GB News

گلگت بلتستان میں سب سے زیادہ درخت لگائے جائینگے ، ملک امین اسلم

Share Button

گلگت(سٹاف رپورٹر+ نمائندہ خصوصی) وزیر اعظم کے مشیر برائے ماحولیات ملک امین اسلم نے کہا ہے کہ 5 سال میں گلگت بلتستان میں 17 کروڑ پودے لگانے کا ہدف مقرر کیا گیا ہے وفاقی حکومت تعاون کر تے ہوئے فنڈز دے گی اوربہتر کارکردگی کی صورت میں فنڈز ڈبل کریں گے گرین یوتھ موومنٹ شروع کی جا رہی ہے جس میں گرین پاکستان کے خواب کی تعبیر کے لیے عملی اقدامات اٹھاتے ہوئے نوجوانوں کو شامل کیا گیا ہے ۔،وزیر اعظم کے مشیر برائے ماحولیاتی تبدیلی ملک امین اسلم خان نے ڈگری کالج گلگت میں منعقدہ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ جس طرح کے پی کے میں 5ارب درخت لگا کر عمران خان کے ویژن کو کامیاب بنایا اسی طرح پورے پاکستان میں درخت لگائے جائیں گے اور گلگت بلتستان میں سب سے زیادہ درخت لگائے جائینگے ،انہوں نے کہا کہ موسمیاتی تبدیلیوں کے حوالے سے پاکستان ساتویں نمبر آیا ہے اس پر قابو پانا وقت کی اہم ضرورت ہے ، گلگت بلتستان میں درخت لگانے سے پورے پاکستان کو فائدہ حاصل ہو جائے گا ، پورے پاکستان کو پانی گلگت بلتستان سے گزرکر جاتا ہے یہاں پر زیادہ سے زیادہ درخت لگانے سے پانی مزید شفاف ہوگا جس سے بیماریوں کی روک تھام میں مدد مل سکتی ہے، اس کے علاوہ گلگت بلتستان میں درخت لگانے سے دریا کا پانی سندھ تک جائے گا،شجرکاری مہم میں خصوصا نوجوان بھر پور حصہ لیں یہ اقدام ہمارے بہتر مستقبل کی ضمانت ہے،وزیر اعظم کے مشیر برائے ماحولیاتی تبدیلی ملک امین اسلم خان نے کہا کہ کلین اینڈ گرین پاکستان پروگرام کے تحت ڈگری کالج گلگت میں اس سال 10ہزار درخت لگائے جائیں گے،اس کے علاوہ وزیر اعظم پاکستان عمران خان گرین یوتھ موئومنٹ پروگرام بھی لانچ کرنے جا رہے ہیں جو کہ نوجوانوں کے لیے بنایا گیا ہے۔ نوجوان آن لائن رجسٹرڈ کرکے اس پروگرام کا ممبر بن سکتے ہیںاور پاکستان کیلئے کردار ادا کرسکتے ہیں انہوں نے کہا کہ بلتستان میں ماڈل قسم کے درخت لگانے کے روایت کو متعارف کرایا گیا ہے اور اس کو مزید بڑھایا جائے گا ۔اس موقع پر صوبائی وزیر جنگلات و جنگلی حیات محمد عمران وکیل نے کہا کہ موسمیاتی تبدیلیوں کی روک تھام کیلئے شجرکاری مہم انتہائی ضروری ہے، شجر کاری میں شہری علاقے ہو یا دیہی علاقے ہو صاف آکسیجن اور شفاف پانی کیلئے درخت لگانا بہت ضروری ہے، انہوں نے کہا کہ نواز شریف نے گرین پاکستان پروگرام کی بنیاد رکھی اور اس پروگرام کو گلگت بلتستان تک پہنچایا جس کی بدولت چار سالوں میں کروڑوں درخت لگائے گئے ہیں او ر مزید درخت لگائینگے ، کلین اینڈ گرین پاکستان پروگرام کو آگے بڑھانے کیلئے موجودہ وفاقی حکومت نے گلگت بلتستان میںاس پروگرام کو کامیاب کرنے میں ہماری مدد کی ، انہوں نے کہا کہ گلگت بلتستان میں شجرکاری مہم بہت ضروری ہے ، یہاں پر گلیشیئر کے پگلنے کا عمل تیزی سے جاری ہے جس کے باعث بہت سے نقصانات ہو سکتے ہیں، صوبائی حکومت شجر کاری مہم کے کامیاب بنانے کیلئے دن رات محنت کررہی ہے ۔اس موقع پر سیکریٹری جنگلات آصف اللہ نے کہا کہ کلین اینڈ گرین پروگرام کے پہلے مرحلے میں درخت لگانے کا عمل شروع ہو چکا ہے ، اس پروگرام میں پلاسٹک بیگز کو کم سے کم استعمال میں لانے کا مہم بھی شروع کردیا گیا ہے جو کہ ہنزہ سے آغاز ہو چکا ہے ، اس مہم میں پورے گلگت بلتستان سے پلاسٹک بیگز کے مکمل خاتمہ کیلئے کام کیا جائے گا ۔ انہوں نے کہا کہ درخت لگا کر اس کی حفاظت ہر ایک پر فرض ہے اور اب ہم ہر مہینے میں درخت لگائینگے۔تقریب میں سیکٹر کمانڈر ایس سی او، چیف سیکرٹری گلگت بلتستان ، ضلعی انتظامیہ کے آفیسران اور محکمہ فارسٹ ، وائلڈ لائف کے آفیسران اور مختلف سکولوں اور کے آئی یو کے طلباء و طالبات نے بھی خصوصی شر کت کی اور سکولوں کے طلبا و طالبات سے ٹیبلو کے تحت درخت لگانے کی افادیت اور ماحولیاتی تبدیلی کے حوالے سے آگاہ کیا ۔

Facebook Comments
Share Button