تازہ ترین

Marquee xml rss feed

افغان حکومت کے اعتراضات اب مسترد، وزیراعظم نے افغان طالبان سے ملاقات کا عندیہ دے دیا ٹرمپ سے ملاقات کے بعد صورتحال واضح ہو چکی اس لیے اب افغان طالبان سے ملاقات ہوگی، افغانستان ... مزید-این اے 205 گھوٹکی ضمنی الیکشن، پیپلز پارٹی نے اپ سیٹ کرکے فتح حاصل کر لی حلقے کے تمام 290 پولنگ اسٹیشنز کے غیر سرکاری غیر حتمی نتائج میں پی پی امیدوار سردار محمد بخش مہر نے ... مزید-موسم پھر سے بدلنے لگا، محکمہ موسمیات کی تازہ ترین پیشن گوئی لاہور سمیت ملک کے بیشتر علاقوں میں منگل کی شب سے مون سون بارشوں کا نیا سلسلہ شروع ہوگا جو اگلے کئی روز تک جاری ... مزید-ٹرمپ، عمران خان ملاقات میں تاریخ رقم کر دی گئی پاکستان امریکا تعلقات کے 72 برسوں کے دوران کبھی کس امریکی صدر نے پاکستانی وزیراعظم یا صدر کیساتھ اتنی طویل پریس کانفرنس ... مزید-سچ یہ ہے کہ امریکی صدر سے ملاقات سے قبل کچھ خدشات کا شکار تھا تاہم ڈونلڈ ٹرمپ کیساتھ گزشتہ روز ہوئی ملاقات خوشگوار تجربہ تھی، زندگی میں کبھی کسی نے اتنے مشورے نہیں دیے ... مزید-دورہ امریکہ: عمران خان کی شخصیت کا جادو سر چڑھ کر بولا: صمصام بخاری مسئلہ کشمیر پر شاندار موقف نے بھارت کو لا جواب کر دیا،عمران خان نے ثابت کیا وہ پاکستان کے حقیقی رہنما ... مزید-ایل ڈی اے میں اشد ضرورت کے مطابق انجینئرنگ اورٹیکنیکل سٹاف کی بھرتی کی منظوری شاہکام چوک پر فلائی اوور کی تعمیراورڈیفنس روڈ تا لیبر کالونی توسیعی منصوبہ جلد شروع کرنے ... مزید-پسماندہ علاقوں خصوصاً جنوبی پنجاب کیلئے فلاح عامہ کے منصوبوں کی خود نگرانی کررہا ہوں :عثما ن بزدار تحریک انصاف کی حکومت نے وسائل کا رخ پسماندہ علاقوں کو ترقی یافتہ بنانے ... مزید-وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدار کا تحریک پاکستان کے کارکن و سابق ہاکی او لمپین خواجہ اسلم کے انتقال پر اظہار تعزیت-وفاقی دارالحکومت میں آئوٹ آف سکولز چلڈرن مہم کے تین ماہ کے دوران 7ہزار بچوں کا سکولوں میں داخلہ کرایا گیا‘ شفقت محمود بچوں میں غذائیت کی کمی کو پوراکرنے کے لئے فوڈ ... مزید

GB News

وزیر اعلیٰ کی علی امین گنڈا پورسے ملاقات ، داریل کے جنگلات ،پی ایس ڈی پی کے منصوبے و دیگر امور پر تفصیلی گفتگو

Share Button

اسلام آبا(پ ر)وزیر اعلیٰ گلگت بلتستان حافظ حفیظ الرحمن کی وفاقی وزیر امور کشمیر و گلگت بلتستان علی امین گنڈا پورسے ملاقات ،ملاقات میں داریل کے جنگلات ،پی ایس ڈی پی کے منصوبے و دیگر امور پر تفصیلی گفتگوہوئی ،وزیر اعلی نے ملاقات میں کہا کہ داریل کھنبری کے جنگلات کا مسلہ فوری بنیادوں پر حل طلب ہے اگر تیس رمضان تک مسئلہ حل نہ ہوا تو ہم مجبور ہوں گے کہ اسلام آبادکی طرف لانگ مارچ کریں اس لئے ضرورت اس امر کی ہے کہ پندرہ روز کے اندر اس مسلے کا حل نکالا جائے اس وقت گلگت بلتستان میں سیاحت کا سیزن شروع ہو چکا ہے ایسے میں روڑ بلاک ہوگا تو سیاحوں کے لئے پریشانی ہوگی اس لئے جلد سے جلد اس مسلے کا حل نکالا جائے،وزیر اعلی نے کہا کہ اس کے علاوہ گلگت بلتستان کی لکڑی اور ڈرائی فروٹ پر کے پی کے کی طرف سے جو غنڈہ ٹیکس وصول کیا جا رہا ہے قانونی طور پر اس کا کوئی جواز نہیں ،آئین کی رو سے ایک صوبے سے دوسرا صوبہ بین الصوبائی مال کی ترسیل پر ٹیکس وصول کرنے کا جواز نہیں لیکن کے پی کے میں یہ نرالا قانون بنایا گیا ہے کہ سالانہ لکڑی پر پچیس کروڑ اور ڈرائی فروٹ پر پندرہ کروڑ ٹیکس وصول کیا جاتا ہے ،وزیر اعلی نے کہا کہ جس طرح کے پی کے اسمبلی نے ایک ایکٹ کے تحت یہ ٹیکس لاگو کیا ہے ایسا ہی اختیار گلگت بلتستان اسمبلی کے پاس بھی ہے ہم بھی اس طرح کا ایکٹ پاس کر کے کے پی کے سے آنے والے مال پر ٹیکس عائد کریں تو پھر کیا ہوگا لیکن ہم کوئی غیر قانونی اقدام اٹھا کر صوبوں کے درمیان نفرت کے بیچ بونے کے قائل نہیں لہذا کے پی کے حکومت اس غنڈہ ٹیکس کا خاتمہ کرے اس حوالے سے وزارت امور کشمیر اپنی زمہ دارایان ادا کرے ،وزیر اعلی نے پی ایس ڈی پی منصوبوں کے حوالے سے کہا کہ پچھلی حکومت کی طرف سے دئے گئے منصو بوں کی فنڈنگ اور بجٹ کٹوتی کے مسلے پر وزارت امور کشمیر اپنی ذمہ داریاں پوری کرے ،گلگت بلتستان کی سیاحت کے حوالے سے بٹو گاہ شاہراہ ،کارگاہ تو کھنبری ایکسپریس وے اور گلگت چترال چکدرہ شاہراہ انتہائی اہمیت کی حامل ہیں ان منصوبوں میں جو رکاوٹیں ہیں انہیں دور کیا جائے ،اس کے علاوہ گلگت بلتستان کی حکومت کی طرف سے مرکزی حکومت سے سات ارب کے منصوبے پی ایس ڈی پی میں شامل کرنے کی درخواست کی ہے جن میں شاہراہ نگر ،سکردو اور چلاس کے لئے سیو رج سسٹم ، ،بلتستان ڈویثرن کے لئے 500بیڈ ہسپتال اور دیامر ڈویثرن کے لئے 500بیڈ ہسپتال ان دونوں ہسپتالوں کے لئے زمین صوبائی حکومت نے مہیا کر دی ہے ان منصوبوں کی کل لاگت سات سے آٹھ ارب کے درمیان ہے امید ہے کہ وفاقی حکو مت منظوری دے گی ،جس پر وزیر امور کشمیر و گلگت بلتستان علی امین گنڈاپور نے کہا کہ میں گلگت بلتستان کی صوبائی حکومت کی طرف سے پیش کئے گئے تمام منصوبوں اور مسائل کے حوالے سے وزیر اعظم کو آگاہ کروں گا اور حل کرنے کی کوشش کریں گے ،بالخصوص جنگلات کے حوالے سے جو ایشیو سامنے آیا ہے اس حوالے سے وزارت امور کشمیر و گلگت بلتستان کے پی کے حکومت سے تفصیلات طلب کر کے مسلے کا حل نکالیں گے اور اس حوالے سے صوبائی حکومت کی مشاورت سے فیصلے کئے جائیں گے۔

Facebook Comments
Share Button