تازہ ترین

GB News

سی پیک اقتصادی زونز سے دس لاکھ ملازمتیں پیدا ہوں گی، عارف علوی

Share Button

صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی نے کہا ہے کہ پاک چین اقتصادی راہداری نے پاکستان کو عالمی تجارت و سرمایہ کاری کے لئے اہم مقام بنا دیا ہے، حکومت سماجی و اقتصادی ترقی کو بہت زیادہ اہمیت دیتی ہے۔ انہوں نے یہ بات این ڈی یو کے زیر اہتمام بین الاقوامی سی پیک ورکشاپ کے وفد سے جمعرات کو ایوان صدر میں گفتگو کرتے ہوئے کہی۔ صدر نے کہا کہ خصوصی اقتصادی زونز کا قیام سی پیک کے دوسرے مرحلے یعنی صنعتی تعاون کا اہم جزو ہے جس کے لئے سرکاری و نجی اشتراک کار میں اضافہ کیا جانا چاہئے۔ انہوں نے خصوصی اقتصادی زونز کے لئے ہنر مند انسانی وسائل اور پاکستان میں سی پیک کی حامل صنعتی سرگرمیوں کی اہمیت کو اجاگر کیا۔ صدر نے کہا کہ دس برسوں میں کم و بیش 10 لاکھ ملازمتیں پیدا ہوں گی۔ ہماری افرادی قوت کو اس ضمن میں تیار رہنے کی ضرورت ہے۔ خطے میں سی پیک اور بیلٹ روڈ اقدام سے رونما ہونے والی پیش ہائے رفت کو اجاگر کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ اس قسم کی کانفرنسیں اور ورکشاپس پیدا ہونے والے مواقع اور چیلنجز پر غور اور ان کی تیاری کا پلیٹ فارم مہیاکرتے ہیں۔ صدر نے سی پیک ورکشاپ کے انعقاد پر این ڈی یو کی تعریف کرتے ہوئے مستقبل میں ان کی کاوشوں کے لئے اپنی بھرپور حمایت کی یقین دہانی کرائی۔ دریں اثناء ایک بیان میں صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی نے مکران کوسٹل ہائی وے پر دہشت گردانہ حملے کی شدید الفاظ میں مذمت کی ہے۔ صدر مملکت نے قیمتی انسانی جانوں کے ضیاع پر گہرے دکھ اور غم کا اظہار کرتے ہوئے شہدا کی بلندی درجات اور اہل خانہ کے لیے صبر جمیل کی دعا کی۔ صدر مملکت نے کہا کہ ملک میں فساد پھیلانے کی ایسی کوششیں کامیاب نہیں ہو سکتیں، قوم دہشت گردی کے خلاف جنگ میں متحد اور پرعزم ہے۔

Facebook Comments
Share Button