تازہ ترین

Marquee xml rss feed

یہ تاثر قائم کر دیا گیا ہے تحریک انصاف میں شمولیت اختیار کرو یا پھر جیل جاؤ، بلاول بھٹو کا بابر اعوان کی بریت پر ردِ عمل حکومت کا صوبوں کے ساتھ رویہ ٹھیک نہیں ہے، یہ صوبائی ... مزید-اگر سیلز ٹیکس واپس ہی کرنا ہے تو پھر لیتے کیوں ہیں؟ عبدالرزاق داؤد ایک دم صفر سے 17فیصد ٹیکس لگانے سے مسائل پیدا ہوں گے،ہم ہمیشہ ریونیو کے پیچھے گئے صنعتی ترقی کے پیچھے ... مزید-نیب نے بابر اعوان کو معاف نہیں کیا، ہمایوں اختر خان بابر اعوان کی بریت کا فیصلہ احتساب عدالت کا ہے، رہنما پاکستان تحریکِ انصاف-حضرو میں ماں اپنی بیٹی کی عزت بچانے کی کوشش میں جان کی بازی ہار گئی حملہ آور نے بیٹی کی جان بچانے کی کوشش کرنے والی خاتون کو چاقو کے وار کرکے شدید زخمی کیا، بعد ازاں خاتون ... مزید-چند سالوں میں پیٹرول ناقابل یقین حد تک سستا جبکہ اس کا استعمال بھی نہ ہونے کے برابر ہو جائے گا دنیا کی بڑی بڑی کمپنیاں اب بجلی سے چلنے والی ہائبرڈ گاڑیاں تیار کر رہی ہیں، ... مزید-وزیراعلی سندھ سے برٹس ٹریڈ کمشنر فار پاکستان، مڈل ایسٹ کی وزیراعلی ہائوس میں ملاقات-گراں فروشی، ملاوٹ اور غیر معیاری اشیاکی فروخت کے خلاف کاروائی جاری رکھی جائے، وزیراعلی-لیبر تنظیموں کا اپوزیشن کی متوقع احتجاجی تحریک سے مکمل لاتعلقی کا اعلان ملک کو معاشی طور پر مضبوط بنانے کیلئے حکومت اور قومی اداروں کے ساتھ کھڑے ہیں ‘لیبرتنظیمیں اپوزیشن ... مزید-ناقص معاشی پالیسیوں کے ذمہ دار ہم سے 10 ماہ کا حساب مانگ رہے ہیں، جب تک معیشت بہتر نہیں ہو جاتی ہم ان سے ان کے 40 سالوں کا حساب مانگتے رہیں گے‘ ماضی میں ذاتی مفادات کے لئے ... مزید-نیب لاہور نے ہسپتالوں کے مضر صحت فضلہ سے گھریلو اشیاء کی تیاری کے حوالے سے میڈیا رپوٹس کا نوٹس لے لیا متعلقہ اداروں کے حکام بریفنگ کیلئے طلب ‘ ملوث عناصر کے خلاف ٹھوس ... مزید

GB News

ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج سکردو کی عدالت نے بلتستان یونیورسٹی کے لئے زمین کی الاٹمنٹ اور تعمیرات پر حکم امتناع ختم کردیا

Share Button

سکردو(پ ر)ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج سکردو کی عدالت نے بلتستان یونیورسٹی کے لئے زمین کی الاٹمنٹ اور تعمیرات پر حکم امتناع ختم کردیا عدالت نے کلکٹر شگر کو یونیورسٹی کے لئے جہاں ضرورت ہو وہاں زمین الاٹ کرنے اور 10جون کو پیش ہونے کا حکم دے دیا ہے عدالت نے حکم امتناع فریقین کی جانب سے یہ موقف سامنے آنے کے بعد ختم کیا کہ انھیں یونیورسٹی کے لئے زمین کی الاٹمنٹ پر اعتراض نہیں ہے تفصیلات کے مطابق اہلیان سرفہ رنگاہ نے سرفہ رنگاہ میدان میں اپنے چراگاہی حقوق ہونے کے دعویٰ کے باعث میدان کی زمین کی الاٹمنٹ کے خلاف حکم امتناع حاصل کیا تھاتاہم بعد میں اہلیان سرفہ رنگاہ چھومک اور الڈینگ نے عدالت میں درخواست دی کہ یونیورسٹی خطے کے لئے انتہائی ضروری ہے اس لئے انھیں مذکورہ میدان میں زمین کی الاٹمنٹ پر اعتراض نہیں ہے جس کے بعد عدالت نے حکم امتناع ختم کردیا عدالت نے اپنے حکم نامے میں کہا ہے کہ بلتستان یونیورسٹی کیس میں فریق نہیں تھی علاوہ ازیں اصل مقدمے میں بھی فریقین کو یونیورسٹی کے لئے زمین کی الاٹمنٹ پر اعتراض نہیں تھا مدعی اور دیگر فریقین نے عدالت میں اس موقف کا اظہار کیا کہ یونیورسٹی جہاں چاہے تعمیرات کرسکتی ہے فریقین کے بیان کی روشنی میں کلکٹر شگر کو اختیار حاصل ہے کہ یونیورسٹی جہاں خواہش مند ہو وہاں زمین الاٹ کردیں اور دس جون کو عدالت میں پیش ہوں عدالت نے دریا پار زمین سے متعلق حکم امتناع برقرار رکھنے کا حکم بھی دیا ہے تاہم بلتستان یونیورسٹی پر اس حکم امتناع کا اطلاق نہیں ہوگا،دوسری جانب وائس چانسلر بلتستان یونیورسٹی پروفیسر ڈاکٹر نعیم خان نے یونیورسٹی کی زمین کیلئے دیرپا حل نکالنے پر اہلیان سرفہ رنگاہ،الڈینگ،چھومک کا شکریہ ادا کیا ہے انھوں نے مقدمے کے وکلا،فرینڈز آف بلتستان کے بانی ارکان ،رجسٹرار ،کنٹرولر امتحانات کی کاوشوں کو بھی خراج تحسین پیش کیا ہے انھوں نے اس ضمن میں تعاون پر صوبائی حکومت چیف سیکرٹری ،بلتستان ڈویژن کی انتظامیہ اور پاک فوج کے حکام کا بھی شکریہ کہ ان کی دلچسپی سے یونیورسٹی کے لئے زمین کی الاٹمنٹ ممکن ہورہی ہے۔

Facebook Comments
Share Button