تازہ ترین

Marquee xml rss feed

چونیاں واقعہ:وزیراعلیٰ کا ملزمان کی نشاندہی کرنیوالےکونقد انعام دینےکا اعلان جوبھی ملزمان کی نشاندہی کرے گا اس کو 50 لاکھ روپے انعام دیا جائے گا، معطل افسران کی پوسٹنگ ... مزید-تبدیلی کے نام نہاد دعویداروں نے کینسر کے مریضوں کی دوائیاںبند کردی‘پرویز ملک کینسر کی دوائی نہ ملنے کیوجہ سے مرنیوالے 4 مریضوں کے قتل کا مقدمہ وزیر صحت کیخلاف درج کیا ... مزید-آئی جی پنجاب سے کینیڈین ہائی کمیشن کے تین رکنی وفد کی سنٹرل پولیس آفس میں ملاقات دوران ملاقات منشیات فروشوں کے نیٹ ورک کے خلاف آپریشنز کیلئے انفارمیشن شیئرنگ کو مزید ... مزید-آئی جی سندھ سے چین کے قونصل جنرل کی ملاقات ، سیکیورٹی اقدامات سمیت باہمی دلچسپی کے امورپرتفصیلی تبادلہ خیال-اثاثہ جات کیس، خورشید شاہ کو پولی کلینک ہسپتال سے ڈسچارج کر دیا گیا-مہنگائی کی صورتحال آئندہ دو سال تک ایسی ہی رہے گی، ڈپٹی گور نر اسٹیٹ بینک-وزیراعلی سندھ کا پوری صفائی کا کام دستاویزی طریقے سے کرنے کا حکم ہر ضلع صاف کرکے ڈی ایم سی کے حوالے کرنا ہے ، ڈیم ایم سی کو چاہیے پھر صفائی کو برقرار رکھیں،مراد علی شاہ ... مزید-Careem اور MicroEnsure کے باہمی اشتراک سے انشورنس ایپ متعارف کروا دی گئی کریم اور MicroEnsure کے اشتراک سے کریم ایپ کے تمام صارفین (بشمول کریم کپتان اور مسافر) کے لیے ایسی سہولیات متعارف ... مزید-سوشل میڈیا پر اپنے خاوند کے خلاف شکایت کرنے والی فیشن بلاگر آمنہ عتیق اگلے ہی روز مردہ حالت میں پائی گئی آمنہ عتیق نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ فیس بُک پر اپنے شوہر کے ناروا ... مزید-حکومت اورعوام کو تیل اورگیس کے ذخائرکی بڑی خوشخبرمل گئی گولارچی میں خام تیل اورگیس کے 2 بڑے ذخائردریافت، تیل اورگیس کے ذخائرکی تعداد 8 ہوگئی، علاقے میں تیل اور گیس کے ... مزید

GB News

سرکاری کالجز کے شرمناک نتائج، جامعات میں مالی مسائل، گلگت بلتستان میں تعلیمی بحران

Share Button

انٹرمیڈیٹ کے شرمناک نتائج کے بعد گلگت بلتستان کی دونوں یونیورسٹیاں مالی بحران کا شکار ہو گئیں، قراقر م یونیورسٹی کے بعد اب بلتستان یونیورسٹی کے وائس چانسلر نے وزیر اعلیٰ کو خط لکھ کر مالی پیکج کا مطالبہ کر دیا ہے، یوں لگتا ہے کہ اس وقت پورے خطے میں تعلیمی بحران پیدا ہوگیا ہے، گلگت بلتستان میں تمام تر حکومتی دعووں کے برعکس تعلیمی نظام بہتر ہونے کے بجائے قابل رحم ہوچکا ہے۔انٹرمیڈیٹ کے حالیہ شرمناک نتائج سے محکمہ تعلیم کی قلعی کھل کرسامنے آچکی ہے جبکہ قراقرم یونیورسٹی میں درپیش مالی بحران اور بلتستان یونیورسٹی میں فنڈز کی شدید قلت کے باعث اعلی’ تعلیم کے فروغ کے لیے قائم جامعات میں بھی مختلف بحران پیدا ہوگئے ہیں دوسری جانب مفت کتابیں،سکول بیگ اور جوتے تک تقسیم کرنے کے باوجود سرکاری ہائی،پرائمری اور مڈل سکولوں میں بھی درس و تدریس کاماحول بہتر نہیں ہو پارہا۔خدشہ ہے فیڈرل بورڈ کے تحت امتحانات میں اس سال ہائی سکول سطح پر بھی نتائج انتہائی قابل رحم سامنے آسکتے ہیں۔صوبائی حکومت اور بالخصوص محکمہ تعلیم کے بلند و بانگ دعووں کے باوجود جس طرح کے نتائج انٹرمیڈیٹ لیول کے کالجز کے سامنے آئے ہیں وہ نہ صرف قابل مزمت ہے بلکہ محکمہ تعلیم کے چہرے پر بدنماداغ ہے ، انٹرمیڈیٹ میں بدترین نتائج سامنے آمنے پر جی بی کے عوام ششدر رہ گئے، فیڈرل بورڈ کے نتائج کے مطابق گلگت بلتستان کے تمام سرکاری کالجوں کا مجموعی نتیجہ بیس فیصد سے بھی کم تھا، سب سے بہتر نتیجہ کھرمنگ انٹر کالج کا آیا جس کا رزلٹ 69فیصد رہا جبکہ سکردو ڈگری کالج میں چھ سو سے زائد طلباءمیں سے صرف ایک سو تیس کے قریب طلبہ پاس ہوئے، ایک کالج کے تو تمام کے تمام طلباءفیل ہو گئے،دوسری جانب گلگت بلتستان میں ایجوکیشن سسٹم میں بہتری، یورپی نظام تعلیم لانے اور سکولوں کو ڈیجیٹلائز کرنے کے بلند بانگ دعوے بہت کیے گئے لیکن ان دعوﺅ ں کی حقیقت انٹرمیڈیٹ کے بدترین نتائج نے بے نقاب کر دیا۔ بھاری تنخواہیں اور مراعات لینے کے باوجود گلگت بلتستان کے حالیہ نتائج اس بات کی عکاسی کرتے ہیں کہ صوبائی حکومت کے تمام تر دعوے جھوٹ کا پلندہ ثابت ہوئے ہیں اور محکمہ تعلیم کی خراب کارکردگی کھل کر سامنے آچکی ہے انٹرمیڈیٹ سطح کے خراب نتائج کے ذمہ دار خود حکومت نے سفارشی اور نالائق پرنسپلز پر عائد کیا ہے جبکہ حکومت نے اس کمزوری کا اعتراف نہیں کیا ہے کہ اب بھی بیشتر کالجز میں سبجیکٹ سپیشلسٹ لیکچررز کی کمی کا سامنا ہے۔مختلف کالجز کے پرنسپلز اعلی’ تعلیم کے بہانے ملک سے باہر ہیں یا پھر اپنے سٹیشنوں پر موجود نہیں۔گلگت بلتستان کو ملک بھر میں آزاد کشمیر کے بعد سب سے زیادہ شرح تعلیم رکھنے کا اعزاز حاصل ہے تاہم جامع قراقرم اور جامع بلتستان میں پیدا ہونے والے سخت مالی بحران اور انٹرمیڈیٹ کے شرمناک نتائج سے پورے ملک میں اس خطے کی جگ ہنسائی ہوئی ہے اور علاقے میں پہلی بار نظام تعلیم شدید بحران کا شکار ہوا ہے۔

Facebook Comments
Share Button