تازہ ترین

Marquee xml rss feed

من� کی بجائے ناکمیں دانت نکل آیا ی� انوکھا واقع� چین میں پیش آیا ج�اں آپریشن کرکے ناک سے دانت کو نکال دیاگیا-سپیشل ایجنٹ بلی جو ساتھیوں کو �رار کروانے میں ما�ر �ے 6سال� بلی راستے میں آنے والی �ر رکاوٹ کو آسانی سے پار کر جاتی-آپ کے �نگر پرنٹ اب منشیات سے متعلق بھی بتائیں گے منشیات کی روک تھام کے لیے سائنسدانوں نے نیا �ارمولا ایجاد کرلیا-پیٹرول کی قیمت میں اضا�ے کے خلا� احتجاج میں40 لوگ جاں بحق ایران میں احتجاج کی صورت حال دن ب� دن بگڑتی جا ر�ی �ے-ٹک ٹاک نے امریک� کو چاروں شانے چت کر ڈالا تحقیقاتی کمپنی نے ٹک ٹاک پر امریک� کے الزامات کو بے بنیاد قرار دے دیا-ب�ادر شخص نے مگرمچھ کو اندھا کر کے خود کو موت کے من� سے نکال لیا آخری لمحے تک مگرمچھ کامقابل� کر کے زندگی جیتنے والے شخص نے ب�ادری کی مثال قائم کر دی-موٹروے پر بس حادثے کا شکار �و گئی 3 خواتین جاں بحق ،10ا�راد زخمی

GB News

شاہراہ بلتستان کی بندش اور عوام کی مشکلات

Share Button

شاہراہ بلتستان کی بندش کے باعث بلتستان میں اشےائے خوردونوش اور پٹرولےم مصنوعات کی شدےد قلت پےدا ہو گئی ہے اور لوگوں کو مشکلات کا سامنا ہے‘ٹرانسپورٹ کی بندش سے بھی صورتحال انتہائی خراب ہے‘شہرےوں نے روڈ کھولنے میں تاخےر پر شدےد احتجاج کےااور کہا ہے کہ شاہراہ بلتستان کی بندش سے بلتستان میں ہر شے ناپےد ہو گئی ہے لےکن حکام بالا کو اس سلسلے میں کوئی پروا نہےں ہے‘تےن روز گزرنے پر بھی کسی طرف سے روڈ کھولنے کی کوشش نہےں کی جا رہی ہے بلتستان آنے والے ہزاروں لوگ پھنس چکے ہےں‘پاک فوج کو آگے بڑھ کر پھنسے لوگوں کو بلتستان لانے کےلئے ہےلی کاپٹر سروس شروع کرنا ہو گی‘باغےچہ کے مقام پر لےنڈ سلائےڈ کی زد میں آکر تباہ ہونے والے روڈ کے حصے کو تاحال مرمت نہ کر سکنا بلاشبہ بڑی غفلت ہے‘ ڈپٹی کمشنر سکردو کے مطابق ہم روڈ کو کھولنے کی کوشش کررہے ہےں تاکہ اسے پےدل آمدورفت کےلئے کھولا جائے اےک دوروز کے بعد چھوٹی گاڑےوں کےلئے کھول دےا جائے گا جبکہ بڑی گاڑےوں کےلئے چار پانچ روز لگےں گے‘اگرچہ صورتحال اچانک آنے والی افتاد کے باعث خراب ہوئی ہے لےکن ےہ اس بات کی علامت ہے کہ لےنڈ سلائےڈنگ کے حوالے سے انتظامات نہےں کےے جا سکے اگر اس سلسلے میں ضروری مشےنری موجود ہو تو سڑک کو جلد کھولنے میں کامےابی ہو سکتی ہے مگر شاےد اےسی ناگہانی صورتحال کے پےشگی انتظامات پر توجہ ہی نہےں دی جاتی‘ ہم بارہا ےہ لکھ چکے ہےں کہ گلگت بلتستان کے تمام ضلعی مقامات پر اشےائے خورودو نوش‘ادوےات اور پٹرولےم مصنوعات کے کم از کم تےن ماہ کے ذخےرے کا اہتمام کےا جائے تاکہ اےسی صورتحال پےش آنے پر عوام کو مشکلات کا سامنا نہ کرنا پڑے‘ ہم امےد کرتے ہےں کہ ہنگامی بنےادوں پر کام کر کے جلد روڈ کھولنے پر توجہ دی جائے گی کےونکہ سارا سسٹم مفلوج ہو کر رہ گےا ہے اور آئندہ اےسے حالات کے لےے خود کو تےار رکھا جائے گا۔لےنڈ سلائےڈنگ اور دےگر قدرتی آفات سے نمٹنے کے لےے پےشگی اقدامات اور مطلوبہ سازوسامان کا ہونا از حد ضروری ہے کےونکہ خطے میں اےسے واقعات پےش آتے رہتے ہےں۔

Facebook Comments
Share Button