تازہ ترین

Marquee xml rss feed

اے پی سی میں پیپلز پارٹی کی حکومت کے خلاف سخت موقف اپنانے کی مخالفت پارلیمان کو کمزور کیا گیا تو ملک میں تیسری قوت آجائے گی، پاکستان پیپلز پارٹی کا موقف-گلگت بلتستان میں ٹوپی شانٹی ڈے روایتی جوش و خروش سے منایا گیا-تفصیلی خبر اپوزیشن کی کل جماعتی کانفرنس ناکام ہو گئی، اے پی سی اعلامیہ اپوزیشن کی نالائقی اور تحریری بدتمیزی کا منہ بولتا ثبوت ہے، اے پی سی اعلامیہ کھسیانی بلی کھمبا نوچے ... مزید-وزیرآبپاشی سندھ سید ناصر حسین شاہ کی ہدایت پر رینجرز کی مدد سے سندھ بھر میں آپریشن شروع-اپوزیشن کی کل جماعتی کانفرنس ناکام ہو گئی، اے پی سی اعلامیہ اپوزیشن کی نالائقی اور تحریری بدتمیزی کا منہ بولتا ثبوت ہے، اے پی سی اعلامیہ کھسیانی بلی کھمبا نوچے کے مترادف ... مزید-وزیراعظم کے مشیر برائے تجارت عبدالرزاق دائود سے تمباکو کمپنی فلپ مورس انٹرنیشنل کے ایم ڈی کی ملاقات-خصوصی افراد کو بااختیار بنانا ہماری اولین ترجیح ہے۔ سید قاسم نوید قمر-ابھی کئی اے پی سیز آئیں گی، پاکستان تحریکِ انصاف کے رہنما کا دعویٰ ایسی اے پی سیز آتی رہیں گی اور ایسے ہی ناکام ہوتی رہیں گی، فیصل واوڈا-وزیراعظم عمران خان کو ایوان نے پہلے الیکٹ اور پھر سلیکٹ کیا، فردوس عاشق اعوان سلیکٹ اور الیکٹ کے بعد ریجکٹ کی بھی بات ہونی چاہیے، مشیراطلاعات-اے پی سی کا پہلا شو ہی ناکام ہو گیا‘عوام کو اے پی سی سے زیادہ کرکٹ میچ سے دلچسپی رہی‘ اپوزیشن کا استعفوں و بائیکاٹ کا ایجنڈا ناکام ہو گا‘ اے پی سی جیسے ہتھکنڈے عمران ... مزید

GB News

پلوامہ حملہ، سوالات کا جواب نہ دینے پر بھارت سے وضاحت طلب

Share Button

پلوامہ واقعے سے متعلق سوالات کے جواب نہ دینے پر بھارتی ڈپٹی ہائی کمشنر کو دفتر خارجہ طلب کرلیا گیا۔تفصیلات کے مطابق پاکستان میں بھارت کے ڈپٹی ہائی کمشنر کو دفتر خارجہ طلب کرلیا گیا، پلوامہ واقعے پر پاکستان نے بھارت سے 8سوالوں کے جواب نہ دینے پر وضاحت مانگ لی۔بھارت قابل عمل شواہد فراہم کرے، تعاون کے لیے تیار ہیں۔ ذرائع کے مطابق بھارت سے پوچھا گیا ہے کہ ڈوزیئر پر پاکستان کے سوالوں کے جواب کیوں نہیں دئیے، بھارت جواب دے کالعدم جیش محمد کا مبینہ ترجمان محمد حسن کون ہے، مبینہ ترجمان کی متعلقہ تفصیلات فراہم کی جائیں۔وزارت خارجہ نے کالعدم جیش محمد کے مبینہ ترجمان کا سم ریکارڈ بھی طلب کرلیا، پاکستان نے بھارت سے مبینہ ترجمان کے واٹس ایپ کی تفصیلات بھی مانگی ہیں۔وزارت خارجہ کی جانب سے یہ بھی کہا گیا ہے کہ بھارت قابل عمل شواہد فراہم کرے، تعاون کے لیے تیار ہیں۔واضح رہے کہ ترجمان دفتر خارجہ ڈاکٹر محمد فیصل کا کہنا تھا کہ چاہتے ہیں بھارت سے پلواما حملے پر قابل عمل معلومات مل جائیں، بھارت کو کچھ نئے سوالات بھیجے ہیں، بھارت نے پہلے بھیجے گئے سوالات کا جواب بھی ابھی تک نہیں دیا ہے۔ دفتر خارجہ کے تر جمان ڈاکٹر فیصل نے کہا ہے کہ پاکستان دوحہ میں امریکا طالبان مذاکرات کا حصہ نہیں ہوگا، پلوامہ واقعے پر بھارتی ہائی کمیشن کو مزید سوالات کا ایک سیٹ دیا گیا ہے، امیدہے بھارت پلوامہ واقعے سے متعلق ان سوالات کا جلد جواب دے گا، بھارتی حملے کی ٹھوس انٹیلی جنس رپورٹ تھی، اسی لیے وزیرخارجہ نے اس کا ذکر کیا، بھارت نے اگر ہمارے عزم کو چیلنج کیا تو جواب وہی ہو گا جو 27 فروری کو تھا،جمعرات کو دفتر خارجہ میں ہفتہ وار بریفنگ دیتے ہوئے ترجمان دفترِ خارجہ ڈاکٹر فیصل نے مقبوضہ کشمیر میں بھارتی جارحیت کی مذمت کی اور کہا کہ کشمیر میں بھارتی ظلم و بربریت کا سلسلہ جاری ہے، حریت رہنما ئوں سمیت کشمیریوں پر بھارتی تشدد کی مذمت کرتے ہیں، عالمی برادری کشمیریوں پر بھارتی مظالم رکوانے میں کردار ادا کرے، مقبوضہ کشمیر کی صورتحال مخدوش ہے، مزید 2 کشمیری شہید کر دیے گئے۔ یاسین ملک کی بدنام زمانہ تہاڑ جیل منتقلی اور مقبوضہ کشمیر میں جمعے کو مساجد کی بندش کی شدید مذمت کرتے ہیں۔انہوں نے کہا کہ عالمی برادری مقبوضہ کشمیر میں بھارتی بربریت رکوائے، مقبوضہ کشمیر سے افسوسناک خبروں کا سلسلہ جاری ہے۔ میر واعظ عمر فاروق کو نیشنل انویسٹی گیشن ایجنسی (این آئی اے)میں پیش ہونے پر مجبور کیا جارہا ہے، مقبوضہ کشمیر میں شب معراج کو مساجد کو تالے لگائے گئے۔ پاکستان ان اقدامات کی مذمت کرتا ہے،ترجمان کا کہنا تھا کہ عالمی برادری مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں کا نوٹس لے،دفتر خارجہ کے مطابق کرتار پور راہداری سے متعلق ٹیکنیکل اجلاس 16 اپریل کو ہوگا، امید ہے بھارت بھی پاکستان کے جذبے پر اسی طرح ردعمل دے گا

Facebook Comments
Share Button