تازہ ترین

Marquee xml rss feed

پاکستان میں فحش ویب سائٹس دیکھنے کی رجحان میں کمی واقع پاکستان میں فحش مواد اپ لوڈ ہونے کے شواہد نہیں ملے، جبکہ انٹرنیٹ پر فحش مواد دیکھنے کے رجحان میں بھی واضح کمی ہوئی ... مزید-علیم خان پھر سے پنجاب کی کابینہ میں واپسی کیلئے تیار تحریک انصاف کے سینئر رہنما کو جلد پنجاب کی کابینہ میں شامل کر لیا جائے گا، ممکنہ طور پر سینئر وزیر کی وزارت ہی سونپی ... مزید-مجھے اپنی عزت کا بھی خیال ہے، میرا مزاج ایس نہیں ہے کہ زیادہ شور شرابا کر سکوں اب جو وزارت سونپی گئی ہے اس کیلئے مشاورت نہیں کی گئی، تاہم وزیراعظم کا فیصلہ قبول کرتا ہوں: ... مزید-نامور وکیل کی مشرف کے خلاف غداری کیس میں پیش ہونے سے معذرت-مریم صفدر کے ہوتے ہوئے شر یف فیملی کو کسی د شمن کی ضرور ت نہیں‘ شہباز شریف ساتھی کی گرفتاری پربو کھلاہٹ کا شکار ہو کر بیان بازی کرر ہے ہیں ، غلام محی الدین دیوان-وزیر اعظم قوم کو بتائیں کہ وہ کیا ایجنڈا لیکر امریکہ جارہے ہیں،سینیٹرسراج الحق ایجنڈا افغانستان سے امریکی افواج کی بحفاظت واپسی کا ہے یا قوم کی مظلوم بیٹی ڈاکٹر عافیہ ... مزید-عوام سے جینے کا حق چھیننے کے بعد اب کفن اور قبر پر ٹیکس لگا کر موت بھی مہنگی کر دی گئی ہے ، سینیٹر سراج الحق اس وقت میں ملک میں جھوٹوں کی حکومت ہے ،جماعت اسلامی اقتدار ... مزید-ریکوڈک کیس میں 6 ارب ڈالرز جرمانے کا معاملہ، اب پریشان ہونے کی ضرورت نہیں، چین پاکستان کی مدد کیلئے میدان میں آگیا چین ریکوڈک منصوبے کا کنٹرول خود سنبھال کر چلی اور کینیڈا ... مزید-رینجرز کی شہر کے مختلف علاقوں میں کارروائیاں، 5 ملزمان گرفتار-دائودی بوہرہ جماعت کے سربراہ ڈاکٹر سیدنا مفدل سیف الدین کراچی پہنچ گئے

GB News

آئی ایم ایف تین سال کیلئے پاکستان کو 6 ارب ڈالر دے گا ، عبدالحفیظ شیخ

Share Button

اسلام آباد ( مانیٹرنگ ڈیسک+نیوز ایجنسیاں) مشیر خزانہ ڈاکٹر عبدالحفیظ شیخ نے کہا ہے کہ پاکستان کا عالمی مالیاتی فنڈ سے معاہدہ طے ہوگیا، آئی ایم ایف تین سال کے لیے پاکستان کو 6 ارب ڈالر دے گا ، جس کی ادائیگی 39 ماہ میں کرنی ہوگی، عالمی بینک اور ایشیائی ترقیاتی بینک سے بھی تین ارب ڈالرز کا قرض ملنے کا امکان ہے، حکومت ملکی مفاد کی خاطر امیر لوگوں کو دی جانے والی سبسڈی ختم کرے گی، بجلی کی قیمت بڑھتی ہے تو 300یونٹ سے کم صارفین پر کوئی اثر نہیں پڑیگا، ڈالر کی قیمت کا تعین اسٹیٹ بینک آف پاکستان کرے گا، اگر حکومت اصلاحات کرنے میں کامیاب ہوگئی تو یہ آئی ایم ایف کا آخری پیکج ہوگا، آ ئندہ بجٹ میں ینظیر انکم سپورٹ پروگرام(بی آئی ایس پی)اور احساس پروگرام کے لیے 280 ارب روپے رکھے جا رہے ہیں جن میں بی آ ئی ایس پی کے لیے 80 ارب روپے اضافی رکھے جائیں گے،آئی ایم ایف کا بورڈ اب پاکستان سے ہونے والے مالیاتی معاہدے کو حتمی شکل دے گا،اتوار کو سرکاری ٹی وی سے گفتگو کرتے ہوئے مشیر خزانہ ڈاکٹر عبدالحفیظ شیخ کافی مہینوں کی جدوجہد کے بعد آئی ایم ایف اور حکومت کے درمیان معاہدہ طے پا گیا ہے ۔ سٹاف ایگری منٹ ہو گیا، پروگرام کی منظوری آئی ایم ایف کا فل بورڈ دے گا ۔ آئی ایم ایف بین الاقوامی ادارہ ہے جس کا کام اپنے ممبر ممالک کی مالی مشکلات میں مدد کرنا ہے ۔ جب موجودہ حکومت آئی تو پاکستان 25 ہزار ارب کا قرض دار ہو چکا تھا ۔ پانچ سال میں ایکسپورٹ تقریباً منفی جا رہی تھیں ۔ہماری برآمدات اور درآمدات میں بیس ارب ڈالرکا فرق تھا ۔ نو سالوں میں ہماری ریزور پچاس فیصد گرے ۔ بیرون قرضے90 ارب ڈالر تک بڑھے ۔ ایسی صورتحال میں کل 12 ارب ڈالرکا خسارہ کا سامنا تھا ۔ ہم خود یہ سب ٹھیک نہیں کر سکتے تھے ۔ آئی ایم ایف کے پاس جانا ناگزیر تھا ۔ مالیاتی پروگرام لینے سے پاکستان کو فائدہ ہوگا ۔ اس سے دیگر بین الاقوامی مالیاتی اداروں سے بھی پاکستان مالی مدد حاصل کر سکے گا ۔ انہوں نے کہا کہ آئی ایم ایف سے تین سال میں چھ ارب ڈالر حاصل کیے جائیں گے ۔ انہوں نے آئی ایم ایف کی شرائط کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ ان کی شرائط ہمارے لئے بھی فائدہ مند ہیں کہ حکومتی اخراجات کو کم کیا جائے ۔ خسارے والے اداروں میں اصلاحات لائی جائیں ۔ زیادہ آمدنی والیافراد پر ٹیکس لگایا جائے جس سے عام عوام کو نقصان نہ ہو ۔ یہ سب چیزیں ہمارے حق میں بھی ہیں اگر ہم ترقی کرنا چاہتے ہیں تو ہمیں یہ سب تبدیلیاں لانا ہونگی ۔ پہلے بھی آئی ایم ایف کے پروگرام لیے جاتے رہے ہیں ۔ اگر ہم اصلاحات نہیں لائیں گے تو ہمیں اس پروگرام سے کوئی کچھ فائدہ نہیں ہوگا، آئی ایم ایف کے پاس جانے عالمی برادری کو ایک اچھا سائن جائے گا ۔ وہ یہ سمجھیں گے کہ پاکستان میں معاشی اصلاحات لائی جا رہی ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ اگر بجلی کی قیمت بڑھے گی بھی تو تین سو فی ماہ یونٹ استعمال کرنے ولاے اس سے متاثر نہیں ہو نگے جو کہ کل صارفین کا 75 فیصد ہیں ۔انہوں نے کہا کہ آنے والے بجٹ میں احساس پروگرام اور بے نظیر انکم سپورٹ پروگرام میں 80 ارب روپے رکھے جائینگے ۔ جس سے عام لوگوں کو فائدہ ہوگا ۔یہ پاکستان کا آخری آئی ایم ایف پروگرام اسی صورت میں ہو سکتا ہے جب ہم ان شرائط پر پوری طرح عملدرآمد کرینگے ۔ ادھر پاکستان سے مالیاتی پیکیج کے معاہدے پر بین الاقوامی مالیاتی فنڈز(آئی ایم ایف)نے اعلامیہ جاری کردیا۔اتوار کو جا ری کر دہ آئی ایم ایف اعلامیے کے مطابق پاکستان کو 6 ارب ڈالر 39 ماہ میں قسطوں میں جاری کیے جائیں گے،معاہدے پر عمل درآمد آئی ایم ایف کے ایگزیکٹو بورڈ کی منظور کے بعد ہوگا،آئی ایم ایف کے مطابق حکومت پاکستان نے اسٹیٹ بینک کی خود مختاری قائم رکھنے کی یقین دہانی کرائی، پاکستان آئندہ 3 سال میں پبلک فنانسنگ کی صورتحال میں بہتری لائے گا،پاکستان انتظامی اصلاحات سے ٹیکس پالیسی کے ذریعے قرضوں میں کمی لائے گا،آئی ایم ایف نے پاکستان سے کہا کہ ڈالر کے مقابلے میں روپے کی قدر کا تعین مارکیٹ کے طے کرنے سے مالی شعبے میں بہتری آئے گی، آئی ایم ایف نے کہا کہ پاکستان آیندہ بجٹ کے خسارے میں 0اعشاریہ6 فیصد کمی لائے گا۔

Facebook Comments
Share Button