تازہ ترین

Marquee xml rss feed

سندھ میں فاروڈ بلا ک بنایا گیا توبدمزگی پیدا ہوگی، ڈاکٹرشاہد مسعود سندھ میں فاروڈ بلاک کوعوام قبول نہیں کریں گے ، کیونکہ وہی 20 کرپٹ لوگ ایک جگہ سے اٹھا کر دوسری جگہ رکھ ... مزید-گرمی کی شدت اور ہیٹ ویو کے پیش نظر ضلعی سطح پرہیٹ اسٹروکس/ ویو کیمپس لگائے جائیں۔آئی جی سندھ-عالمی یوم امن پرپاکستان میں قیام امن کے لیے اپنی جانوں کی قربانی دینے والے شہیدوں کو خراج عقیدت پیش کرتے ہیں،خرم شیر زمان-شیخ رشید کا بلاول بھٹو کو سالگرہ کی مبارکباد دینے کا دلچسپ انداز " ہیپی برتھ ڈے مائی لو"۔ شیخ رشید نے صحافیوں کے بھی قہقہے لگوا دئیے-عالمی برادری امن کا آغازمسئلہ کشمیرکے حل سے کرے، بلاول بھٹو عالمی تنازعات کے حل کیلئے سفارتکاری اورمذاکرات پرانحصار بڑھانا ہوگا، دنیا انسانی ذات کے لیے قدرت کی گود ... مزید-میئر کراچی کیلئے نیب کا شکنجہ تیار ،وسیم اختر کو آئندہ ہفتے طلب کئے جانے کا امکان محکمہ بلدیات میں کرپشن اور سرکاری خزانے کی لوٹ مار میں ملوث کے ایم سی کے 75افسران کیخلاف ... مزید-سندھ حکومت کو گرانا آسان کام نہیں ہے، قمر زمان کائرہ آپ سندھ حکومت کو نہیں گرا سکتے، سندھ حکومت کو گرانا آپ کے بس کا روگ نہیں، کرپشن توبہانہ ہے سندھ حکومت نشانہ ہے۔سینئر ... مزید-کیپٹن (ر) صفدر کی عبوری ضمانت میں 12اکتوبرتک توسیع-سعودی عرب امت مسلمہ کا مرکز ہے،وزیر اعظم عمران خان کی سعودی قیادت سے ملاقاتوں کا محور مسئلہ کشمیر رہا، ہندوستان نے کشمیر کے حوالے سے جو حقائق چھپا رکھے ہیں وزیر اعظم ... مزید-ڈاکٹرز مریضوں کے ساتھ شفقت و ہمدردی کا سلوک،معالج کی حیثیت سے علاج کے ساتھ بیماریوں کی روک تھام اور صحت کی نگہداشت پر زیادہ توجہ مرکوز کریں صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی ... مزید

GB News

ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج سکردو کی عدالت نے بلتستان یونیورسٹی کے لئے زمین کی الاٹمنٹ اور تعمیرات پر حکم امتناع ختم کردیا

Share Button

سکردو(پ ر)ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج سکردو کی عدالت نے بلتستان یونیورسٹی کے لئے زمین کی الاٹمنٹ اور تعمیرات پر حکم امتناع ختم کردیا عدالت نے کلکٹر شگر کو یونیورسٹی کے لئے جہاں ضرورت ہو وہاں زمین الاٹ کرنے اور 10جون کو پیش ہونے کا حکم دے دیا ہے عدالت نے حکم امتناع فریقین کی جانب سے یہ موقف سامنے آنے کے بعد ختم کیا کہ انھیں یونیورسٹی کے لئے زمین کی الاٹمنٹ پر اعتراض نہیں ہے تفصیلات کے مطابق اہلیان سرفہ رنگاہ نے سرفہ رنگاہ میدان میں اپنے چراگاہی حقوق ہونے کے دعویٰ کے باعث میدان کی زمین کی الاٹمنٹ کے خلاف حکم امتناع حاصل کیا تھاتاہم بعد میں اہلیان سرفہ رنگاہ چھومک اور الڈینگ نے عدالت میں درخواست دی کہ یونیورسٹی خطے کے لئے انتہائی ضروری ہے اس لئے انھیں مذکورہ میدان میں زمین کی الاٹمنٹ پر اعتراض نہیں ہے جس کے بعد عدالت نے حکم امتناع ختم کردیا عدالت نے اپنے حکم نامے میں کہا ہے کہ بلتستان یونیورسٹی کیس میں فریق نہیں تھی علاوہ ازیں اصل مقدمے میں بھی فریقین کو یونیورسٹی کے لئے زمین کی الاٹمنٹ پر اعتراض نہیں تھا مدعی اور دیگر فریقین نے عدالت میں اس موقف کا اظہار کیا کہ یونیورسٹی جہاں چاہے تعمیرات کرسکتی ہے فریقین کے بیان کی روشنی میں کلکٹر شگر کو اختیار حاصل ہے کہ یونیورسٹی جہاں خواہش مند ہو وہاں زمین الاٹ کردیں اور دس جون کو عدالت میں پیش ہوں عدالت نے دریا پار زمین سے متعلق حکم امتناع برقرار رکھنے کا حکم بھی دیا ہے تاہم بلتستان یونیورسٹی پر اس حکم امتناع کا اطلاق نہیں ہوگا،دوسری جانب وائس چانسلر بلتستان یونیورسٹی پروفیسر ڈاکٹر نعیم خان نے یونیورسٹی کی زمین کیلئے دیرپا حل نکالنے پر اہلیان سرفہ رنگاہ،الڈینگ،چھومک کا شکریہ ادا کیا ہے انھوں نے مقدمے کے وکلا،فرینڈز آف بلتستان کے بانی ارکان ،رجسٹرار ،کنٹرولر امتحانات کی کاوشوں کو بھی خراج تحسین پیش کیا ہے انھوں نے اس ضمن میں تعاون پر صوبائی حکومت چیف سیکرٹری ،بلتستان ڈویژن کی انتظامیہ اور پاک فوج کے حکام کا بھی شکریہ کہ ان کی دلچسپی سے یونیورسٹی کے لئے زمین کی الاٹمنٹ ممکن ہورہی ہے۔

Facebook Comments
Share Button