڑہ غرق کر دیا ہے اور آج بڑے بڑے دعوے کرنے کیلئے میڈیا کے سامنے آ جاتے ہیں، عالمی رپورٹ نے بھی واضح کیا ہے کہ پاکستان کے موجودہ حالات گزشتہ (ن)لیگ حکومت کی دین ہیں، مزید ملکی خساروں سے بچنے کیلئے یہ آہستہ آغاز ضروری تھا۔ اس سال مہنگائی میں اضافہ ہوا، اسے ہم تسلیم کرتے ہیں، روپے کی قدر کم کرنے سے مہنگائی میں اضافہ ہوا، حمزہ صاحب (ن) لیگ کے دور میں دودھ شہد کی نہریں نہیں بہہ رہی تھیں،آپ کو پیپلز پارٹی سے اتنا خسارہ نہیں ملا تھا جتنا آپ نے ہمیں دیا، پھر ہماری مہنگائی کی شرح آپ کے دور سے کم ہے، ہم مزید اس میں کمی لائیں گے، حمزہ شہباز نے رورپے کی قیمت کم کرنے میں بھی غلط تناسب دیا، ہم نے روپیہ صرف 8.2فیصد ڈی فیلو کیا جبکہ مسلم لیگ نے 10.1فیصد کیا تھا۔اومنی گروپ، زرداری اور حمزہ شہباز کے کیس میں کوئی زیادہ فرق نہیں،ان کے درمیان چارٹر آف ڈیموکریسی نہیں، چارٹر آف کرپشن تھا، حمزہ شہباز جتنا مرضی مولانا فضل الرحمان اور زرداری سے بغل گیر ہو جائیں، این آر او نہیں ملے گا،قوم کے سامنے آپ کی حقیقی شکل آ گئی ہے، قوم کو غلط اعداد و شمار نہ دیں اپنے کیسوں کا مقابلہ کریں۔ہمیں اگلا ڈیڑھ سال مزید مشکلات کا سامنا کرنا پڑے گا،یہ سب گزشتہ حکومت کی دین ہیں، یہ سب مہنگائی سابقہ حکومت کی بگاڑ کی وجہ سے ہوئی۔ہم ایف بی آر میں اصلاحات لا رہے ہیں، اس کیلئے بعد میں قوم کو آگاہ کریں گے، معیشت کو آئی سی یو سے نکال لیا ہے، اب اس کا جنرل وارڈ میں ٹریٹمنٹ ہو رہا ہے،انڈسٹری کا 10سال تک گلا گھوٹا گیا، اس میں بہتری آہستہ آہستہ آئے گی،اس سال ترقی میں مزید اضافہ ہو گا، وزیر صحت نے کہا کہ دوائیوں کی قیمتوں میں اضافہ(ن) لیگ دور میں ہوا، ہم پورے پاکستان میں ادویات کی قیمتوں میں اضافہ کرنے والوں کے خلاف کاروائی کررہے ہیں، صحت کارڈ کا وعدہ حکومت نے کیا ہے اور وفاقی حکومت یہ وعدہ پورا کریگی،ہم ساڑھے پانچ کروڑ لوگوں کو ہیلتھ انشورنس دینے جا رہے ہیں جسے ہم سات کروڑ تک بڑھائیں گے۔ صحافی نے عامر کیانی سے سوال کیا کہ وزیر اعظم نے کہا کہ بہتر گھنٹے میں ادویات کی قیمتیں کم کی جائیں میکانزم کیا ہوگاتواس دوران وزیر صحت نے جواب دیا کہ حکومت کے پاس اتھارٹی ہے ہم قیمتیں کم کریں گے، عامر کیانی نے کہاکہ ہم نہ صرف ادویات کو پرانی قیمتیں بحال کریں گے بلکہ اس بھی قیمتیں کم کریں گے۔

Facebook Comments
Share Button