تازہ ترین

Marquee xml rss feed

وزیراعلی پنجاب نے تقرر و تبادلوں پر پابندی لگا دی-حکومت کا شرعی قوانین کے تحت احتجاجی مظاہروں کیخلاف مسودہ تیار حکومت نے احتجاجی مظاہرے ’’شریعت اور قانون کی نظرمیں“ کے عنوان سے مسودہ تیارکیا ہے، مسودے کو اگلے ایک ... مزید-دھماکے میں پاکستانی قونصل خانے کا تمام عملہ محفوظ رہا، ڈاکٹر فیصل دھماکا آئی ای ڈی نصب کرکے کیا گیا، قونصل خانے کی سکیورٹی بڑھانے کیلئےافغان حکام سے رابطے میں ہیں۔ ترجمان ... مزید-جلال آباد میں پاکستان سفارت خانے کے باہر دھماکا دھماکے میں ایک سکیورٹی اہلکار سمیت 3 افراد زخمی ہوگئے، دھماکا پاکستانی سفارتخانے کی چیک پوسٹ کے 200 میٹر فاصلے پر ہوا۔ ... مزید-گلوکارہ ماہم سہیل کے گانے سجن یار کی پری سکریننگ کی تقریب کا انعقاد-پاک ہیروز ہاکی کلب کی 55 ویں سالگرہ پر ٹورنامنٹ کا انعقاد-صفائی مہم کے دوران 47 ہزار ٹن کچرا نالوں سے نکالا گیا ہے‘ وفاقی وزیر برائے بحری امور علی زیدی-مودی کے دورہ فرانس پر”انڈیا دہشتگرد“ کے نعرے لگ گئے جب کوئی دورہ فرانس پرتھا، ترجمان پاک فوج کا دلچسپ ٹویٹ، سینکڑوں کشمیری، پاکستانی اورسکھ کیمونٹی کے لوگوں کا ایفل ... مزید-حالیہ پولیو کیسز رپورٹ ہونے کے بعد بلوچستان میں خصوصی پولیو مہم شروع کی جا رہی ہے، راشد رزاق-آئی جی پولیس نے راولپنڈی میں شہری سے فراڈ کے واقعہ کا نو ٹس لے لیا

GB News

سی پیک: تعلیم کیلئے2ارب39 کروڑ68 لاکھ28 ہزار مالیت کے3 منصوبے تجویز

Share Button

اسلام آباد(شبیر حسین سے)گلگت بلتستان کی حکومت نے سی پیک کے تحت علاقے میں تعلیم کے شعبہ میں بہتری لانے کیلئے2ارب39 کروڑ68 لاکھ28 ہزار مالیت کے3 منصوبے تجویز کر لئے ہیں،چائنیز حکومت ان منصوبوں کیلئے فنڈز اور ٹیکنیکل سپورٹ فراہم کرے گی اور یہ منصوبے ایک سال کی مدت کے اندر مکمل کئے جائیں گے۔گلگت بلتستان کی حکومت نے ان منصوبوں کو پلاننگ کمیشن آف پاکستان کو ارسال کردیا ہے تاکہ ان منصوبوں کو منظوری کیلئے چائنیز حکومت کو ارسال کیا جا سکے۔گلگت بلتستان حکومت کی جانب سے ارسال کئے گئے محکمہ تعلیم کے ان تین منصوبوں میں سے پہلے منصوبہ کے تحت گلگت بلتستان کے 10 اضلاع میں سمارٹ کلاس رومز کے قیام عمل میں لایا جائے گا ،جس کے تحت215 کلاس روم کو مکمل طور پر آئی ٹی سسٹم پر منتقل کیا جائے گا ،جہاں ان کلاس رومز میں ڈیجیٹل ٹیچنگ نظام متعارف کرایا جائے گا جبکہ اساتذہ کی کیپیسیٹی بلڈنگ کی جائے گی، اس منصوبے پر11کروڑ ا28لاکھ72 ہزار روپے کا تخمینہ لگایا گیا ہے۔دوسرے منصوبے کے تحت گلگت بلتستان کے تمام اضلاع کے652 سکولوں میں سہولیات کی کمی کو دور کیا جائے گا۔ جس میں ان سکولوں کی چاردیواری کی تعمیر، پینے کی پانی کی فراہمی،بجلی، ٹوائلٹ بلاکس، کلاس رومز کی تعداد میں اضافہ،لیبارٹری، لائبریری اور امتحانی ہال تعمیر کئے جائیں گے۔ ان منصوبوں پر کل1 ارب51کروڑ 12لاکھ71 ہزار روپے کا تخمینہ لگایا گیا ہے۔محکمہ تعلیم کے تیسرے منصوبہ کے تحت گلگت بلتستان کے دیہی علاقوں کے1173سکولوں میں جدید تدریسی آلات کی فراہمی کو یقینی بنایا جائے گا جس میں ان سکولوں میں انفارمیشن اینڈ کمیونیکیشن ٹیکنالوجی کے ذریعے تعلیم کی فراہمی کو یقینی بنایا جا سکے گا۔اس پروگرام کے ذریعے ان سکولوں میں جدید لیپ ٹاپس اور دیگر آئی ٹی سامان فراہم کئے جائیں گے۔اس منصوبے پر کل 77 کروڑ 28لاکھ65 ہزار روپے اخراجات کا تخمینہ لگایا گیا ہے۔

Facebook Comments
Share Button